وحدت نیوز(اسلام آباد) گلگت بلتستان کے عوام کو تاریخی احتجاج اور استقامت کی بدولت حقوق کے حصول پر مبارک باد پیش کرتے ہیں ، غیور قوم نے ثابت کر دیا کہ اتحاد واتقاق کی برکت سے ہر کام ممکن بنایا جا سکتا ہے،عوامی ایکشن کمیٹی کی لیڈر شپ اور گلگت بلتستان کے عوام  کی بہادری اور استقامت پر پوری قوم کا سر فخر سے بلند ہوا ہے، حقوق کے حصول کی جنگ بہت طویل ہے یہ تو نقطہ آغاز ہے، بارہ روزہ احتجاج میں اپنے اور پرائے سب آشکار ہو گئے، اس خیالات کا اظہار مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی سیکریٹری جنرل علامہ راجہ ناصر عباس جعفری نے گلگت بلتستان میں بارہ روزہ طویل اور کامیاب تاریخی دھرنے کے اختتام اورعوامی ایکشن کمیٹی کے نو نکاتی چارٹرڈ آف ڈیمانڈ کی وفاقی وصوبائی حکومت کی جانب سے منظوری پر اپنے تہنتی پیغام میں کیا۔

 

مرکزی سیکریٹریٹ سے جاری اپنے پیغام میں علامہ راجہ ناصر عباس جعفری نے کہا ہے کہ آج ایک مرتبہ پھر حق کی فتح ہوئی اور باطل شکست کھانے پر مجبور ہواہے، بارہ روز تک کھلے آسمان تلے بیٹھنے والے غیور عوام کی استقامت رنگ لائی اور ظالم حکومت گھٹنے ٹیکنے پر مجبور ہوئی، گلگت بلتستان کےعوام کے ساتھ ساتھ وہ تمام سیاسی مذہبی جماعتیں ، انسانی حقوق کی تنظیمیں اور شہری جنہوں نے خطہ بے آئین گلگت بلتستان کے حقوق کی بحالی کے لئے آواز بلند کی سب خراج تحسین کے مستحق ہیں ۔ملک کو درپیش سنگین خطرات اور جاری دہشت گردی میں کہ جب عوام خوف مایوسی اور عدم تحفظ کا شکار ہیں ، عوامی جدوجہد سے اپنے جائز حقوق کا حصول کسی معجزے سے کم نہیں ،ملک بھر میں بسنے والے اٹھارہ کروڑپسماندہ شہری گلگت بلتستان کے عوام سے سبق لیتے ہوئے اپنے حقوق کےحصوک کے لئے میدان میں اتر آئیں، گندم سبسڈی کی بحالی کی تحریک عظیم مقاصد کے حصول کی تحریک کا نقطہ آغاز ہے نہ کہ نقطہ انجام ، اس تاریخی احتجاج نے جہاں نے ظالم حکمرانوں کو ذلیل و رسوا کیا وہیں عوام سے دوری اختیار کرنے والی مذہبی وسیاسی جماعتوں کے چہروں سے بھی نقاب نوچ ڈالی ہے، انشاءاللہ گلگت بلتستان کےغیور اور بیدار  عوام خائن و نا اہل سیاسی ومذہبی جماعتوں کو آئندہ قانون ساز اسمبلی کے انتخابات میں ان کی خیانتوں کا سلہ ضرور دیں گے۔

وحدت نیوز(خوشاب) مجلس وحدت مسلمین پاکستان ضلع خوشاب کی ضلعی کابینہ کا اجلاس جمعہ 25 اپریل 2014ء کو امام بارگاہ قصر زینب سلام اللہ علیہا خوشاب میں منعقد ہوا۔ اجلاس کی صدارت ضلعی سیکرٹری جنرل مولانا ظہور الحسن نے کی، جبکہ ڈپٹی سیکرٹری جنرل راجہ غلام شبیر جنجوعہ نے ایجنڈے پر گفتگو کی۔ اس اہم اجلاس میں مرکز اور صوبے سے سید مسرت حسین کاظمی اور استاد ذوالفقار علی اسدی نے خصوصی شرکت کی۔ اجلاس کے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے مرکزی مالیات ممبر سید مسرت حسین کاظمی اور استاد ذوالفقار علی اسدی نے کہا کہ مرکز کی طرف سے دیا گیا مالیاتی پروگرام انشاءاللہ کامیابی سے چلایا جائے گا۔ اس پروگرام سے ملت کی اقتصادی صورتحال بہتر ہوگی۔

 

سید مسرت حسین کاظمی نے مالیاتی نظام کے خدوخال اور مجلس وحدت مسلمین کے تمام ذیلی شعبہ جات کو مالیاتی حوالے سے مضبوط تر کرنے کے لیے مالیاتی لائحہ عمل پر خصوصی روشنی ڈالی۔ استاد ذوالفقار اسدی نے کابینہ کے تمام افراد کو اس پروگرام پر بھرپور کام کرنے کی تاکید کی۔ اجلاس کے شرکاء کی کافی تعداد نے ڈونر فارم  پر کئے۔ آخر میں ضلعی سیکرٹری جنرل نے پروگرام کی کامیابی اور دیگر موضوعات پر تفصیلی روشنی ڈالی۔ جس میں شعبہ روابط کو مضبوط تر کرنے اور اپنے دیگر پروگراموں کو عملی جامہ پہنانے کے لیے کابینہ کو کام کی رفتار بڑھانے کی تاکید کی۔ علاوہ ازیں کابینہ کے اراکین نے اپنے اپنے شعبہ جات کی کارکردگی رپورٹ پیش کی۔

وحدت نیوز(مظفرآباد)وحدت سیکرٹریٹ مظفرآباد میں \"شام،مشرق وسطیٰ کی صورتحال اور پاکستان \"کے عنوان سے منعقدہ سیمینار سے خصوصی خطاب کرتے ہوئے مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے ڈپٹی سیکرٹری جنرل و سیکرٹری امور خارجہ ،حجتہ الاسلام علامہ آغاسید شفقت حسین شیرازی نے کہا کہ امریکہ و اسرائیلی ایجنڈے کے تحت باقائدہ منصوبہ بندی سے لیبیا،مصر،اردن،عراق اور شام کے عسکری اداروں کو بدنام اور کمزور کرتے ہوئے مسلمانان عالم کا قتل عام کیا گیا، وسائل کو لوٹا گیا، حکومتیں گرائی بنائی گئیں۔ تکفیری دہشتگرد، امریکہ، اسرائیل اور چند عرب ممالک کے اس خوفناک ایجنڈے کی تکمیل کی غرض سے مختلف اسلامی ممالک میں تباہی و بربادی مچائی گئی،پاکستان کی افواج کو بھی اسی ایجنڈے کی تکمیل کی زد میں لا کھڑا کیا جا رہا ہے ۔ ملک بھر میں دہشتگرد سرایت کرہے ہیں، پاکستان میں جگہ جگہ مقبوضہ علا قے قائم ہوچکے ہیں جہاں حکومتی رٹ کا نام و نشان نہیں پاکستان کا پرچم لہرانے پر پابندی ہے۔سیاست دان ہمیشہ ملک کا سودا کرتے آئے ہیں ۔پاک فوج ملت اسلامی پاکستان کے ایمان کا حصہ،سچا محبت وطن ادارہ ہے جو قوم کیلئیسینٹر آف گریوٹی کی حثیت رکھتا ہے ۔



انہوں نے کہا کہ اسرئیل اور تکفیری دہشتگردوں کو لبنان میں حزب اللہ نے بد ترین شکست دی۔امریکہ کی شکست اسی دن ہو گئی تھی جب بار بار دھمکیوں اور اعلانات کے باوجود شام پر حملہ کرنے کی جرئت نہ کر سکا۔شام میں شیعہ صرف تین فیصد ہیں،وزیراعظم ،وزیر دفاع،وزیرخارجہ سمیت غالب اکثریت 60فیصد بریلوی اہل سنت براداران اسلام ہیں ۔بڑی تعداد پر امن عیسائیوں کی بھی ہے ۔ اس پر امن فلاحی اسلامی حکومت کو گرانے کیلئے سعودی عرب، بحرین سمیت کئی عرب ممالک ،ترکی، امریکہ، اسرئیل اور دنیا بھر سے اکٹھے کئے گئے تکفیری دہشتگردجدید ترین جنگی ہتھیاروں سے لیس تین سالوں بھرپور مسلح دہشتگردی میں مصرف عمل ہیں مگر سوائے ناکامی کے کچھ نہ حاصل کرسکے۔انہوں نے کہا کہ خلافت عثمانیہ یہودیوں کیلئے الگ ملک اسرئیل کے قیام اور اسکی حفاظت کے حق میں نہیں تھی لہذا منظم شازش کے تحت خلافت عثمانیہ کا خاتمہ کرتے ہوئے سعودی عرب میں آل سعود کا حکومت اسرئیل کے تحفظ کی ضمانت پر دی گئی۔انہوں نے کہا کہ بحرین میں مسلمانوں کے قتل عام کیلئے پاکستان سمیت دنیا بھر سے مسلمانوں کو تکفیری دہشتگردوں کے ہمرہ ایندھن کے طور پربیچا جا رہا ہے۔ مسلمان کے قتل کیلئے مسلمان کا سرمایہ استعمال کرتے ہوئے مسلمان سے قتل عام کروایا جا رہا ہے اور پوری دنیا میں اسلام کا تشخص مسخ کرکے پیش کیا جا رہا۔انہوں نے کہا کہ پاکستان سمیت دنیا بھر کے اسلامی ممالک کے محبت وطن عوام کو نبی آخرالزماں حضرت محمد مصطفیﷺ کا سچا امتی بن کر باہم اتحاد و اتفاق سے متحد ہو کر تکفیریت کا مقابلہ کرتے ہوئے امریکہ و اسرائیل کے ناپاک عزائم کو خاک میں ملا دینا چاہیے۔

وحدت نیوز(وحدت نیوز) مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی ڈپٹی سیکریٹری جنرل اور ملی یکجہتی کونسل کے رکن علامہ محمد امین شہیدی نے اسلام آبادمیں جمیعت علمائے پاکستان کے سربراہ اور ملی یکجہتی کونسل کے مرکزی صدرصاحبزادہ ابولخیرمحمد زبیر، جامعہ نعیمیہ کے مہتمم مفتی راغب نعیمی اور دیگر اہل سنت علمائے کرام اور اکابرین سے ملاقات کی،اس موقع پر ملی یکجہتی کونسل کے مرکزی ڈپٹی سیکریٹری جنرل اور چیئرمین البصیرہ پپلیکیشنزثاقب اکبر نقوی بھی موجود تھے،رہنما وں نےمسالکِ اسلامی  کے درمیان ہم آہنگی ،بھائی چارگی اور علمی مباحثوں کی ضرورت پر زوردیا، گفتگو کے دوران ملک کو درپیش چیلنجز اور داخلی اور خارجی صورتحال پر بھی تفصیلی بات چیت ہوئی۔

وحدت نیوز(کراچی) مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی ڈپٹی سیکرٹری جنرل علامہ امین شہیدی نے کہا ہے کہ شہر کراچی میں معصوم انسانوں کے خون سے ہولی کھیلی جا رہی ہے اور حکومت سندھ اقتدارکی بندر بانٹ تقسیم میں مصروف عمل ہے،ان خیالات کا اظہار انہوں نے کراچی میں پاک محرم ہال میں منعقدہ ایک پر ہجوم پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا ،اس موقع پر ان کے ہمراہ مجلس وحدت مسلمین کے رہنماؤں میں مولانا منور نقوی، مولانا باقر زیدی، مولانا علی ا نور جعفری، علامہ مبشر حسن اور کراچی ڈویژن کے سیکرٹری سیاسیات علی حسین نقوی بھی موجود تھے۔

 

علامہ امین شہیدی کاکہنا تھا کہ شہر کراچی میں گذشتہ ایک ہفتے میں دس سے زائد شیعہ مسلمانوں کا قتل سندھ حکومت کی کارکردگی پر سوالیہ نشان ہے، حکومت سندھ کراچی میں جاری ٹارگٹ کلنگ کی روک تھام کے لئے اقدامات کرے ورنہ سنگین نتائج برآمد ہوں گے۔ان کاکہنا تھا کہ گذشتہ کئی ماہ سے شہر کراچی میں ایک سوچی سمجھی سازش کے تحت ملت جعفریہ کے عمائدین اور نوجوانوں سمیت علماء کرام، ڈاکٹروں ، پروفیسروں کو ٹارگٹ کلنگ کا نشانہ بنا کر قوم اور ملک و ملت کو عظیم سرمایہ سے محروم کرنے کی گھناؤنی سازش پر عمل کیا جا رہاہے اور افسوس ناک بات یہ ہے کہ سندھ حکومت کسی ایک بھی قاتل کو گرفتار کر کے قرار واقعی سزا دلوانے میں ناکام نظر آتی ہے، انہوں نے کہا کہ اب تو ایسا محسوس ہو رہا ہے کہ طویل عرصے سے قتل کئے جانے والے ملت کے عظیم سپوتوں کے قتل عام میں خود سندھ حکومت اور اعلیٰ ریاستی ادارے بھی ملوث ہیں۔انہوں نے سندھ حکومت سے مطالبہ کیا کہ فی الفور قاتلوں کوگرفتار کر کے منظر عام پر لایا جائے اورسندھ میں بسنے والے محب وطن پاکستانیوں کے جان ومال کے تحفظ کو یقینی بنایا جائے بصورت دیگر ملت جعفریہ اپنے حقوق کے دفاع کی خاطر کسی قسم کے راست اقدام سے گریز نہیں کرے گی۔

 

مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی رہنما علامہ امین شہیدی کا کہنا تھا کہ گلگت اور بلتستان کے عوام کے حقوق پر ڈاکہ ڈالنے والوں کو معاف نہیں کریں گے، اور وفاقی حکومت سمیت گلگت انتظامیہ یہ بات جان لے کہ گلگت اور بلتستان میں گندم سبسڈی کو بحال نہ کیا گیا تو احتجاج کا دائرہ کار وسیع ہو کر اسلام آباد میں ایوانوں تک جا پہنچے گا اور حالات کی تمام تر ذمہ داری وفاقی حکومت پر عائد ہو گی، انہوں نے وفاقی حکومت کو متنبہ کرتے ہوئے مطالبہ کیا کہ فی الفور گندم سبسڈی کو بحال کیا جائے اور گلگت بلتستان کے عوام کے حقوق کی فراہمی میں رکاوٹوں کو دور کیا جائے، گلگت اور بلتستان میں جاری عوامی ایکشن کمیٹی کے احتجاجی دھرنوں اور لانگ مارچ کی بھرپور حمایت کرتے ہیں، ضروت پڑی تو ملک بھر میں پہیہ جام کر دیں گے۔علامہ امین شہیدی نے کراچی میں گذشتہ دنوں دہشت گردانہ حملے کا نشانہ بننے والے معروف صحافی اور اینکر پرسن حامد میر پر قاتلانہ حملے کی سخت الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے مطالبہ کیا کہ سندھ حکومت حامد میر سمیت شہر کراچی میں ٹارگٹ کلنگ کا نشانہ بننے والے دیگر صحافی بھائیوں سمیت عام شہریوں کے قتل میں ملوث خطر ناک اور ملک دشمن دہشت گردوں کو فی الفور گرفتار کیا جائے اور قرار واقعی سزا دی جائے۔

وحدت نیوز(لاہور) مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی سیکرٹری سیاسیات سید ناصرعباس شیرازی نے گلگت بلتستان میں جاری عوامی احتجاج اور 9 دن سے جاری دھرنوں کے صورت حال پر مختلف جماعتوں اور ہیومن رائٹس کمیشن اورانسانی حقوق کی اداروں کے مسئولین سے گلگت بلتستان کی ہنگامی صورت حال پر کردار ادا کرنے کی اپیل قومی، مذہبی اور سیاسی رہنماوں سے گفتگو میں انہوں نے کہا کہ اس مشکل گھڑی میں پورے پاکستان کے لوگوں کو گلگت بلتستان کے عوام کیساتھ کھڑے ہونے کی ضرورت ہے۔ سرزمین بے آئین گلگت بلتستان کے عوام کو مزید مظلومی اور تنہائی کا شکار کرنا خطے پر مزید منفی اثرات مرتب کریگا اور وطن عزیز کا فطری دفاع دشمن کی کسی سازش کا شکار ہو سکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان بھر میں تحریک چلانے اور گلگت بلتستان کے عوام کی تائید کرنے کیلئے تمام سیاسی جماعتوں سے کھل کر کردار ادا کرنے کی اپیل کی۔

 

ایم کیوایم رابطہ کمیٹی کے رکن حیدر عباس رضوی، مسلم لیگ ق کے سینیٹر مشاہد حسین سید، عوامی نیشنل پارٹی کے سینیٹر افراسیاب خٹک، تحریک منہاج القرآن کے نائب سربراہ صاحبزادہ محی الدین قادری، پاکستان عوامی تحریک کے ناظم اعلیٰ خرم گنڈہ پور، جماعت اسلامی کے مرکزی سیکرٹری جنرل لیاقت بلوچ، پاکستان تحریک انصاف کے راہنمائوں ڈاکٹر عارف علوی اور اعجاز چوہدری، سنی اتحاد کونسل کے سربراہ صاحبزادہ حامد رضا اور چیئرمین وائس آف شھداء سابق سینیٹر فیصل رضا عابدی انسانی حقوق کمیشن اور سپریم کورٹ بار ایسوسی ایشن کی سابق صدر عاصمہ جہانگیر سے روابط کے ذریعے یقین دہانی حاصل کی کہ وہ گلگت بلتستان کے عوام کی سبسڈی کے حقوق کے حصول کیلئے وہاں مظلوم عوام کیساتھ ہر محاذ پر کھڑے ہونگے۔

 

دوسری طرف سینٹ اسٹینڈنگ کمیٹی برائے انسانی حقوق کے سربراہ سینیٹر افراسیاب خٹک نے وعدہ کیا کہ وہ سینیٹر مشاہد حسین سید، سینیٹر نسرین جلیل، سینیٹر رضا ربانی سمیت دیگر ممبران سینیٹ کے ہمراہ 26 اپریل کو گلگت بلتستان پہنچ کر تمام سیاسی و علاقائی اکابرین سے ملاقاتیں کر کے گلگت بلتستان کے عوام کے حقوق کی آواز کو پارلیمنٹ میں بلند کریں گے۔

مجلس وحدت مسلمین پاکستان

مجلس وحدت مسلمین پاکستان ایک سیاسی و مذہبی جماعت ہے جسکا اولین مقصد دین کا احیاء اور مملکت خدادادِ پاکستان کی سالمیت اور استحکام کے لیے عملی کوشش کرنا ہے، اسلامی حکومت کے قیام کے لیے عملی جدوجہد، مختلف ادیان، مذاہب و مسالک کے مابین روابط اور ہم آہنگی کا فروغ، تعلیمات ِقرآن اور محمد وآل محمدعلیہم السلام کی روشنی میں امام حسین علیہ السلام کے ذکر و افکارکا فروغ اوراس کاتحفظ اورامر با لمعروف اور نہی عن المنکرکا احیاء ہمارا نصب العین ہے 


MWM Pakistan Flag

We use cookies to improve our website. Cookies used for the essential operation of this site have already been set. For more information visit our Cookie policy. I accept cookies from this site. Agree