وحدت نیوز (کراچی) مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی ڈپٹی سیکریٹری جنرل علامہ حسن ظفر نقوی نے کہا ہے کہ حکمران امریکہ سے خوفزدہ ہوسکتے ہیں مگر پاکستانی قوم نہیں، گذشتہ دنوں نمائش چورنگی پر امامیہ اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن کی پر امن احتجاجی ریلی پر سندھ پولیس اور حکومتی ذمہ داران نے جو تشدد کیا وہ قابل مذمت ہے۔ ایک بیان میں ان کا کہنا تھا کہ ہمارے نوجوانوں کا قصور اور جرم یہ تھا کہ وہ شیطان بزرگ امریکہ کے خلاف احتجاج کر رہے تھے اور اس بات کا عہد بھی کیا جا رہا تھا کہ پاکستانی مفادات پر ہم سب کی جان قربان ہے جس پر انہیں درندگی کا نشانہ بنایا گیا، لیکن ہمارے نوجوانوں کو یہ پیغام دیدیا کہ وہ امریکہ سے خوفزدہ نہیں اور ذلت و رسوائی امریکہ کی قسمت میں لکھی ہوئی ہے۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ اس واقعہ کے ذمہ داران کو سزا دی جائے اور آئندہ ایسے واقعات کا سدباب کیا جائے۔

وحدت نیوز(سجاول) مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی سیکریٹری جنرل علامہ راجہ ناصر عباس جعفری کی جانب سے شیطان بزرگ امریکہ کے اسلام و پاکستان دشمن صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی مملکت عزیز پاکستان کو دی جانے والی دھمکیوں اور سازشوں کہ خلاف مجلس وحدت مسلمین ضلع سجاول کے س ج مظفرعلی لغاری اور ڈپٹی سیکٹریری فیاض حسین شیخ کی قیادت میں مسجد حسینی سجاول سےاحتجاجی ریلی اور کراچی بدین روڈ پر احتجاجی مظاہرہ مومنین کی کثیرتعدادمیں شرکت آخرمیں شیطان بزرگ امریکہ کا جھنڈا نظر آتش کیا گیا۔

وحدت نیوز(اسلام آباد) امریکہ کی اسلام دشمن پالیسیوں اور ڈونلد ٹرمپ کی جانب سے پاکستان پر حملے کی دھمکی کے خلاف مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی سیکرٹری جنرل علامہ راجہ ناصر عباس جعفری کے اعلان پر جمعہ کے روز ملک بھر میں ’’یوم مردہ باد امریکہ‘‘منایا گیا۔ نماز جمعہ کے اجتماعات کے دوران امریکہ کی اسلام دشمنی اور پاکستان کے خلاف ٹرمپ کے جارحانہ خطاب پر کڑی تنقید کی گئی۔ تفصیلات کے مطابق، اسلام آباد، راولپنڈی،لاہور، کراچی، کوئٹہ، پشاور، آزاد کشمیر، ملتان، سکردو، گلگت، فیصل آباد اور پاراچنار سمیت ملک کے 50سے زائد چھوٹے بڑے شہروں میں احتجاجی ریلیاں نکالی گئیں اور مظاہرے کیئے گئے۔ شرکاء نے بینرز اور پلے کارڈ اٹھا رکھے تھے جن پر امریکہ مخالف نعرے درج تھے،ملک بھر میں  مظاہرین نے امریکی پرچم اور ڈونلڈ ٹرمپ کے پتلے بھی نذر آتش کیئے،  احتجاجی مظاہروں سے مجلس وحدت مسلمین کے مرکزی، صوبائی اور ضلعی رہنماؤں کے علاوہ دیگر شخصیات نے بھی خطاب کیا۔

مظاہرین سے خطاب میں مقررین کا کہنا تھا کہ دوستی کے لبادے میں چھپا ہوا عالم اسلام کا سب سے بڑا دشمن امریکہ ہے۔ آستین کے اس سانپ سے جس قدر جلد ممکن ہو چھٹکارا حاصل کر لینا چاہیے۔ رہبر انقلاب اسلامی امام خمینی نے آج سے چالیس سال قبل واضح طور پر کہا تھا کہ امریکہ شیطان بزرگ اور مسلمانوں کا دشمن ہے۔ اس وقت اگر ہمارے حکمران ہوشمندی کا مظاہرہ کرتے تو آج عالمی سامراج کے ہاتھوں ہمیں اسی طرح کی سنگین دھمکیوں کا سامنا نہ کرنا پڑتا۔ امریکہ نے پاکستان کو دہشت گردی کی اپنی جنگ میں گھسیٹ کر غیرمستحکم کرنے کی کوشش کی جو پاکستان میں داعش کی راہ ہموار کرنے کی امریکی اور بھارتی سازش کا حصہ ہے۔ امریکہ نے عالمی امن کی آڑ میں افغانستان، عراق اور شام سمیت متعدد مسلم ممالک میں کروڑوں بےگناہ انسانی جانوں کو موت کی وادی میں دھکیل دیا ہے۔ امریکی فوج جنگی جرائم کا برملا ارتکاب کرتی آئی ہے۔

رہنماوں کا کہنا تھا کہ دنیا بھر میں دہشتگردی کا بنیادی سبب امریکہ ہے جس نے داعش اور طالبان جیسی عالمی دہشت گرد تنظیموں کی تشکیل کی ہے۔ عراق اور شام کے بعد امریکہ پاکستان میں ایسے حالات پیدا کرنا چاہتا ہے جن سے پاکستان میں داعش کی موجودگی کے تاثر کو تقویت ملے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان ایک آزاد ریاست ہے جو اپنا داخلی اور خارجی دفاع کرنا جانتی ہے۔ پاکستان میں امن کے قیام کے لیے ہم بھاری قیمت چکا رہے ہیں۔ پاکستان دہشت گردوں کی محفوظ پناہ گاہ نہیں بلکہ دہشتگردوں کے لیے جہنم بن چکا ہے۔ کسی بھی ملک کو یہ اختیار قطعاََ حاصل نہیں کہ وہ کسی دوسرے ملک کی سرحدی خلاف ورزی کرے۔ پاکستان کی طرف میلی نظر سے دیکھنے والے کو بھیانک نتائج کا سامنا کرنا پڑے گا۔ انہوں نے کہا کہ ڈونلڈ ٹرمپ نے امریکہ کا صدر بنتے ہی عالم اسلام کے خلاف اپنے بھیانک عزائم کا اظہار کر دیا تھا۔ دہشت گردی کے خلاف پاکستان کی بےلوث اور مخلصانہ کوششوں کا اعتراف نہ کرنا امریکی صدر کی متعصبانہ ذہنیت کا عکاس اور کھلی بددیانتی ہے۔ ڈونلڈ ٹرمپ کا جنگی جنون امریکہ کی سالمیت کو خطرے میں ڈال سکتا ہے۔

مقررین نے کہا کہ عالمی سطح پر طاقت کے بدلتے ہوئے توازن نے امریکہ کو حواس باختہ کر دیا ہے۔ خطے کا استحکام امریکہ کے مذموم عزائم کی راہ میں سب سے بڑی رکاوٹ ہے۔ وہ پاکستان کو غیرمستحکم کر کے خطے کے حالات خراب کرنا چاہتا ہے۔ ہمارے پاس چین اور روس جیسے بااعتبار دوست موجود ہیں۔ پاکستان کی طرف سے امریکی صدر کے بیان کو مسترد کرنا قومی وقار سے ہم آہنگ اور جرات مندانہ فیصلہ ہے۔ سیاسی قیادت کو خوشامدانہ پالیسیاں ترک کر کے عسکری قیادت کی طرح امریکہ کی آنکھوں میں آنکھیں ڈال کر بات کرنا ہو گی۔ امریکہ کے خلاف پوری قوم سیاسی و عسکری قیادت کے ساتھ کھڑی ہے۔ پاکستان کی طرف کسی بھی قسم کی پیش قدمی کی امریکہ کی ایک بھیانک غلطی ہو گی جو امریکہ کو کئی حصوں میں تقسیم کر دے گی۔ اسلام آباد سے نکالی گئی ریلی سے علامہ اصغر عسکری، علامہ علی شیر انصاری، مرکزی رہنما ملک اقرار اور نثار فیضی کے علاوہ دیگر مقررین نے بھی خطاب کیا۔

وحدت نیوز(مظفرآباد) امریکہ کی پاکستان کو دھمکیاں، مودی ایما پر حزب المجاہدین کو دہشتگرد قرار دینا ، مجلس وحدت مسلمین آزاد کشمیر ریاست 25اگست ریاست گیر یوم احتجاج منائے گی۔جمعہ یوم مردہ باد امریکہ کے طور پر منایا جائے گا۔ علامہ راجہ ناصر عباس جعفری کے حکم پر تمام ضلعی ہیڈکوارٹرز پر احتجاج ہو گا۔ ان خیالات اظہار سیکرٹری اطلاعات مجلس وحدت مسلمین آزاد جموں و کشمیر سید حمید حسین نقوی نے وحدت میڈیا سیل سے جاری ایک بیان میں کیا۔

 انہوں نے کہا کہ امریکہ نے پاکستنا کو دھمکیاں دیں ، جو آنے والے خطرات کی نشاندھی کرتی ہیں ۔ امریکہ خود دہشت گردوں کا سرپرست ہے ، اسے کسی کو دہشت گردی کی محفوظ پناہ گاہ کہنا زیب نہیں دیتا ۔ مودی کے ساتھ گٹھ جوڑ کر کے حزب المجاہدین پر بھی پابندی لگا دی ، جو اس بات کا واضح ثبوت ہے کہ امریکہ جنوبی ایشیاء میں امن نہیں چاہتا ۔ مجلس وحدت مسلمین ملک بھر کی طرح ریاست آزاد جموں و کشمیر میں بھی سربراہ مجلس وحدت مسلمین پاکستان علامہ راجہ ناصر عباس جعفری کے حکم پر بھرپور امریکہ کے خلاف احتجاج کرے گی۔تمام ضلعی ہیڈکوارٹرز پر احتجاج ہو گا۔ میرپور سے لیکر نیلم تک ہم پاکستان کے لیے اور مقبوضہ کشمیر کی عوام سے اظہار یکجہتی کے لیے نکلیں گے۔ شیطان بزرگ امریکہ کو بتا دیں گے کہ نہ پاکستان کے لیے تیرے پیسے کی ضرورت ہے اور نہ کشمیر کے لیے تیری اجازت ۔ ہم آزادی بھی لیکر رہیں گے اور پاکستان بھی محفوظ رہے گا۔ مرکزی احتجاجی ریلی مرکزی مسجد و امام بارگاہ پیر علم شاہ بخاری سے نکالی جائے گی۔عوام بھرپور شرکت کر کے امریکہ کو منہ توڑ جواب دے۔

وحدت نیوز (لاہور) اتحاد امت مصطفی کے زیراہتمام شیعہ سنی اکابرین نے لاہور پریس کلب میں مشترکہ پریس کانفرنس سے خطاب کیا،پریس کانفرنس میں ڈاکٹر امجد چشتی،پیر عثمان نوری،علامہ جاوید اکبر ثاقی،مجلس وحدت مسلمین کے سید ناصر شیرازی،سید اسدعباس نقوی و دیگر علماء و مشائخ شریک تھے،اتحاد امت مصطفی کے رہنماوں نے پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ،یہاں تمام مکاتب فکر کے نمائندہ رہنماوں کی موجودگی اس بات کی غمازی ہے کہ پاکستان کے تمام مکاتب و مسالک میں کوئی تفریق نہیں ہم متحد ہیں اور دشمن کیخلاف مشترکہ جدو جہد کا عزم بھی رکھتے ہیں،دشمن ہمیں تقسیم کرکے اپنے مذموم عزائم کی تکمیل چاہتا ہے جسے ہم انشاء اللہ کا میاب نہیں ہونے دینگے،جس طرح قیام پاکستان کے لئے شیعہ سنی اکابرین نے مل کر جدو جہد کیا اور اس مملکت خدادا پاکستان کو حاصل کیا تھا انشاء اللہ اس کو بچانے کے لئے ہم مل کر باہمی وحدت سے کلیدی کردار ادا کریں گے۔

انہوں نے کہا کہ ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے پاکستان کیخلاف ہرزہ سرائی کی ہم شدید مذمت کرتے ہیں،پوری دنیا اس بات سے واقف ہے کہ امریکہ اور اس کے اتحادی استعماری طاقتوں کو دنیا بھر میں بدترین شکست کا سامنا ہے ،ہم امریکہ کو ہرگز یہ اجازت نہیں دینگے کہ وہ اپنی شکست کا ملبہ پاکستان پر ڈالے،امریکی صدر کی ہرزہ سرائی پر ہمارے نااہل حکمرانوں کی مجرمانہ خاموشی قابل مذمت ہے اور پوری قوم کے لئے لمحہ فکریہ بھی ہے،سوائے چیف آف آرمی سٹاف کے کسی بھی ملکی ذمہ دار شخص نے امریکہ کو جواب نہیں دیا،جب کرپٹ حکمران کبھی بھی ملکی سلامتی اور قومی وقار کا دفاع نہیں کرسکتے،امریکہ اب سپر پاور نہیں رہا ،شام ،عراق ،افغانستان میں اس کا غرور خاک میں مل چکا ہے،امریکہ اپنی موت ابدی موت مرنے کو ہے،ہم ٹرمپ کی ہرزہ سرائی کو پاکستانی عوام کی توہین سمجھتے ہیں،اتحاد امت مصطفیﷺ امریکی صدر کی ہرزہ سرائی کیخلاف جمعے کو احتجاج کریگی۔

اتحاد امت مصطفی کے رہنما ڈاکٹر امجد چشتی نے پریس کانفرنس سے خطاب میں کہا کہ ایک اور اہم ایشو جس پر گفتگو کرنا مقصود ہے وہ یہ ہے کہ پاکستان میں بسنے والے شیعہ سنی سمیت تمام مذاہب و کاتب کے لوگ ہمارے بھائی ہیں ہم نے مل کر اس ملک کو حاصل کیا اور مل کر اس کی بقا و سلامتی کی جنگ لڑ رہے ہیں،سانحہ راجہ بازار راولپنڈی پر آئی ایس پی آر کی انکشاف ہمارے اصولی موقف کی تائید ہے ہم نے اسی دن کہا تھا کہ یہ ایک سازش کا حصہ ہے جو شیعہ سنی مسلمانوں کو آپس میں دست و گریباں کرنے کا ایجنڈا ہے،بدقسمتی سے مٹھی بھر شرپسند وں نے پاکستان میں بسنے والے بیس کروڑ عوام کا جینا حرام کیا ہوا ہے،اس واقعے کی آڑ میں پنجاب حکومت نے جس طرح ہمارے اہل تشیع برادری کیساتھ سلوک روا رکھا وہ انتہائی قابل مذمت ہے،حقائق کے سامنے آنے کے بعد پنجاب حکومت کیخلاف قانونی کاروائی کا متاثرین حق رکھتے ہیں،پنجاب حکومت نے اس واقعے کی آڑ میں محرم اور ربیع الاول کے جلوسوں کو محدود کرنے کی ناکام کوششیں کیں،راجہ بازار مسجد کو شرپسندوں نے جلایا ان کو کروڑوں روپوں میں معاوضہ ادا کیا گیا جبکہ اس واقعے کے بعد ناعاقبت اندیش لوگوں نے پنڈی کے اہل تشیع امام بارگاہوں کو نذر آتش کیا اور بے گناہ افراد کو قتل کیا ان کیخلاف کسی کاروائی کا نہ ہونا اس بات کی دلیل ہے کہ پنجاب حکومت کا اصل نشانہ اس واقعے کی آڑ میں صرف ایک ہی مکتب فکر کے لوگ تھے،آپریشن ردالفساد کی کامیابی پاکستان کی سلامتی کا ضامن ہے،لیکن پنجاب میں فسادی عناصر کھل عام نفرت کا پرچار کرتے پھر رہے ہیں،ان شرپسندوں کیخلاف کاروائی میں سکیورٹی فورسسز کو سب سے بڑی رکاوٹ صرف پنجاب حکومت ہے،ہم مطالبہ کرتے ہیں کہ مخصوص سوچ رکھنے والے شرپسندوں کیخلاف ملک بھر میں کاروایؤں کو تیز کیا جائے،اور ان انسانیت دشمنوں کو مزید پنپنے کا موقع نہ دیا جائے،مصلحت پسندی اور سیاسی مفادات کے خاطر قومی سلامتی کو داوُ پر لگانے کی ہم اجازت نہیں دینگے،سانحہ راجہ بازار میں بے گناہ گرفتار افراد کو رہا کیا جائے اور حکومت پنجاب اپنی ناکامی کو تسلیم کرتے ہوئے ان مظلوموں کو ہرجانہ ادا کرے،بصورت دیگر متاثرین کے ہر جائز مطالبے کے لئے ہم ان کے شانہ بشانہ کھڑے ہیں۔

وحدت نیوز(ڈی آئی خان) پاک آرمی کے کامیاب آپریشن میں ملک پاکستان میں فرقہ وریت کو پیدا کرنے والے تکفیری دہشت گردوں کے اعزائم کھل کر سامنے آئے جس سے ثابت ہوا ملک بچانے والے کون اور ملک بگاڑنے والے کون ہیں ، دس محرم 2013 راولپنڈی مسجد پر حملے کے نتیجے میں ملوس افراد کو پاک آرمی کے کامیاب خیبر فور آپریشن نے بے نقاب کر دیا۔ مسجد پر حملہ شیعہ یا کسی بریلوی سنی نے نہیں بلکہ تکفیری دہشت گردوں نے کیا۔اللہ تعالی نے ملک پاکستان کے دشمنوں کو بے نقاب کر کے شیعہ سنی محبت کو اور مضبوط کر دیا۔آئی ایس آئی اور پاک فوج کی کاوشوں کو سرہاتے ہیں جنہوں نے ہمیشہ ملک کی خاطر اپنا کردار ادا کیا۔ ہمارا مطالبہ ہے کہ اس سازش میں ملوس پنجاب حکومت کے وزیر قانون اور وزیر اعلی کو بھی انصاف کے کٹھرے میں لایا جائے۔

Page 1 of 2

مجلس وحدت مسلمین پاکستان

مجلس وحدت مسلمین پاکستان ایک سیاسی و مذہبی جماعت ہے جسکا اولین مقصد دین کا احیاء اور مملکت خدادادِ پاکستان کی سالمیت اور استحکام کے لیے عملی کوشش کرنا ہے، اسلامی حکومت کے قیام کے لیے عملی جدوجہد، مختلف ادیان، مذاہب و مسالک کے مابین روابط اور ہم آہنگی کا فروغ، تعلیمات ِقرآن اور محمد وآل محمدعلیہم السلام کی روشنی میں امام حسین علیہ السلام کے ذکر و افکارکا فروغ اوراس کاتحفظ اورامر با لمعروف اور نہی عن المنکرکا احیاء ہمارا نصب العین ہے 


MWM Pakistan Flag

We use cookies to improve our website. Cookies used for the essential operation of this site have already been set. For more information visit our Cookie policy. I accept cookies from this site. Agree