وحدت نیوز (گلگت) گلگت بلتستان کے آئینی حقوق سے متعلق کشمیری سیاستدانوں کی غیر ضروری مداخلت سے علاقے میں کشمیر کیلئے نفرت کا ماحول بن رہا ہے۔سٹیٹ سبجیکٹ رولز کے خاتمے کے بعد گلگت بلتستان کی حیثیت سٹیٹ جیسی نہیں رہی ہے ۔گلگت بلتستان کو مزید بے آئین حالت میں نہیں رکھا جاسکتا۔

مجلس وحدت مسلمین گلگت بلتستان کے ترجمان محمد الیاس صدیقی نے کہا ہے کہ کشمیر ی رہنما محض بدنیتی کی بنیاد پر گلگت بلتستان کے حقوق کی راہ میں رکاوٹ ڈال رہے ہیں اور اکہتر سالوں سے 28 ہزار مربع میل پر پھیلے ہوئے علاقے کو بنیادی حقوق سے محروم رکھا گیا ہے۔گلگت بلتستان کے عوام کا آئینی حقوق کے حوالے سے ایک ہی بیانیہ ہے جبکہ چند لوگ جن کی تعداد انگلیوں میں گنی جاسکتی ہے وہ آئینی حقوق کی مخالفت میں کھڑے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ جو لوگ آئینی گلگت بلتستان میں نہیں رہنا چاہتے وہ بے شک کشمیر چلے جائیں۔گلگت بلتستان کا نمائندہ فورم قانون ساز اسمبلی ہے جس نے دو مرتبہ متفقہ طور پر آئینی حقوق کے حوالے سے قرارداد پاس کی ہے جبکہ سول سوسائٹی اور بار کونسلز کے کئی مرتبہ آل پارٹیز کانفرنسز کا متفقہ اعلامیہ بھی آئینی گلگت بلتستان کے حوالے سے موجود ہے۔انہوں نے کہا کہ ماضی کے حکمرانوں نے گلگت بلتستان کے عوام کو مایوس کیا ہے اور موجودہ تحریک انصاف کی حکومت اور سپریم کورٹ سے عوام نے امیدیں وابستہ کی ہوئیں ہیں اور اب وہ وقت آگیا ہے کہ گلگت بلتستان کو قومی دھارے میں شامل کیا جائے۔

وحدت نیوز(گلگت) کراچی اور ہنگو میں دہشت گردانہ حملہ کرنے والے ایک ہی مائنڈ سیٹ کے پیروکار ہیں۔کراچی اور ہنگو میں بزدلانہ حملوں کی شدید مذمت کرتے ہیں۔حکومت ملک دشمن عناصر کیخلاف عملی اقدامات کرے اور دہشت گردوں کو نشان عبرت بنائے۔مجلس وحدت مسلمین گلگت بلتستان کے ترجمان محمد الیاس صدیقی نے کراچی اور ہنگو کے ناخوشگوار واقعات پر سخت رد عمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ حکومت دہشت گردوں کیخلاف کاروائی سے گھبراہٹ کا شکار ہے ۔پچھلی حکومتوں میں بھی دہشت گردوں کیخلاف کاروائی کی بجائے نرم رویہ اختیار کیا گیا جس کے نتیجے میں ہزاروں پاکستان لقمہ اجل بن گئے اور اب موجودہ حکومت بھی اپنے پیشرو حکومتوں کے نقش قدم پر چل نکلی ہے۔دہشت گرد کھلے عام دندناتے پھررہے ہیں جبکہ شریف اور حق کی آواز بلند کرنے والوں کو تختہ مشق بنایا جارہا ہے۔

انہوں نے کہا کہ دہشت گردی ملک کیلئے ناسور بن چکا ہے اور ملک کے بیشتر علاقوں میں دہشت گردوں کا نیٹ ورک فعال ہے اور حکومت ہاتھ پر ہاتھ دھرے تماشہ بین ہے۔جب بھی کوئی ناخوشگوار واقعہ رونما ہوتا ہے تو سیکورٹی ادارے حرکت میں آتے ہیں اور پکڑ دھکڑ شروع کرتے ہیں ۔انہوں نے کہا کہ دہشت گردی کے پیچھے ایک مائنڈ سیٹ ہے جس کی بیخ کنی کی ضرورت ہے جب تک اس مائنڈ سیٹ کو ختم نہ کیا جائے دہشت گردی یوں ہی جاری رہے گی۔ہمارا شروع دن سے مطالبہ ہے کہ دہشت گردوں کو مالی واخلاقی سپورٹ کرنے والوں کے خلاف اقدام کیا جائے جبکہ حکومت نے انہیں کھلی آزادی دے رکھی ہے اور اسلام آباد میں کالعدم جماعتوں اور دہشت گردی کے حامیوں کو کھلے عام جلسے جلوسوں کی اجازت دیکر حکومت نے اپنے چہرے سے خود ہی نقاب الٹ دیا ہے۔

وحدت نیوز(گلگت) ملت تشیع کے باکردار افراد کو جبری گمشدگیوں کے ذریعے مرعوب کرنے کا خواب شرمندہ تعبیر نہ ہوگا حکومت کی بیلنس پالیسی سے مسائل پیچیدہ ہورہے ہیں۔ملکی سالمیت کیلئے جانوں کا نذرانہ پیش کرنے والی تنظیموں کے باکردار افراد سید رضوان کاظمی اور سید رضی العباس شمسی کی جبری گمشدگی قابل مذمت ہے۔

مجلس وحدت مسلمین گلگت بلتستان کے ترجمان محمد الیاس صدیقی نے امامیہ آرگنائزیشن پاکستان کے سابق چیئرمین سید رضی العباس شمسی اور آئی ایس او پاکستان کے سابق مرکزی صدر برادر رضوان کاظمی کی جبری گمشدگی کی سخت مذمت کرتے ہوئے اسے ملک میں ناعاقبت اندیش حکمرانوں کی بیلنس پالیسی کا شاخسانہ ہے۔امامیہ آرگنائزیشن اور امامیہ اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن ملت تشیع کی پرامن اور فلاحی امورپر کام کرنے والی تنظیمیں ہیں جن کا دامن دہشت گردی سے پاک و صاف ہے اور ایسے فلاحی اور کردار سازی کے ذریعے ملکی استحکام کیلئے بے لوث خدمات سرانجام دینے والے والوں کے خلاف کاروائیاں انتہائی ظلم ہے جبکہ ریاستی اداروں کے خلاف اعلان جنگ کرنے والوں کے خلاف نہ صرف کوئی کاروائی نہیں ہورہی بلکہ ان کے مطالبات بھی مانے جاتے ہیں اور اسلام آباد کے مرکز میں انتہا پسند و کالعدم جماعتوں کو جلسے جلوسوں کی اجازت دی جارہی ہے جن کے جلسے جلوسوں میں کھلے عام فرقہ واریت کو ہوادی جارہی ہے اور دوسری جانب اتحاد بین المسلمین کیلئے کام کرنے والوں کے خلاف معاندانہ کاروائیاں خلاف قانون و خلاف عقل ہیں۔انہوں نے کہا کہ جبری گمشدگی انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزی ہے اگر حکومت کے پاس ان کے خلاف کوئی ثبوت ہے تو عدالتوں میں پیش کرے۔

وحدت نیوز (گلگت)  توہین عدالت کے نام پر ملک کے وفادار بیٹوں کے ساتھ ظلم ناقابل برداشت ہے۔سید فیصل رضا عابدی ملک دشمنوں اور کالعدم جماعتوں کے خلاف ایک موثر آواز ہیں جن کا جرم صرف یہ ہے کہ وہ ملک کے دشمنوں کے خلاف آواز اٹھاتے رہے ہیں۔فیصل رضا عابدی کے خلاف انسداد دہشت گردی ایکٹ کے تحت مقدمہ درج کرنا مضحکہ خیزہے۔

مجلس وحدت مسلمین گلگت بلتستان کے ترجمان محمد الیاس صدیقی نے کہا ہے کہ ملک میں انصاف کیلئے آواز بلند کرنا جرم بن چکا ہے۔معصوم پاکستانیوں کو بم دھماکوں اور دہشت گردی کے ذریعے نشانہ بنانے والے آزادانہ دندناتے پھر رہے ہیں جبکہ مظلوم پاکستانیوں کے حق میں بولنے والے کو جیل کی سلاخوں کے پیچھے دھکیل دینا انصاف کے ساتھ کھلا مذاق ہے۔پاکستان کے ساتھ وفاداری نبھانے والوں کو تختہ مشق بناکر ظلم کی نئی تاریخ رقم کی جارہی ہے جبکہ ملک کو دونوں ہاتھوں سے لوٹنے والے اور بدنام زمانہ دہشت گرد عدالتوں سے پاک صاف ہوکر نکلتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ فیصل رضا عابدی کا گناہ صرف یہ ہے کہ اس نے اپنی زندگی کو خطرے میں ڈال کر ملک دشمنوں سے ٹکرلیا ہوا ہے اور ایک رضاکار کے طور پر وہ پاکستان کا مقدمہ لڑرہے ہیں ،ایسے شخص کے خلاف انسداد دہشت گردی ایکٹ کے تحت مقدمات قائم کرکے گرفتار کرنا سمجھ سے بالاتر ہے۔انہوں نے کہا سید فیصل رضا عابدی نے جن حقائق پر سے  پردہ اٹھایا ہے ایک کمیشن بناکر تحقیقات کی جائے تاکہ اصل حقائق سامنے آجائیں ۔ گرفتاریوں کے ذریعے حقائق پر پردہ نہیں ڈالا جاسکتا۔

وحدت نیوز (گلگت)  راجہ جلال حسین مقپون کے گورنر گلگت بلتستان مقرر ہونے پر نیک تمنائوں کا اظہار کرتے ہیں اور امید کرتے ہیں کہ وہ گلگت بلتستان کے محروم عوام کی محرومیوں اور مسائل کو حل کرنے پر خصوصی توجہ دینگے۔

مجلس وحدت مسلمین گلگت بلتستان کے ترجمان محمد الیاس صدیقی نے اپنے ایک بیان میں راجہ جلال حسین مقپون کو گورنر گلگت بلتستان مقرر ہونے پرنیک تمنائوں کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ گلگت بلتستان کے عوام ایک عرصے سے بنیادی حقوق سے محروم ہیں اور گورنر موصوف عوامی مسائل کے حل کیلئے اپنی توانائیوں سے بھرپور استفادہ کرینگے۔امید ہے گلگت بلتستان میں میرٹ کی بحالی اور غریب عوام کے بنیادی مسائل کے حل کو اپنی اولین ترجیحات میں شامل کرینگے۔

انہوں نے کہا کہ صوبائی حکومت کی شاہ خرچیوں اور پروٹوکول پر اٹھنے والے اخراجات کو کنٹرول کرکے عوامی مسائل کے حل کو یقینی بنانا وقت کی ضروریات میں سے ہے لیکن بد قسمتی سے گلگت بلتستان حکومت نے تمام اخلاقی حدود کو پائمال کیا ہے اور میرٹ کی دھجیاں بکھیر دی  ہیں جس پر قابو پانا انتہائی ضروری ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ صوبائی حکومت نے خزانے کو چند گھرانوں تک محدود کردیا ہے جس طرح سے پنجاب میں نواز لیگی حکومت نے اپنے قریبی رشتہ داروں اور دوستوں کیلئے خزانے کے منہ کھول دیئے تھے۔انہوں نے امید ظاہر کی کہ گورنر موصوف غریب عوام کو انصاف فراہم کرنے میں کوئی کسر نہیں چھوڑیں گے۔

وحدت نیوز (گلگت) محرم الحرام میں قیام امن کیلئے محنت کرنے پرچیف سیکرٹری اور آئی جی پی گلگت بلتستان اور ضلعی ایڈمنسٹریشن سمیت سیکورٹی فورسز کا شکریہ ادا کرتے ہیں۔تمام چھوٹے بڑے پروگراموں میں ڈی سی اور ایس ایس پی گلگت کی شرکت اور فوری احکامات قابل تعریف ہیں۔

مجلس وحدت مسلمین گلگت بلتستان کے ترجمان محمد الیاس صدیقی نے کہاہے کہ فول پروف سیکورٹی اور صفائی کو بہتر کرنے پر ایڈمنسٹریشن کی کاوشیں قابل تعریف ہیں۔اگر حکومتی ذمہ داران کاعوام کے ساتھ روابط مضبوط ہوں تو مسائل جنم لینے کی بجائے ختم ہوجاتے ہیں،امسال ماہ محرم الحرام میں ایڈمنسٹریشن اور فورسز کا تعاون مثالی رہا ہے جبکہ دوسری جانب حکومتی عہدیدار ،وزراء،مشیروں کی فوج ظفرموج کہیں نظر نہیں آئی جو کہ انتہائی تشویشناک امر ہے۔

انہوں نے کہا کہ یکم محرم الحرام کو گلگت بلتستان حکومت نے فرقہ وارانہ بنیاد پر جی بی کو تقسیم کرکے تین اضلاع میں چھٹی کا اعلان کرتے ہوئے سوائے منافرت پھیلانے کے کوئی اور کام نہیں کیا جو کہ قابل مذمت ہے اور اس اقدام کی گلگت بلتستان سے تعلق رکھنے والے ہر ذی شعور شخص نے مذمت کی ہے اور آنے والے وقتوں میں ایسے اقدامات علاقے کیلئے نیک شگون نہیں ہونگے۔

انہوں نے کہا کہ 8 محرم الحرام کو نواز شریف کی ضمانت پر رہائی کی خوشی میں ہوائی فائرنگ کرکے جہاں علاقے کے امن وامان کو سبوتاژ کرنے کی سازش کی وہاں محرم الحرام کے تقدس کو پائمال کرکے ایک نئی روایت کو جنم دیا ہے اور خاص کر پارلیمانی سیکرٹری برکت جمیل کا غیر ذمہ دارانہ فعل قابل مذمت ہے۔انہوں نے کہا کہ محرم الحرام کے تقدس کے پائمالی کے پیش نظر فائرنگ کرنے والے عناصر کیخلاف قانونی کاروائی کی جائے خاص کر ممبر اسمبلی برکت جمیل کو نااہل قرار دیا جائے۔

Page 1 of 25

مجلس وحدت مسلمین پاکستان

مجلس وحدت مسلمین پاکستان ایک سیاسی و مذہبی جماعت ہے جسکا اولین مقصد دین کا احیاء اور مملکت خدادادِ پاکستان کی سالمیت اور استحکام کے لیے عملی کوشش کرنا ہے، اسلامی حکومت کے قیام کے لیے عملی جدوجہد، مختلف ادیان، مذاہب و مسالک کے مابین روابط اور ہم آہنگی کا فروغ، تعلیمات ِقرآن اور محمد وآل محمدعلیہم السلام کی روشنی میں امام حسین علیہ السلام کے ذکر و افکارکا فروغ اوراس کاتحفظ اورامر با لمعروف اور نہی عن المنکرکا احیاء ہمارا نصب العین ہے 


MWM Pakistan Flag

We use cookies to improve our website. Cookies used for the essential operation of this site have already been set. For more information visit our Cookie policy. I accept cookies from this site. Agree