وحدت نیوز(لاہور) مجلس وحدت مسلمین سنٹرل پنجاب کے عزاداری سیل کا اجلاس سیکرٹری جنرل سنٹرل پنجاب علامہ مبارک موسوی کے زیر صدارت صوبائی سیکرٹریٹ سنٹرل پنجاب میں منعقد ہوا،جس میں سید حسن کاظمی،رانا ماجد علی رائے ناصر علی،نجم الحسن،آغا نقی مہدی،سید حسین زیدی،اسدعلی،سید سجاد نقوی سمیت دیگر کارکنان شریک ہوئے،اجلاس میں بریفنگ دیتے ہوئے صوبائی سیکرٹری عزاداری سیل رانا ماجد علی نے کہا کہ امسال پنجاب میں انتظامیہ نے مجالس ،جلوس ہائے عزاء کی انعقاد کے جرم میں ملت تشیع کیخلاف ساڑھے آٹھ سو سے زائد بلاوجہ ایف آئی آر کا اندراج کرکے ہمارے بنیادی آئینی حق پر قدغن لگانے کی کوشش کی ہے،جس کی ہم پور زور مذمت کرتے ہیں ،چہلم امام عالی مقام ؑ کے بعد ہم اس متعصبانہ عمل کیخلاف اعلیٰ عدالتوں سے رجوع کریں گے،فیصل آباد ،سیالکوٹ،ناروال،اوکاڑہ،فاروق آباد،چونیاں،قصور،ساہیوال میں عزاداران امام عالی مقام کو مسلسل شرپسندوں کیساتھ مل کر انتظامیہ ہراساں کرتی رہی،آپریشن ردالفساد کے باوجود شرپسند گروہ کھل کر محرم میں امن عامہ کی تہہ تیغ کرنے میں پیش پیش رہے،بارہا انتظامیہ کے نوٹس میں ان واقعات کو لانے کے باوجود ان شرپسندوں کیخلاف کوئی کاروائی نہ کرنا اس بات کی دلیل ہے کہ ان شرپسندوں کو پنجاب حکومت کی آشیرباد حاصل تھی،فیصل آباد میں شرپسند گروہ نے مدینہ ٹاوُن میں چھتوں پر چڑھ کر عزاداران پر پتھراو کرتے رہے،لیکن عزاداران کی جانب سے امن عامہ کے خاطر کوئی درعمل نہیں دکھایا، فیصل آباد پولیس نے الٹا بے گناہ عزاداروں کیخلاف مقدمات درج کئے،ہم اس متعصبانہ عمل کو کسی صورت برداشت نہیں کریں گے،اوراس کیخلاف ہر قسم کے قانونی آئینی جدو جہد جاری رکھیں گے،لاہور ساندہ میں ن لیگ کے مقامی کونسل آصف ملک کی سرپرستی میں شرپسندوں نے چاردیواری کے اندر منعقد ہونے والے مجلس پر حملہ آور ہوئے اہل خانہ کو ہراساں کر کے سنگین نتائج کی دھمکیاں دیں ،لیکن انتظامیہ کو وہاں بھی ہم نے بے بس دیکھا،انہوں نے کہا کہ ملک جہاں جہاں ن لیگ کی حکومت ہے وہاں وہاں ملت جعفریہ مشکلات کا شکار ہے،ایام عزاء کے بعد عزاداران کی اجلاس میں حکومتی متعصبانہ عمل کیخلاف لائحہ عمل کا اعلان کرینگے۔

وحدت نیوز(مظفرآباد) فرقہ واریت ملک و قوم کے لیے زہر قاتل ہے، مملکت خداداد پاکستان کو ایک سازش کے تحت اس گھناؤنے کھیل کا شکار بنایا جارہا ہے، مسلمانوں کو اندرونی طور پر اختلاف کا شکار کر دشمن اپنے عزائم حاصل کرتا ہے، میانمار میں ظلم و ستم مودی کی ایما پر ہو رہا ہے، مودی کا دورہ میانماراسی گھناؤنی سازش کی ایک کڑی ہے، مودی ایک جانب میانمار میں اپنا کھیل بہترین انداز میں کھیل رہا ہے دوسری جانب آزاد کشمیر میں بھی مودی کی ایما پر را کے ایجنٹوں نے ٹارگٹ کلنگ کو ہتھیار کو طور پر آزمایا ہے، علامہ تصور نقوی پر حملہ دراصل ریاست آزاد کشمیر کی سالمیت اور اتحاد بین المسلمین پر حملہ ہے۔ ان خیالات کا اظہار مرکزی سیکرٹری جنرل مجلس وحدت مسلمین پاکستان علامہ راجہ ناصر عباس جعفری نے وحدت سیکرٹریٹ مظفرآباد میں منعقدہ ایک اجلاس سے ٹیلیفونک خطاب کے دوران کیا ۔

 انہوں نے کہا کہ دشمن ایجنسی را شیعہ سنی لڑائی چاہتی ہے، وہ آزاد کشمیر میں امن و امان کی صورتحال کو مخدوش کرتے ہوئے دنیا کو یہ باور کروانا چاہتی ہے کہ پاکستان کے زیر انتظام کشمیر کسی طور پر بھی پرامن نہیں ۔ مگر سلام ہے آزاد کشمیر کے غیور شیعہ سنی کو کہ جس نے ہر سازش کو بھانپتے ہوئے حکمت سے ناکام بنایا۔ مگر سوال پیدا ہوتا ہے کہ آزاد کشمیر کی حکومت ، انتظامیہ اور قانون نافذ کرنے والے ادارے کیوں سست روی کا شکار ہیں ، کیا یہ فرقہ واریت کی آگ جسے را کے ایجنٹوں نے آزاد کشمیر میں سلگانے کی کوشش کی اسے جلنے سے پہلے بُجھا نہیں دینا چاہیے؟ ان کے اس تجربے کو ناکام نہیں بنا دینا چاہیے؟ کیا ان کی جڑوں تک پہنچتے ہوئے انہیں نیست و نابود نہیں کر دینا چاہیے؟ آزاد کشمیر پرامن خطہ ، کیا امن کو تہہ و بالا کرنے کی سازش کرنے والوں کو کیفر کردار تک نہیں پہنچانا چاہیے؟ آزاد کشمیر کے اندر اتحاد بین المسلمین ، امن ، رواداری اور محبت کے لیے کام کرنے والوں کو محفوظ نہیں کرنا چاہیے؟ انہوں نے کہا کہ سوال ہے حکومت سے کہ انہوں نے اب تک علامہ تصور نقوی کو محفوظ ٹھکانے پر منتقل کیوں نہیں کیا؟ ان کے بچوں کی تعلیم تباہ ہو رہی ہے، ریاستی حکومت اس جانب توجہ کرنا تو دور کی بات عیادت تک کرنے نہیں آئی ، یہ حکومتی نااہلی ہے۔ حملہ کرنے والے پکڑے نہیں گئے ، علامہ کو سیکورٹی دی نہیں جارہی ، علامہ کے دیگر معاملات کو دیکھا نہیں جا رہا ۔ جو کہ ملت جعفریہ اور مجلس وحدت مسلمین کےلئے باعث تشویش ہے ۔ کیا پھر سے کسی سانحے کا انتظار کیا جا رہا ہے؟ کیا ہم پھر سے سڑکوں پر نکلیں اور ارباب اقتدار کو متوجہ کریں ۔ وزیراعظم آزاد کشمیر سے کہتا ہوں ، علامہ تصور نقوی کا مسئلہ انتہائی اہم مسئلہ، اگر عیادت کرنا گوارہ نہیں تو نہ کریں مگر ریاست کی جو ذمہ داریاں ہیں انہیں پورا کیا جائے۔ انتظامیہ اپنا کام تندی و تیزی سے کرتے ہوئے مجرمان کو کیفر کردار تک پہنچائے۔ ہم برما کے مسلمانوں کے ساتھ بھی اظہار یکجہتی کرتے ہیں ، اور سمجھتے ہیں کہ بھارتی ایما پر یہ سب کچھ ہو رہا ہے ، مگر آزاد کشمیر میں بھی ہمیں آنکھیں بند نہیں کرنی چاہیے اور مزید کسی سانحے کا انتظار کیئے بغیر اقدامات کرنا ہوں گے۔

وحدت نیوز(کوئٹہ) آئی جی ايف سی ميجرجنرل نديم احمد انجم کےزيرصدارت محرم الحرام کی مناسبت سےہيڈکوارٹرايف سی ميں سکيورٹی کانفرنس کا انعقاد کیا گیا جس میں  مجلس وحدت مسلمین کے رکن بلوچستان اسمبلی آغا رضا اور مرکزی رہنما علامہ سید ہاشم موسوی سمیت دیگرمکاتب فکرکی  مذہبی سماجی شخصیات نے شرکت کی،اجلاس سے خطاب کرتےھوۓ آئی جی ايف سی ميجرجنرل نديم احمد انجم نے کہاں کہ اتحادبين المسلمين،فرقہ وارانہ ہم آہنگی اور يکجھتی کے سلسلے ميں ايک دوسرےکا بھرپور ساتھ ديں،محرم الحرام ہميں قربانی،صبر اور اتحاد کا پيغام ديتا ہے،پاکستان ميں فرقہ واريت نہیں ہے بلکہ دہشتگردی ہے دہشتگرد کاکوہئ مذہب نہيں ھوتا اور ہم سب نے مل کر ان کا قلع قمعہ کرنا ہے،دشمن ہمارے اتحادوامن کو تباہ کرنے کے لےہر ممکن حربے استعمال کررہا ہے جيسےہم سب نےمل کر ناکام بنانا ہے،ہمارا مثالی اتحاد فرقہ بندی سے بالا تر ہےاور يہ اتحاد جاری رہے گا،فرقہ وارانہ اور گڑبڑ پھيلانے والے عناصر سےھوشيار رہا جائےاور ان کی بروقت نشاندہی کی جاۓ۔تاکہ شرپسندوں کو کيفرکردار تک پہنچایاجاسکے۔

وحدت نیوز(لاہور) مجلس وحدت مسلمین پنجاب کے صوبائی کابینہ کا اجلاس سیکرٹری جنرل پنجاب علامہ مبارک موسوی کی زیر صدارت صوبائی سیکرٹریٹ لاہور میں منعقد ہوا ،اجلاس میں پروفیسر ڈاکٹر افتخار حسین نقوی،علامہ محمد اقبال کامرانی،علامہ ملازم نقوی،سید حسن کاظمی،علمدار حسین،زاہد حسین مہدوی سید حسین زیدی سمیت دیگر رہنماوں نے شرکت کی،اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے علامہ مبارک موسوی نے کہا کہ مسلم لیگ ن اداروں کیساتھ تصادم کی پالیسی پر گامزن ہے،ن لیگ اپنے کالے کرتوت چھپانے کے لئے اعلیٰ عدلیہ اور قومی سلامتی کے ادروں کیخلاف ہرزہ سرائی کر رہی ہے،جسے کوئی بھی محب وطن برداشت نہیں کر سکتا،عدالتوں میں پیش نہ ہو کر آل شریف توہین عدالت کے مرتکب ہوئے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ سانحہ ماڈل ٹاوُن پر جسٹس باقر نجفی کی رپورٹ کو منظرعام پر لایا جائے،پنجاب حکومت محرم سے قبل ملت جعفریہ کو ہراساں کرنے کے لئے انتظامیہ کے ذریعے بانیان مجالس پر پنجاب کے مختلف اضلاع میں دباوُ ڈالنے میں مصروف ہے،ہم عزاداری امام حسین علیہ السلام پر کسی بھی قد غن کو قبول نہیں کریں گے،چاردیواری کے اندر مجالس عزاء ،روائتی جلوس ہائے عزاء کو محدود کرنے کی کسی بھی سازش کو کامیاب نہیں ہونے دینگے،علامہ مبارک موسوی نے کہا ہے کہ پنجاب میں ملت جعفریہ سے تعلق رکھنے والے درجنوں علماء اور پڑھے لکھے نوجوان تاحال لاپتہ ہیں،سی ٹی ڈی اور پولیس کے ذریعے پنجاب حکومت صوبے بھر میں ملت جعفریہ کو ہراساں کرنے میں مصروف ہیں،ہم مطالبہ کرتے ہیں کہ ہمارے مسنگ پرسنز کو عدالتوں میں پیش کیا جائے،انہوں نے کہا کہ پنجاب میں ملت جعفریہ کو شرپسندوں کیساتھ ساتھ ن لیگی حکومت کے انتقامی کاروائیوں کا بھی سامنا ہے،انتہا پسندکالعدم جماعتوں کو پنجاب میں ن لیگ کی مکمل پشت پناہی حاصل ہے،اجلاس میں مرکزی دعائے عرفہ کا اجتماع 9 ذی الحج کو لاہور میں منعقد کروانے کا بھی اعلان کیا گیا۔

وحدت نیوز(راولپنڈی) مجلس وحدت مسلمین راولپنڈی شعبہ خواتین کا ایک اہم اجلاس سیکرٹری جنرل قندیل زہرا کاظمی کی زیر صدارت ہوا۔جس میں بتایاگیا کہ شہید قائد عارف حسینی کی 29 ویں برسی کی تیاریاں حتمی مراحل میں داخل ہو چکی ہیں۔برسی کا انعقاد 6اگست 2017 بروز اتوار ’’مہدی ؑ برحق کانفرنس‘‘ کے عنوان سے اسلام آباد میں ہو گا۔جس میں شعبہ خواتین کی طرف سے بھرپور شرکت کی جائے گی۔۔اجلاس میں برسی کے سلسلے میں موثر رابطہ مہم پر اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے اسے جاری رکھنے کی ضرورت پر زور دیا۔خواتین کو لانے لے جانے کے لیے انتظامات کا بھی جائزہ لیا گیا اور فیصلہ کیا گیا کہ برسی پر لانے لے جانے کے لیے ٹرانسپورٹ اور طعام کا بروقت اور مناسب بندوبست کیا جائے گا اوریہ خیال رکھا جائے گا کہ خواتین شرکا کو کسی قسم کی کوئی مشکل درپیش نہ ہو۔

قندیل زہرا نے کہا کہ شہید قائد کی محبت قوم پر قرض ہے جسے قائد کے مشن پر قائم رہ کر ادا کرنا ہو گا۔قائد حسینی کا وجود اس قوم اور ملک کے لیے کسی نعمت سے کم نہیں تھا۔وہ ایسے باعمل اور جرات مند قائد تھے جن کا کردار ان کے گفتار کی تصدیق کرتا رہا ۔شہید عارف حسینی وطن عزیز میں اخوت و اتحاد کے داعی تھے۔اتحاد امت کے لیے ان کی کوششوں کو کبھی فراموش نہیں کیا جاسکتا۔عالم استعمار ان کے جرات مندانہ افکار سے خائف تھا۔اقوام عالم اس بات سے بخوبی آگاہ ہے کہ وحدت امت وہ واحد ہتھیار ہے جس سے اسلام دشمن عناصر کے ناپاک ارادے خاک میں ملائے جا سکتے ہیں۔انہوں نے وحدت و اخوت کے علمبردار شہید قائد کو اپنی راہ ہٹانے کے لیے پاکستان میں موجود اپنے ہم نواؤں کا سہارا لیا۔قائد عارف حسینی کی شہادت اس ملک کے لیے ناقابل تلافی نقصان ثابت ہوا۔مجلس وحدت مسلمین شہید قائد کے مشن کو لے کر میدان عمل میں نکلی ہے۔حق کی آواز پر لبیک کہنے کے لیے پوری قوم ہمارے ساتھ کھڑی ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہم پاکستان کو مستحکم اور ترقی کی جانب گامزن دیکھنا چاہتے ہیں اور یہ تب ہی ممکن ہے جب ان تکفیری گروہوں کے خلاف مثبت اقدامات کیے جائیں گے جو ملک میں تفرقہ کی آگ لگانے کے لیے سازشوں میں مصروف ہیں۔آج ہر قومی ایشو پر سنی بھائی ہمارے ساتھ کھڑے نظر آتے ہیں جو شہید عارف کے مشن کی تکمیل کی واضح ثبوت ہے، انہوں نے کہا کہ 6اگست کو اسلام آباد پریڈ گراؤنڈ میں جڑواں شہروں کی خواتین اپنے بچوں کے ہمراہ بھرپور انداز میں پورے قومی جذبے کے ساتھ شریک ہوں گی۔

وحدت نیوز(اسلام آباد) مجلس وحدت مسلمین کے صوبائی و ضلعی رہنماؤں کا ایک اہم اجلاس مرکزی رہنما نثار فیضی کی زیر صدارت مرکزی سیکرٹریٹ میں ہوا۔اجلاس میں شہید عارف حسینی کی برسی کے سلسلے میں ہونے والی ’’مہدی ؑ برحق کانفرنس ‘‘کے انتظامات کا جائزہ لیا گیا۔ شرکا ء نے راولپنڈی، اسلام آباد، چکوال، اٹک، جہلم، اور پنجاب کے دیگر اضلاع میں جاری رابطہ مہم کی تفصیلی رپورٹ اجلاس میں پیش کی اور اپنے اپنے علاقوں میں ہونے والے روابط اور پیش رفت سے انتظامی کمیٹی کے سربراہ کو آگاہ کیا،  اجلاس میں مرکزی سیکرٹری رابطہ اقرار ملک، مرکزی سیکرٹری یوتھ ڈاکٹر یونس، مسئول آ فس علامہ عبدالخالق اسدی، رکن شوری عالی علامہ اقبال بہشتی، ڈپٹی سیکرٹری تنظیم سازی علامہ اصغر عسکری، صوبائی سیکرٹری تنظیم سازی نیاز بخاری اور صوبائی سیکرٹری تعلیم اظہر کاظمی نے بھی شرکت کی،اس موقعہ پر بتایا گیا کہ 6اگست بروز اتوار پریڈ گراؤنڈ (شکرپڑیاں) اسلام آباد میں شہید قائد کی برسی کی تقریب منعقد ہو گی جس میں ملک کے تمام بڑے شہروں سے شیعہ سنی افراد شریک ہوں گے۔اس سلسلے میں نامور علما، کرام اور مختلف مذہبی و سیاسی شخصیات کو بھی مدعو کیا جا چکا ہے۔تمام اضلاع میں روابط کا سلسلہ تقریبا مکمل ہو چکا ہے۔تشہیری مہم میں مجلس وحدت مسلمین کے کارکنان نے شب و روز محنت کر کے بہترین کارکردگی کا مظاہرہ کیا ہے۔ مختلف علاقوں کی جامع مساجد میں نماز جمعہ کے اجتماعات میں پمفلٹ کی تقسیم اور اعلانات کیے گئے اور شہید حسینی کی قومی خدمات پر روشنی ڈالی گئی۔تقریب کے روز سٹیج کی تیاری ، ساؤنڈ سسٹم کی مناسب تنصیب اور نشست و برخاست کے معاملے پر بھی تفصیلی تبادلہ خیال کرتے ہوئے اس امر کو یقینی بنانے پر اتفاق رائے ہوا کہ مذکورہ معاملات کو بہترین انداز میں طے کرنے میں کوئی کسر نہ چھوڑی جائے۔

اجلاس میں آئندہ جمعہ پر مرکزی و صوبائی شخصیات نماز کے اجتماعات سے خطاب کا شیڈول بھی طے کیا گیا،چیئرمین کانفرنس نثار فیضی نے تمام مسئولین کی فعالیت کو سراہتے ہوئے آئندہ ایام میں اور بھی بھرپور فعالیت پر زور دیا،اجلاس میں وحدت یوتھ کے ڈاکٹر یونس اور وفا حیدر نے یوتھ کی فعالیت پر بریفنگ بھی دی،اراکین نے وحدت یوتھ کی کاوشوں کو سراہا۔بتایا گیا کہ برسی کی تقریب کو حکومت کی طرف سے فول پروف سیکورٹی کی فراہمی کے سلسلے میں متعلقہ انتظامیہ سے بات چیت بھی حتمی مراحل میں داخل ہو چکی ہے۔ اس کے علاوہ مجلس وحدت مسلمین کے سینکڑوں سکاؤٹس کو کانفرنس کے داخلی اور خارجی راستوں پر تعینات کیا جائے گا تاکہ ہر آنے جانے والےکی کڑی نگرانی کی جا سکے۔کانفرنس کے چیئرمین نثار فیضی نے تقریب کے انتظامات پر اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے صوبائی و ضلعی عہدیدران کی کاوشوں کو سراہا ہے۔انہوں نے کہا کہ یہ ایک ملی فریضہ ہے جس کو ہم سب نے مل کر ادا کرنا ہے۔

Page 1 of 24

مجلس وحدت مسلمین پاکستان

مجلس وحدت مسلمین پاکستان ایک سیاسی و مذہبی جماعت ہے جسکا اولین مقصد دین کا احیاء اور مملکت خدادادِ پاکستان کی سالمیت اور استحکام کے لیے عملی کوشش کرنا ہے، اسلامی حکومت کے قیام کے لیے عملی جدوجہد، مختلف ادیان، مذاہب و مسالک کے مابین روابط اور ہم آہنگی کا فروغ، تعلیمات ِقرآن اور محمد وآل محمدعلیہم السلام کی روشنی میں امام حسین علیہ السلام کے ذکر و افکارکا فروغ اوراس کاتحفظ اورامر با لمعروف اور نہی عن المنکرکا احیاء ہمارا نصب العین ہے 


MWM Pakistan Flag

We use cookies to improve our website. Cookies used for the essential operation of this site have already been set. For more information visit our Cookie policy. I accept cookies from this site. Agree