وحدت نیوز(راولپنڈی) مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی ڈپٹی سیکریٹری جنرل علامہ امین شہیدی نے گریسی لائن میں مجلس عزاء کے دوران ہونے والے بم دھماکے کے زخمیوں کی مقامی اسپتال میں عیادت کی اور زخمیوں کے اہل خانہ کو حوصلہ دیا ، اس موقع پر موجود میڈیا کے نمائندوں سے گفتگو کر تے ہو ئے علامہ امین شہیدی کا کہنا تھا کہ دہشت گرد تواتر کے ساتھ مکتب تشیع کو نشانہ بنا رہا ہے ، کبھی ٹارگٹ کلنگ تو کبھی خودکش حملوں کے ذریعے ہمارا متحان لینے کی کوشش کی جارہی ہے ، ہم نے پہلے بھی دو ٹوک الفاظ میںواضح کیا تھا پھر دوبارہ کر رہے ہیں کہ ، یہ بم دھماکے اور ٹارگٹ کلنگ کے واقعات ہمارے حوصلوں کو پست نہیں کر سکتے ، ہم کسی صورت عزاداری سید الشہداء علیہ السلام پر کوئی سمجھوتہ نہیں کریں گے، یہ عزاداری ہمارے قومی بقاء اور سلامتی کی ضامن ہے، ایک مرتبہ پھر میں وفاقی اور پنجاب حکومت کو متنبہ کر تا ہوں کہ ہوش کے ناخن لو دہشت گردوں سے آہنی ہاتھوں سے نمٹناوقت کی اہم ضرورت ہے ، مذاکرات کا راگ الاپنا بند کیا جائے ، عوام کی جان ومال کا تحفظ مذاکرات سے نہیں بلکے دہشت گردوں کے خلاف آپریشن سے مشروط ہے۔

وحدت نیوز(اسلام آباد) سانحہ عاشورہ راولپنڈی کے بعد پورے پنجاب خصوصاً لاہور میں فرقہ واریت کو شدت سے ہوا دی جا رہی ہے، پنجاب حکومت جانتے بوجھتے دہشت گردوں کے خلاف کسی بھی کاروائی سے گریزاں ہے ، اس کے دہشت گرد حملے ہمیں حق و صداقت کی راہ سے نہیں ہٹا سکتے ، علامہ ناصر عباس کی شہادت عزاداری کا نقصان ہے ، شہید کے اہل خانہ کے غم میں برابر کے شریک ہیں ۔ان خیالات کا اظہار مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی ڈپٹی سیکریٹری جنرل علامہ امین شہیدی نے وحدت ہائوس اسلام آباد سےجاری اپنے تعزیتی بیان میں کیا ۔

 

ان کا کہنا تھا کہ حکومت مسلسل دہشت گرد حملوں کے باوجود دہشت گردوں کے خلاف کسی ٹھوس کاروائی سے اجتناب کر رہی ہے ، ہم نے واضح اور دو ٹوک الفاظ میں وفاقی اور صوبائی حکومت کو آگاہ کیا ہے کہ عزاداری سید الشہدا ء کے خلاف کسی بھی سازش کو ملت جعفریہ کسی صورت قبول نہیں کر ے گی ، عزاداری اور میلاد البنی (ص) کے جلوس شیعہ سنی محب وطن عوام کا بنیادی آئینی حق ہے ، حکومت مذہبی مقدسات کو محدود کر نے کے بجائے دہشت گردوں کے گرد گھیرا تنگ کرے ، لاہور جیسے پر امن شہر میں ٹارگٹ کلنگ کے واقعات میں اضافہ باعث تشویش ہے ، علامہ ناصر عباس کے قتل کی ذمہ دار سراسر پنجاب حکومت ہے ، جو ان دہشت گردوں کی پشت پناہی میں مصروف ہے ۔

وحدت نیوز(کراچی) معروف ذاکر اہل بیت (ع)شہید علامہ ناصر عباس کی مظلومانہ شہادت کے بعد سندھ کے دارلحکومت کراچی میں مجلس وحدت مسلمین پاکستان کی جانب سے امام باررگاہ شہدائے کربلا خیرالعمل انچولی روڈ  سے ایک بڑی ماتمی ریلی نکالی گئی جو شاہرائے پاکستان پہنچ کر اختتام پذیر ہوئیں، ریلی کی قیادت  ایم ڈبلیو ایم کے مرکزی ،صوبائی ، ڈویژنل اور ضلعی قائدین نے کی ، شرکائے ریلی نے نوحہ خوانی و سینہ زنی کرتے ہوئے علامہ ناصر عباس ملتانی کی مظلومانہ شہادت پر گہرے دکھ اور صدمے کا اظہار کیا ، شرکائے ریلی سے خطاب کرتے ہوئے مقررین کا کہنا تھا کہ پنجاب کے صوبائی دارلحکومت لاہور میں علامہ ناصر عباس ملتانی کا بہیمانہ قتل صوبائی حکومت اور سیکورٹی اداروں کی کارکردگی پر سوالیہ نشان ہے ۔کراچی کے دیگر علاقوں انچولی سوسائٹی، ملیر جعفر طیار سمیت دیگر مقامات پر احتجاجی مظاہرے کئے گئے ،احتجاجی مظاہروں میں ہزاروں کی تعداد میں لوگوں نے شرکت کی مظاہرین نے شیعہ رہنما علامہ ناصر عباس ملتانی کے بہیمانہ قتل کی شدید مذمت کرتے ہوئے حکومت سے مطالبہ کیا کہ علامہ ناصر عباس کے قاتلوں کو فی الفور گرفتار کیا جائے۔احتجاجی مظاہروں سے مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے رہنماؤں مولانا اعجاز بہشتی، مولانا صادق رضا تقوی، مولانا علی انور جعفری،مولانا ذوالفقار جعفری، سید علی حسین نقوی، احسن عباس ، حسن ہاشمی اور رضا نقوی سمیت دیگر نے خطاب کیا۔انچولی میں منعقدہ احتجاجی مظاہرے سے خطاب کرتے ہوئے مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی رہنماعلامہ اعجاز بہشتی اور کراچی کے سیکرٹری جنرل برادر حسن ہاشمی نے کہا کہ حکومت دہشت گردوں سے خوفزدہ ہونے کی بجائے دہشت گردوں سے آہنی ہاتھوں سے نمٹے اور لاہور میں شہید ئے جانیو الے معروف ذاکر اہلبیت ؑ علامہ ناصر عباس کے قتل میں ملوث تکفیری سوچ کے حامل مدارس کے دہشت گردوں کو فی الفور گرفتار کرے اور منظر عام پر لائے۔مسجد حسنین ملیر جعفر طیار سوسائٹی سے  نکالی جانے والی احتجاجی ریلی سے خطاب کرتے ہوئے مجلس وحدت مسلمین ضلع ملیر کے سیکریٹری جنرل احسن عباس ، مولانا ذوالفقار جعفری اور ثمر رضا  کاکہنا تھا کہ حکومت اور ریاستی ادارے دہشتگردو ں کی پشت پناہی کرنا چھوڑ دیں اور پاکستان کے شہریوں کی جان ومال کی حفاظت کو یقینی بنائیں، ان کاکہنا تھا کہ ملک میں موجود تکفیری سوچ کی اقلیت پر مشتمل مدارس میں موجود خطر ناک دہشت گردوں کے خلاف کاروائی کی جائے اور دہشت گردوں کی آماجگاہ مدارس کے خلاف کاروائی عمل میں لائی جائے، انہوں نے مزید کہا کہ وفاقی حکومت اور صوبائی حکومتیں نصاب تعلیم مین سے دہشت گردانہ مواد کا خاتمہ یقینی بنائیں اور ملک کو امن کا گہواراہ بنانے میں اپنا عملی کردار ادا کریں۔مظاہروں میں خطاب کرتے ہوئے مجلس وحدت مسلمین کے رہنمائوں نے کہا کہ علامہ ناصر عباس کے قتل میں ملک دشمن اور اسلام دشمن قوتیں ملوث ہیں جو ملک کے عدم استحکام کرنے کی گھنانی سازش کر رہے ہیں، انکاکہنا تھا کہ پاکستان بنانے میں ملت جعفریہ نے قربانیاں پیش کی تھیں تاہم ملک کے استحکام کی خاطر کسی بھی قسم کی قربانی سے دریغ نہیں کیا جائے گا ، انہوں نے مزید کہا کہ اگر کوئی یہی سمجھتا ہے کہ ملت جعفریہ کو دیوار سے لگا دیا جائے گا تو یہ اس کی بھول ہے ، ملت جعفریہ کے خلاف سازش در اصل اسلام اور پاکستان کے خلاف سازش ہے ، حکومت اور ریاستی اداروں کو متنبہ کرتے ہیں کہ ملت جعفریہ کے خلاف سازشوں کا سلسلہ بند کیا جائے اور دہشت گردوں کی سرپرستی چھوڑ کر دہشت گردوں کے خلاف کاروائی کی جائے۔اس موقع پر شرکا نے مردہ باد امریکہ، اسرائیل نا منظور اور دہشت گردی نا منظور اور علامہ ناصر عباس کے قتل کی مذمت پر مبنی نعرے لگائے۔

اسلام آباد ( وحدت نیوز) تحریک نفاذ فقہ جعفریہ کے راہنما اور ملک کے ممتارذاکر اور خطیب علامہ ناصر عباس آف ملتان کی صوبائی دارلحکومت لاہور میں مظلومانہ شہادت کے خلاف مجلس وحدت مسلمین پاکستان کی اپیل پر ملک بھر میں تین دن سوگ منایا گیا ، اس دوران کراچی سے خیبر اور کوئٹہ سے گلگت بلتستان تک ملک کے تمام چھوٹے بڑے شہروں اور قصبات میں احتجاجی مظاہرے کئے گئے اور ریلیاں نکالی گئیں جن میں شریک ہزاروں افراد نے علامہ ناصر عباس آف ملتان کی ٹارگٹ کلنگ کے خلاف بھر پور احتجاج کرتے ہوئے قاتلوں کی فوری گرفتاری کا مطالبہ کیا ،وفاقی دارلحکومت اسلام آبادمیں مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے سینکڑوں کارکنوں نے نیشنل پریس کلب کے سامنے احتجاجی مظاہرہ کیا گیا ، مظاہرین کی قیادت ایم ڈبلیو ایم کے راہنماؤں علامہ علی شیر انصاری اور مولانا چوہدری ضیغم عبا س نے کی ، مظاہرین نے بڑے بڑے بینرز اور کتبے اٹھا رکھے تھے جن پر دہشت گردوں اور ان کی سرپرستی کرنے والے حکمرانوں کے خلاف نعرت درج تھے مظاہرین نے حکومت پنجاب کے کو علامہ ناصر عباس ملتانی کے قتل کا ذمہ دار قرار دیتے ہوئے شدید نعرے بازی کی اور قاتلوں کے سرپرست صوبائی وزیر قانون رانا ثناء اللہ کی برطرفی اور قاتلوں کی فوری گرفتاری کا مطالبہ کیا۔

وحدت نیوز(اسلام آباد) مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی ترجمان علامہ سید حسن ظفر نقوی نے تحریک نفاد فقہ جعفریہ کے رہنماء و ملک کے ممتاز ذاکر اور خطیب علامہ ناصر عباس آف ملتان کی مظلومانہ شہادت کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ نواز حکومت ملت تشیع کی ٹارگٹ کلنگ کا جواب دے، دنیا جانتی ہے کہ جب بھی نواز شریف برسر اقتدار آتے ہیں تو کالعدم جماعتیں پھر سے سر اٹھا لیتی ہیں۔ ہمارے صبر کا امتحان نہ لیا جائے اور دہشتگردوں کو فی الفور گرفتار کیا جائے۔ علامہ ناصر عباس کا قتل ایک قومی و ملی نقصان ہے۔ علامہ حسن ظفر نقوی نے کہا کہ ہم دنیا کو بتا دینا چاہتے ہیں کہ یہ ٹارگٹ کلنگ اور خودکش حملے ہمیں دہشت گردوں کے سامنے جھکنے پر مجبور نہیں کرسکتے۔ ان کا کہنا تھا کہ انشاءاللہ پاکستان کے غیور اور محب وطن اہلسنت و اہل تشیع مل کر ارض پاکستان کو دہشت گردی کی لعنت سے نجات دلائیں گے، علامہ حسن ظفر نقوی کا مزید کہنا تھا کہ میلاد البنی (ص) اور عزاداری امام حسین (ع) کے جلوسوں پر پابندی لگانے والے تاریخ سے سبق حاصل کریں، تاریخ شاہد ہے کہ جب بھی ان جلوسوں کو روکنے کی کوشش کی گئی تو یہ پہلے سے کہیں زیادہ شدت کے ساتھ عزداری کے جلوس نکالے گئے، انشاءاللہ یہ مظاہرہ چہلم سیدالشہداء اور عید میلاد النبی (ص) کے موقع پر بھی کیا جائیگا۔

وحدت نیوز(اسلام آباد) مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی ڈپٹی سیکرٹری جنرل علامہ شفقت شیرازی نے کہا ہے کہ علامہ ناصر عباس کی مظلومانہ شہادت اس بات کا ثبوت ہے کہ نواز حکومت نے ملک کی سلامتی کو طالبان دہشتگردوں کے سامنے سرنڈر کر دیا ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے ایران کے علمی شہر قم المقدسہ میں ایم ڈبلیو ایم کے کارکنان سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ ان کا کہنا تھا کہ سانحہ راولپنڈی کے بعد ملک بھر میں شیعہ سنی کے درمیان استعماری طاقتوں کے ایجنٹوں نے تفرقہ ایجاد کرنیکے کی کوشش کی، تاہم پاکستان کے شیعہ اور سنی مسلمانوں نے اپنے اتحاد سے یہ ثابت کیا کہ وطن عزیز میں فرقہ واریت نام کی کوئی چیز موجود نہیں بلکہ یہ محض ایک خارجی ٹولے کی سازش ہے جو اپنے آقا امریکہ، اسرائیل اور سعودی عرب کے ایماء پر ملک میں فرقہ واریت کا بیج بو رہا ہے۔

 

علامہ شفقت شیرازی نے کہا کہ لاہور کی عوام نے شہید کے جنازے کو شایان شان طریقہ سے اٹھا کر ثابت کر دیا ہے کہ یہ بیدار ملت اپنے دشمن کی ہر سازش کو ناکام بنانے کیلئے میدان میں حاضر ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ علامہ ناصر عباس کی شہادت اس بات کی غماز ہے کہ دشمن عزاداری و دشمن آل محمد (ص) ہم سے خوفزدہ ہے۔ یہی وجہ ہے کہ اس نے علامہ ناصر عباس کو شہید کرکے ہمیں اس راستے سے روکنے کی کوشش کی ہے، لیکن ہمارا دشمن اتنا احمق ہے کہ جتنا ہمارا خون بہتا ہے اتنا ہی عزاداری میں اضافہ ہوتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہم یہ عہد کرتے ہیں شہید کی یاد کو زندہ رکتھے ہوئے عزاداری کے مشن کو جاری و ساری رکھیں گے اور اس راہ میں اپنے خون کا آخر قطرہ تک بہانے کیلئے تیار ہیں۔

مجلس وحدت مسلمین پاکستان

مجلس وحدت مسلمین پاکستان ایک سیاسی و مذہبی جماعت ہے جسکا اولین مقصد دین کا احیاء اور مملکت خدادادِ پاکستان کی سالمیت اور استحکام کے لیے عملی کوشش کرنا ہے، اسلامی حکومت کے قیام کے لیے عملی جدوجہد، مختلف ادیان، مذاہب و مسالک کے مابین روابط اور ہم آہنگی کا فروغ، تعلیمات ِقرآن اور محمد وآل محمدعلیہم السلام کی روشنی میں امام حسین علیہ السلام کے ذکر و افکارکا فروغ اوراس کاتحفظ اورامر با لمعروف اور نہی عن المنکرکا احیاء ہمارا نصب العین ہے 


MWM Pakistan Flag

We use cookies to improve our website. Cookies used for the essential operation of this site have already been set. For more information visit our Cookie policy. I accept cookies from this site. Agree