وحدت نیوز(کراچی) کراچی کے علاقے انچولی سوسائٹی میں ہونے والے دھماکوں میں شہید ہونے والے سید ضرغام نقوی کی نماز جنازہ ادا کر دی گئی۔ شہید سید ضرغام نقوی کی نماز جنازہ مسجد و امام بارگاہ شہدائے کربلا انچولی سوسائٹی میں مولانا شیخ غلام علی وزیری کی اقتداء میں ادا گئی۔ اس موقع پر مجلس وحدت مسلمین سندھ کے ڈپٹی سیکرٹری جنرل علامہ سید صادق رضا تقوی، جعفریہ لیگل ایڈ کمیٹی کے سربراہ ایڈووکیٹ سید تصور حسین رضوی و دیگر علماء کرام سمیت مومنین و مومنات نے بھی بڑی تعداد میں شرکت کی۔ نماز جنازہ میں انتہائی رقت آمیز مناظر دیکھنے میں آئے اور شہید کے اہل خانہ سمیت دیگر مومنین و مومنات بھی زار و قطار روتے رہے۔ بعد ازاں شہید کے جسد خاکی کو وادی حسین قبرستان سپر ہائی وے لے جایا گیا جہاں آہوں اور سسکیوں کے ساتھ شہید سید ضرغام نقوی کی تدفین کی گئی۔

وحدت نیوز(کراچی) کراچی کے علاقے انچولی سوسائٹی میں بم دھماکے کی جگہ پر سنی اتحاد کونسل کی جانب سے علاقے کے شیعہ و سنی مسلمانوں سے اظہار یکجہتی اور وحدت کی فضاء کے فروغ کیلئے امن واک کا اہتمام کیا گیا۔ واک کی قیادت سنی اتحاد کونسل کے مرکزی رہنما طارق محبوب نے کی جبکہ اس موقع پر تحریک منہاج القرآن کے رہنما مولانا فیصل عزیزی سمیت دیگر اہل سنت علماء بھی موجود تھے۔ ریلی میں ایم ڈبلیو ایم کے مرکزی ڈپٹی سیکریٹری جنرل علامہ حسن ظفر نقوی، صوبائی ڈپٹی سیکریٹری جنرل علامہ صادق رضا تقوی، ملی یکجہتی کونسل سندھ کے صدر علامہ قاضی احمد نورانی صدیقی، جمعیت علمائے پاکستان کے رہنما علامہ شوکت مغل، عوامی مسلم لیگ کے محفوظ یار خان، آل پاکستان شیعہ ایکشن کمیٹی کے علامہ مرزا یوسف حسین، مرکزی تنظیم عزا کے صدر سلمان مجتبیٰ نقوی، جعفریہ الائنس کے شبر رضا، ایڈوکیٹ تصور نقوی، علامہ دیدار جلبانی، علی حسین نقوی، علامہ علی انور جعفری سمیت دیگر رہنماؤں نے بھی شرکت کی جبکہ عوام کی بڑی تعداد بھی امن واک کے موقع پر موجود تھی۔

 

امن واک سے خطاب کرتے ہوئے سنی اتحاد کونسل کے رہنما طارق محبوب کا کہنا تھا کہ اس ملک میں کوئی فرقہ واریت نہیں ہے، مٹھی بھر دہشت گرد ملک کا امن غارت کررہے ہیں اور حکومت خاموش تماشائی کا کردار ادا کر رہی ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ کالعدم تنظیموں کی سرگرمیوں پر فوری پابندی عائد کی جائے، کالعدم جماعتیں اہل سنت کا نام استعمال کرکے امت مسلمہ کے درمیان تفرقہ ڈالنا چاہتی ہیں لیکن آج کی اس واک میں موجود شیعہ و سنی علماء کی موجودگی اس بات کی نشاندہی کررہی ہے کہ دہشت گردوں کے خلاف شیعہ و سنی عوام ایک ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ انچولی دھماکہ میں شیعہ و سنی افراد نے مشترکہ طور جام شہادت نوش کیا جو اس بات کا اعلان ہے کہ دہشت گردوں کا شیعہ و سنی سے کوئی تعلق نہیں بلکہ یہ بیرونی ریال پر پلنے والے لوگ ہیں کہ جو پاکستان میں عالمی استعمار کی سازشوں کو مرکز بنانا چاہتے ہیں، حکومت ہوش کے ناخن لے اور دہشت گردوں کے خلاف ملک گیر آپریشن کرے۔

وحدت نیوز(کراچی) ٹارگٹ کلنگ کے ذریعے سیاسی طالبان کراچی کا امن خراب کررہے ہیں، ٹارگٹڈ آپریشن کے باوجود دہشت گردی کے واقعات سیکورٹی اداروں کی کارکردگی پر سوالیہ نشان ہیں، ٹارگٹ کلنگ کی یہ صورتحال بدستور جاری رہی تو وزیراعلیٰ ہاؤس کا گھیراؤ کرسکتے ہیں۔ ان خیالات کا اظہار مجلس وحدت مسلمین پاکستان صوبہ سندھ کے ڈپٹی سیکریٹری جنرل علامہ صادق رضا تقوی اور سیکریٹری سیاسیات کراچی علی حسین نقوی نے کراچی میں دو ڈاکٹرز سمیت چار افراد کی شہادت کے خلاف نمائش چورنگی اور انچولی سوسائٹی میں علیحدہ علیحدہ احتجاجی مظاہروں کے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ احتجاجی مظاہروں میں عوام کی بڑی تعداد نے شرکت کی اور حکومت وقت کے خلاف شدید نعرے بازی کی۔

 

اپنے خطاب میں رہنماؤں کا کہنا تھا کہ محرم الحرام کے آغاز میں ملت جعفریہ کے افراد کا قتل عام حکومت سندھ کی ناکامی ہے، صوبائی حکومت محرم الحرام کے آغاز پر ہونے والی ٹارگٹ کلنگ کے واقعات کے ذمہ داروں کو گرفتار کریں وگرنہ ملت جعفریہ جلوس ہائے عزا میں بھرپور طریقے اپنا احتجاجی حق استعمال کرے گی۔ رہنماؤں کا کہنا تھا کہ حکومت سندھ ٹارگٹ کلنگ کے ملزمان کو گرفتار کرکے اپنی ذمہ داری پوری کرے تاکہ محرم الحرام میں امن و امان کےقیام کو یقینی بنایا جاسکے۔

مجلس وحدت مسلمین پاکستان

مجلس وحدت مسلمین پاکستان ایک سیاسی و مذہبی جماعت ہے جسکا اولین مقصد دین کا احیاء اور مملکت خدادادِ پاکستان کی سالمیت اور استحکام کے لیے عملی کوشش کرنا ہے، اسلامی حکومت کے قیام کے لیے عملی جدوجہد، مختلف ادیان، مذاہب و مسالک کے مابین روابط اور ہم آہنگی کا فروغ، تعلیمات ِقرآن اور محمد وآل محمدعلیہم السلام کی روشنی میں امام حسین علیہ السلام کے ذکر و افکارکا فروغ اوراس کاتحفظ اورامر با لمعروف اور نہی عن المنکرکا احیاء ہمارا نصب العین ہے 


MWM Pakistan Flag

We use cookies to improve our website. Cookies used for the essential operation of this site have already been set. For more information visit our Cookie policy. I accept cookies from this site. Agree