وحدت نیوز(اسلام آباد) گذشتہ روز پولیس کے ہاتھو ں جیکب آباد چیک پوسٹ پر خاتون زائرہ کی شہادت کی مذمت کرتے ہیں ،بلوچستان حکومت زائرین کو سہولیات فراہم کرنے میں ناکام ہو چکی ہے، محب وطن اور دہشگردی مخالف شخصیت فیصل رضا عابدی پر دہشگردی کی دفعات لگا گرفتار کرنا افسوس ناک ہے،حکومت مسنگ پرسنز کے مسئلے کو جلداز جلد حل کرئے، کوئی کتنا ہی بڑا ملز م یا مجرم کیوں نہ ہو آئین و قانون کے برخلاف اسے طویل عرصہ حراست میں رکھنا کسی صورت درست نہیں ان خیالات کا اظہار سربراہ مجلس وحدت مسلمین پاکستان علامہ راجہ ناصر عباس جعفری نے پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔

 انہوں نے کہا کہ گزشتہ روز جیکب آباد چیک پوسٹ پر پولیس کے ہاتھوں پیش آنے والے سانحہ میں خاتون زائرہ کی شہادت اور اس کے بعد پولیس کی اپنے پیٹی بھائی کو بچانے کی کوششوں کی مذمت کرتے ہیں۔پولیس نے بے گناہ زائرہ کابے دری سے قتل کیا مدعی کی جانب سے پولیس ذمہ داران کے خلاف ایف آئی آر کے اندراج کے بعد پولیس اہلکار مدعی پر دباو ڈال رہے ہیں اور مقدمے سے دستبرداری کے لئے مدعی کو سنگین نتائج کی دھمکیاں دے رہے ہیں،متعلقہ حکام نوٹس لیں اور ان درندہ صفت لوگوں کو نشان عبرت بنائیں، بلوچستان حکومت زائرین کو سہولیات دینے میں مکمل ناکام ہو چکی ہے، زائرین کے مشکلات میں اضافہ ہو رہاہے ،جب کوئی قافلہ بلوچستان داخل ہوتا ہے تو اسے این او سی کے نام پر ہراساں کیا جاتا ہے جو کہ کسی بھی پاکستانی شہری کیساتھ غیر قانونی غیر آئینی اقدام ہے، جس کی ہم مذمت کرتے ہیں پاکستان کے کسی بھی شہری کو ملک میں ایک جگہ سے دوسری جگہ جانے کے لئے کسی کی اجاز ت کی ضرورت نہیں ہونی چاہئے،حکومت گزشتہ حکمرانوں کی غلط پالیسیوں پر نظرِ ثانی کریں اور زائرین کے راہ میں حائل غیر قانونی رکاوٹوں کا خاتمہ کرے۔

علامہ راجہ ناصر عباس جعفری نے کہا کہ فیصل رضا عابدی ایک محب وطن اور ہمیشہ سے دہشگردی تکفیریت کے خلاف بولنے والا پاکستان کا فرزند ہے،محترم ججز کے خلاف گندی زبان استعمال کرنے والے دھندانتے پھر رہے ہیں اور فیصل رضا عا بدی پر دہشتگردی کی دفعات لگا کر ہتھکڑیوں کیساتھ عدالتوں میں پھرا کر آخر کیا قوم کو پیغام دینا چاہتے ہیں ملت جعفریہ میں بے چینی کا شکار ہے ہم چیف جسٹس آف پاکستان جناب جسٹس ثاقب نثار سے اپیل کرتے ہیں کہ فیصل رضا عا بدی کے کیس کوہمدردی کی بنیادوں پر دیکھا جائے اور کی رہائی کو ممکن بنایا جائے،مسنگ پرسنز کا مسئلہ دن بدن شدت اختیار کرتا جارہا ہے حکومت جلد از جلد اس مسئلے کو حل کرئے آئین و قانو ن پاکستان بالاتر ہے اور کسی بھی پاکستانی شہری کو طویل عرصے تک حراست میں رکھنا اور عدالت میں پیش نا کرنا آئین و قانون کے خلاف ہے چاہئے کوئی کتنا ہی بڑا ملزم ہو اسے جب سکیورٹی ادارے گرفتار کریں اسے جلد از جلد عدالت میں پیش کیا جانا چاہئے ذاتی مفادات کی سیاست کرنے والے ملک کے ساتھ مخلص نہیں ہیں یہ قوم کا پیسہ اور وقت دونوں برباد کررہے ہیں گذشتہ روز پنجاب اسمبلی میں بجٹ اجلاس کے دوران اپوزیشن کے غیر جمہوری رویے کی مذمت کرتے ہیں پنجاب میں عزاداری سید الشہدا پر پابندیوں کو برداشت نہیں کریں گے عزادری ہمارا آئینی و قانونی حق ہے اور اس پر کسی قسم کی قدغن قبول نہیں ن لیگ حکومت کی بنائی گئی متعصبانہ پالیسوں کو اگر ترک نا کیا گیا تو ہم احتجاج کا آئینی و قانونی حق محفوظ رکھتے ہیںعرب صحافی جمال خاشقجی کا ترکی میں لاپتہ ہونا افسوس ناک ہے ہماری ہمدردیاں ان کے خاندان کے ساتھ ہیں۔

وحدت نیوز(کرم ایجنسی) مجلس وحدت مسلمین سمیت کرم بھر کی مذہبی تنظیموں نے فیصل رضا عابدی کی گرفتاری، یمن پر سعودی عرب کی بمباری، کوئٹہ اور تفتان میں پھنسے ہزاروں زائرین کی حالت زار نیز لاپتہ افراد کی بازیابی کے سلسلے میں ایک پر ہجوم پریس کانفرنس کی، جس سے تحریک حسینی کے صدر مولانا یوسف حسین جعفری، نائب صدر مولانا عابد حسین، انجمن حسینیہ کے قائم مقام سیکرٹری کونین علی، مجلس علمائے اہلبیت کے رہنما مولانا باقر حسین حیدری ، مجلس وحدت مسلمین ضلع کرم کے قائم مقام سیکریٹری جنرل مولانا مزمل حسین سمیت دیگر تمام علاقائی مذھبی تنظیموں کے افراد نے کثیر تعداد میں شرکت کی۔ مولانا یوسف جعفری نے مولا حسین علیہ السلام کے اس فرمان سے پریس کانفرس کا آغاز کیا، "ہر ظالم کے ساتھ جنگ کرو اور ہر مظلوم کی مدد کرو"۔ کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے مولانا یوسف نے کہا کہ ہم نے تحریک حسینی کے پلیٹ فارم سے جبکہ دوسری تنظیموں نے اپنے اپنے پلیٹ فارم سے اپنے علاقے، اپنے وطن عزیز پاکستان حتٰی کہ دنیا بھر کے مظلومین کے حق میں اپنی آواز بلند کی ہے، اور بلند کرتے رہیں گے۔ خواہ وہ مظلوم، کشمیر کے ہوں یا برما کے، فلسطین میں ہوں یا لبنان میں۔ شام میں ہوں یا یمن میں۔ ہم نے جلسے جلوس اور میڈیا کے ذریعے انکی آواز میں ہمیشہ اپنی آواز ملائی ہے۔ انہوں نے میڈیا کی توجہ چار اہم نکات کی جانب توجہ مبذول کراتے ہوئے کہا کہ آپکے توسط سے ہم ذمہ دار اداروں اور انتظامیہ سے احتجاج کرتے ہیں کہ ان مندرجہ نکات کا سختی سے نوٹس لیتے ہوئے درپیش مشکلات کا فوری ازالہ کریں۔

فیصل رضا عابدی کی بلا جواز گرفتاری کو پاراچنار سمیت پاکستان بھر کی ملت تشیع کسی صورت میں برداشت نہیں کرسکتی۔ ذمہ دار قوتیں واضح کریں کہ فیصل رضا نے وہ کونسا جرم کیا ہے، جس کی بنا پر انہیں پابند سلاسل کیا گیا ہے۔ ملک کی دولت لوٹی ہو، یا ملک دشمن کسی سرگرمی میں ملوث ہوں تو اسے برسرعام عوام کے سامنے لایا جائے، نہیں تو انہیں شیعہ حقوق کے تحفظ کی خاطر آواز اٹھانے کی سزا نہ دی جائے۔ نہ ہی ایسی حرکتوں کو برداشت کیا جا سکتا ہے۔ کوئٹہ اور تفتان میں پھنسے ہزاروں زائرین امام حسین علیہ السلام کو فوری اور بلا تاخیر اجازت دیکر اپنی منزل کی جانب روانہ کیا جائے۔ نیز اس اہم ٹرانزٹ روٹ کے تحفظ کیلئے بنیادی اقدامات اٹھاتے ہوئے اس مسئلے کا ابدی حل نکالا جائے۔ زائرین کے ساتھ روا رکھے جانے والے سلوک کا فوری نوٹس لیا جائے، نہیں تو شیعہ عوام کے ساتھ غیر پاکستانیوں جیسا سلوک کرنے کے انتہائی بھیانک نتائج برآمد ہو سکتے ہیں۔ زائرین کو ہفتوں کوئٹہ اور ہفتوں تک تفتان میں کھلے آسمان تلے زبردستی روکنا انسانی حقوق نیز پاکستانی قانون کی سنگین خلاف ورزی ہے۔ جس کی وجہ سے اب تک درجن بھر زائرین کربلا پہنچنے سے پہلے ہی دم توڑ چکے ہیں۔ چنانچہ زائرین کو بلا تاخیر کانوائے کا پےدرپے بندوبست کراتے ہوئے مشکلات سے نجات دلائی جائے۔

مولانا یوسف کے بعد انجمن حسینیہ کے قائم مقام سیکرٹری کونین حسین نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ گذشتہ تین سالوں سے سعودی عرب کے توسط سے یمن پر امریکہ اپنے بموں اور بارود کی برسات کرا رہا ہے۔ جسکے نتیجے میں ایک کروڑ سے زائد یمنی باشندے شدید متاثر ہو چکے ہیں۔ ہزاروں بچے اور خواتین موت کی نذر ہو چکے ہیں۔ لاکھوں خواتین، بچے اور عام افراد بھوک اور افلاس کا شکار ہو کر جنگلی گھاس کھانے پر مجبور ہو چکے ہیں۔ یہی نہیں، آئے روز ہسپتالوں، اور سکولوں کو نشانہ بناکر مریضوں اور بچوں کا اجتماعی قتل عام کیا جارہا ہے جوکہ ناقابل برداشت ہے۔ چنانچہ حکومت نیز اقوام متحدہ سے گزارش ہے کہ انسانی حقوق کی ان سنگین خلاف ورزیوں کا سختی سے نوٹس لیتے ہوئے یمن پر تین سال سے جاری چڑھائی روک دی جائے اور یمن کے معاملات کو یمن کے عوام پر چھوڑ دیا جائے۔

انہوں نے مزید کہا کہ گذشتہ چار سالوں سے ملت تشیع کے ہزاروں افراد لاپتہ ہیں۔ انکا گھر والوں سے کوئی رابطہ نہیں کرایا جارہا۔ گھر والے انکے لئے نہایت پریشان ہیں۔ ہاں کسی فرد پر کوئی جرم ثابت ہو تو اسے بے شک انصاف اور عدالت کے کٹہرے میں لاکر کھڑا کیا جائے اور اسکے خلاف قانونی کارہ جوئی کی جائے۔ تاہم جبر و تشدد سے کام لینا اور سالوں تک لاپتہ رکھنا پاکستانی قانون کے زمرے میں نہیں آتا۔

آخر میں انہوں سول اور فوجی انتظامیہ نیز متعلقہ تمام ذمہ دار اداروں سے پر زور مطالبہ کیا کہ مندرجہ بالا نکات کا سختی سے نوٹس لیتے ہوئے ملت تشیع کو درپیش تمام مسائل و مشکلات کا فوری ازالہ کیا جائے۔ وقفہ سوالات کے دوران صحافیوں کے ایک سوال کے جواب میں مولانا مزمل حسین نے کہا کہ پتہ نہیں فیصل رضا نے وہ کونسا گناہ کیا جو قابل بخشش نہیں، جبکہ یہاں تو ہزاروں فوجیوں سمیت لاکھوں عوام کے قاتل اور ملک دشمن عناصر آزاد پھر رہے ہیں۔ یہاں اورنگزیب فاروقی، احمد لدھیانوی، فضل الرحمان اور خادم رضوی جیسے افراد بھی کھلے عام پھر رہے ہیں، جنہوں نے عدالت کی توہین سے لیکر ہمیشہ سے ملک دشمن پالیسی کو فالو کیا ہے۔ انہوں نے کہا خادم رضوی نے جج کو کنجر کہا۔ فضل الرحمان نے یوم آزادی کو یوم سیاہ کہتے ہوئے ملک دشمنی کا ثبوت دیا۔ ایک صحافی کے سوال کے جواب میں مولانا باقر علی حیدری نے کہا کیا فیصل رضا عابدی کا گناہ طالبان کے ترجمان احسان اللہ احسان سے زیادہ ہے۔ جنہوں نے لاکھوں افراد کے قتل کی ذمہ داری قبول کی تھی، آج وہ پاکستان کے اہم اداروں کے ساتھ گھومتا پھرتا ہے۔

وحدت نیوز (اوکاڑہ) مجلس وحدت مسلمین پاکستان ضلع اوکاڑہ کا سید انوارالحق زیدی کو آئندہ چھ ماہ کے لیئے عبوری سیکرٹری جنرل نامزد کر دیا گیا ہے اس حوالے سے صوبائی سیکرٹری تنظیم سازی مولانا سید ملازم حسین نقوی ،مرکزی معاون سیکرٹری تنظیم سازی آصف رضا ایڈووکیٹ، صوبائی رابطہ سیکرٹری رائے ناصر علی، صوبائی سیکرٹری عزاداری کونسل رانا ماجد علی نے آج اوکاڑہ کا تنظیمی دورہ کیا جہاں مقامی کارکنوں اور عہدیداروں سے ملاقات کی جس میں ضلع کی تنظیمی صورتحال کا جائزہ لیا گیا اور اتفاق رائے سے صوبائی سیکرٹری تنظیم سازی نے سید انوارالحق زیدی کو آئندہ تنظیمی کنونشن تک عبوری سیکرٹری جنرل نامزد کیا اور حلف لیا اجلاس میں فیصلہ ہوا کہ 20 نومبر تک یونٹ سازی کر کے ضلعی شوری کا اجلاس منعقد کیا جائے گا جس میں مرکزی اور صوبائی نمائندگان خصوصی شرکت کریں گے۔

وحدت نیوز (کراچی) مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی ڈپٹی سیکریٹری جنر ل علامہ سید احمد اقبال رضوی نے کہاہے کہ پاکستان میں کسی بھی شہری کو ایک شہر سے دوسرے شہرمیں داخل ہونے کیلئےاین اوسی کےحصول کوآئین پاکستان کے مطابق بنیادی شہری آزادی پر قدغن شمار کرتے ہیں ،سندھ اور بلوچستان کو زائرین کے لئے نوگوایریا بنا دیاگیا ہے، سندھ سے بلوچستان میں داخل ہونے ہوالے زائرین سے سکیورٹی اداروں کا این او سی طلب کرنا علاقائی، لسانی اور مذہبی تعصب کو فروغ دے رہاہے، ہم زائرین سے ایک صوبے سے دوسرے صوبے میں داخلے پر این اوسی کی طلبی کو مسترد کرتے ہیں ،این او سی کے نام پر زائرین کی آمد ورفت میں رکاوٹ ملت جعفریہ کو کسی صورت منظور نہیں، وفاقی حکومت این اوسی کی آڑ میں شہری آزادیوں پر قدغن کا فوری نوٹس لے اور سابقہ حکومت کے شیڈول روٹس کے قانون پر نظر ثانی کرے بصورت دیگر بھرپور احتجا ج کیاجائے گا۔ ان خیالات کا اظہارانہوں نے صوبائی سیکریٹریٹ وحدت ہائوس سولجر بازارمیں ہنگامی پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا ، اس موقع پر علامہ مرزایوسف حسین،علامہ صادق جعفری ،علامہ مبشرحسن، علامہ نعیم الحسن الحسینی،علامہ علی انور جعفری،ناصرحسینی ، میر تقی ظفراورمیثم عابدی بھی موجود تھے۔

انہوں نے کہاکہ حالیہ انتخابات کے بعد وزیر اعظم پاکستان عمران خان اور وزیر داخلہ شہریار آفریدی کی جانب سے زائرین کے مسائل اور تفتان بارڈر پر درپیش مشکلات کے ازالے کے لئے فوری اقدامات کی ہدایات جاری کیں تھیں ملت جعفریہ میں امید کی کرن جاگی تھی کہ سابقہ دور حکومت سے زائرین کو درپیش مشکلات کے خاتمے کا وقت قریب آپہنچا ہے لیکن افسوس بلوچستان حکومت ، سکیورٹی اداروں اور ایف سی حکام نے وزیر اعظم اور وزیر داخلہ کے احکامات کو ہو ا میں اڑا دیا ہے، تفتان، کوئٹہ اور اب سندھ بلوچستان بارڈر پر زائرین کو شدیدازیتوں اور مصائب میں مبتلا کیا جارہا ہے، توبت زائرین کی ہلاکتوں تک پہنچ چکی ، وزیر اعظم پاکستان اور وزیر داخلہ اس صورت حال کا فوری نوٹس لیں اور سابقہ مسلم لیگ نواز کی طرز حکمرانی کی روش پر چلنےسے اجتناب کریں۔ورنہ ملت جعفریہ ن  لیگ حکومتی کی طرح موجودہ حکومت کے ظالمانہ کردار اور رویئے کے خلاف صدائے احتجاج بلند کرے گی۔

ان کا کہنا تھاکہ ہر سال کی طرح اس سال بھی زمینی اور ہوائی راستے سے تقریباً1لاکھ 40ہزار سے زائد زائرین کربلا معلیٰ کی زیارت کی تیاری کرچکے ہیں، اس وقت بھی تین ہزار سے زائد زائرین ایک ہفتے سے کوئٹہ میں موجود ہیں اور تفتان بارڈر کی جانب روانگی کے لئے حکومتی اجازت نامے کے منتظر ہیں لیکن تاحال انہیں اجازت نہیں دی جارہی ، کوئٹہ سے موصولہ اطلاعات کے مطابق آئندہ وآنے والے چند روز میں 40ہزار کے قریب زائرین کوئٹہ پہنچنے والے ہیں،ایسی ہی صورت حال کا سامنا زائرین کو تفتان بارڈر پربھی ہے جہاں ایران وعراق سے واپس آنے والے زائرین ہفتوں کھلے آسمان تلے دن کی دھوپ اور رات کی سردی میں زندگی گذارنے پر مجبور ہیں،تفتان بارڈر پر بھی زائرین کو سکیورٹی کلیئرنس کے نام پر ہفتوں ازیت پہنچانے کاسلسلہ تاحال جاری ہے، حکومتی اداروں کی نا اہلی اورسہولیات کی عدم فراہمی کے سبب تفتان اور کوئٹہ میں تین زائرین گذشتہ ایک ہفتے میں جاں بحق ہوچکے ہیں۔

انہوں نے مزید کہاکہ زائرین امام حسین ؑ پر ظلم وبربریت کے قصے فقط کوئٹہ اور تفتان بارڈر تک محدود نہیں یہ مظالم سندھ بلوچستان بارڈر تک پھیل چکے ہیں، جیکب آباد کے راستے سندھ سے بلوچستان میں داخل ہونے والے زائرین کے قافلوں کو پولیس اور سکیورٹی اداروں کی جانب سے این او سی کے نام پر روکا جارہا ہے، جہاں رشوت کی وصولی کی بھی اطلاعات ہیں ، آج الصبح ایک خاتون زائرہ کوشراب کے نشے میں دہت پولیس اہلکاروں نے مبینہ غفلت کے نتیجے میں بس سے کچل کر شہید کردیاہے، شہید زائرہ زبیدہ خانم کا تعلق کراچی سے تھا جنہیں بے دردی سے کچل دیا گیا، ہم اس ظلم پر خاموش نہیں رہیں گے،بلوچستان کی بیوروکریسی اور پولیس میں سفارشی بھرتیوں کے باعث شدید بد انتظامی دیکھنے میں آتی ہے، وزیر اعلیٰ بلوچستان جام کمال سے مطالبہ کرتے ہیں کہ اس سانحے میں ملوث ایس ایچ او گل حسن ،چوکی انچارج داد محمد ودیگر پولیس اہلکاروں کے خلاف فوری طور پر مقدمہ درج کیا جائے اور انہیں قرارواقعی سزادی جائے، بصورت دیگر ملت جعفریہ شدید احتجاج کا حق محفوظ رکھتی ہے۔

رہنمائوں نے مزید کہاکہ عراقی سفارت خانے کی جانب سے ویزے کے اجراءمیں تاخیر کے باعث اب تک ایک درجن سے زائد فلائٹس زائرین کو لئے بغیر روانہ ہوگئی ہیں جس سے ہزاروں زائرین کو کروڑوں روپے کا نقصان ہوا ہے،ہم عراقی وزارت خارجہ سے مطالبہ کرتے ہیں کہ وہ اسلام آباد میں قائم عراقی سفارت خانے کوبروقت ویزوں کے اجراء کا پابند بنائے تاکہ ایک لاکھ 40ہزار سے زائرین جنہوں نے عراقی ویزوں کے لئے رجوع کیا ہوا ہے بروقت اپنے ویزے حاصل کرکے اپنی بک شدہ فلائٹس سے عراق روانہ ہوسکیں اور ٹکٹس کی بکنگ کی مدمیں کروڑوں روپے کا ضیاع نا ہوسکے ، اس حوالے سے پاکستانی وزارت خارجہ بھی اپناسفارتی کردار اداکرتے ہوئے عراقی حکومت سے پاکستان میں پھنسے ہوئے ایک  لاکھ سے زائد زائرین کی فوری طور پر عراق روانگی کے لئے دبائو ڈالےتاکہ لاکھوں زائرین کی تشویش اور مشکلات کا خاتمہ ممکن ہو سکے ۔

رہنمائوں کا آخر میں کہناتھا کہ فیصل رضا عابدی ایک محب وطن اور شہید پرور شخصیت ہیں،ان پر دہشت گردی کی دفعات کے تحت مقدمے کا اندراج قابل مذمت ہے ، افسوس کی بات ہے کہ اس وطن عزیز میں ہزاروں بے گناہ شیعہ سنی پاکستانیوں ، افواج پاکستان اور معصوم بچوں کے قاتل آزاد گھوم رہے ہیں، چوک چوراہوں پر بیٹھ پر معزز جج صاحبان کو مغلظات بکنے والے سینہ تان کر گھوم رہے ہیں، ٹی وی چینلز پر بیٹھ کر اعلیٰ عدلیہ پر صبح شام لعن طعن کرنے والوں کو کوئی نہیں پوچھتا لیکن ایک تنقیدی انٹرویو پر فیصل رضا عابدی کے خلاف دہشت گردی کی دفعات پر مشتمل مقدمے کا اندراج پولیس کے متعصبانہ کرادر کی عکاسی کرتا ہے، فیصل رضا عابدی کو زنجیروں میںجکڑ کر عدالت میں لایا جانا قابل مذمت ہے ایسے مناظر تو قوم نےبھارتی ایجنٹ کلبھوشن یادیو کی گرفتاری کے وقت بھی نہیں دیکھے تھے، ہم محترم چیف جسٹس آف پاکستان سے اپیل کرتے ہیں ہے کہ فیصل رضا عابدی کے حوالے سےعدلیہ کے سخت موقف میں نرمی برتے ہوئےفوری رہائی کے احکامات جاری فرمائیں تاکہ قوم کی اضطراب اور تشویش کا بھی خاتمہ ممکن ہو سکے ۔

وحدت نیوز(چنیوٹ) گزشتہ سالوں کی طرح اس سال بھی مجلس وحدت مسلمین ضلع چنیوٹ شعبہ خواتین نے ۲۹ محرم الحرام تا ۳ صفر المظفر ٹھٹھی شرقی امامبارگاہ میں خمسہ مجالس عزا کا انعقاد کیا،ان مجالس ہائے عزا سے ذاکرہ اہل بیتؑ محترمہ انجم زہراء کاظمی(چنیوٹ) محترمہ سمیرا نقوی(فیصل آباد)اور محترمہ رباب رسول(فیصل آباد) نے خطاب کیا ، اپنے خطاب میں ان معلمات نے جناب زینب سلام الله علیھا کی سیرت و کردار کواجاگر کیا ، محترمہ سمیرا نقوی نے واقعہ کربلا کے بعد ام المصائب سیدہ زینب ع کے کردار کو پیش کیا ،کوفہ و شام کے بازاروں میں بے مقنعہ و چادر بی بی کے خطبوں نے دربار ابن ذیاد و یزید کو لرزا کر رکھ دیا اور اپنے بابا علیؑ کی فصاحت و بلاغت کا عکس پیش کیا ۔

محترمہ رباب رسول نے آج کے دور میں خواتین کے لیے کردار زینبی کو بہترین اسوہ قرار دیا اورکہا کہ سیدہ زینب ع کی سیرت پر عمل کرتے ہوے ہی ہم مردہ معاشروں کو زندہ کر سکتے ہیں اور ایک انقلابی روح پھونک سکتے ہیں ، جب دین پر بات آجاے تو عورت چار دیواری تک محدود نہیں رہتی بلکہ جناب فاطمہ و زینب ع کی طرح میدان میں اتر آتی ہے اور دفاع ولایت و امامت اور دفاع دین میں اپنا کردار ادا کرتی ہے ۔خانم زھرا کاظمی نے ان ایام کو بی بی زینب سلام الله علیھا سے مخصوص کیا اور سیرت سیدہ کے مختلف پہلوؤں پر بھرپور روشنی ڈالی ۔ مجالس ہائے عزا کا اختتام نوحہ خوانی و ماتمداری کے بعد دعا و زیارت سے ہوا ۔

وحدت نیوز (گلگت)  توہین عدالت کے نام پر ملک کے وفادار بیٹوں کے ساتھ ظلم ناقابل برداشت ہے۔سید فیصل رضا عابدی ملک دشمنوں اور کالعدم جماعتوں کے خلاف ایک موثر آواز ہیں جن کا جرم صرف یہ ہے کہ وہ ملک کے دشمنوں کے خلاف آواز اٹھاتے رہے ہیں۔فیصل رضا عابدی کے خلاف انسداد دہشت گردی ایکٹ کے تحت مقدمہ درج کرنا مضحکہ خیزہے۔

مجلس وحدت مسلمین گلگت بلتستان کے ترجمان محمد الیاس صدیقی نے کہا ہے کہ ملک میں انصاف کیلئے آواز بلند کرنا جرم بن چکا ہے۔معصوم پاکستانیوں کو بم دھماکوں اور دہشت گردی کے ذریعے نشانہ بنانے والے آزادانہ دندناتے پھر رہے ہیں جبکہ مظلوم پاکستانیوں کے حق میں بولنے والے کو جیل کی سلاخوں کے پیچھے دھکیل دینا انصاف کے ساتھ کھلا مذاق ہے۔پاکستان کے ساتھ وفاداری نبھانے والوں کو تختہ مشق بناکر ظلم کی نئی تاریخ رقم کی جارہی ہے جبکہ ملک کو دونوں ہاتھوں سے لوٹنے والے اور بدنام زمانہ دہشت گرد عدالتوں سے پاک صاف ہوکر نکلتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ فیصل رضا عابدی کا گناہ صرف یہ ہے کہ اس نے اپنی زندگی کو خطرے میں ڈال کر ملک دشمنوں سے ٹکرلیا ہوا ہے اور ایک رضاکار کے طور پر وہ پاکستان کا مقدمہ لڑرہے ہیں ،ایسے شخص کے خلاف انسداد دہشت گردی ایکٹ کے تحت مقدمات قائم کرکے گرفتار کرنا سمجھ سے بالاتر ہے۔انہوں نے کہا سید فیصل رضا عابدی نے جن حقائق پر سے  پردہ اٹھایا ہے ایک کمیشن بناکر تحقیقات کی جائے تاکہ اصل حقائق سامنے آجائیں ۔ گرفتاریوں کے ذریعے حقائق پر پردہ نہیں ڈالا جاسکتا۔

Page 1 of 242

مجلس وحدت مسلمین پاکستان

مجلس وحدت مسلمین پاکستان ایک سیاسی و مذہبی جماعت ہے جسکا اولین مقصد دین کا احیاء اور مملکت خدادادِ پاکستان کی سالمیت اور استحکام کے لیے عملی کوشش کرنا ہے، اسلامی حکومت کے قیام کے لیے عملی جدوجہد، مختلف ادیان، مذاہب و مسالک کے مابین روابط اور ہم آہنگی کا فروغ، تعلیمات ِقرآن اور محمد وآل محمدعلیہم السلام کی روشنی میں امام حسین علیہ السلام کے ذکر و افکارکا فروغ اوراس کاتحفظ اورامر با لمعروف اور نہی عن المنکرکا احیاء ہمارا نصب العین ہے 


MWM Pakistan Flag

We use cookies to improve our website. Cookies used for the essential operation of this site have already been set. For more information visit our Cookie policy. I accept cookies from this site. Agree