The Latest

وحدت نیوز(کراچی) المجلس ڈیزاسٹر مینجمنٹ سیل ضلع ملیر فلاحی شعبہ مجلس وحدت مسلمین کی جانب سے میمن سوسائٹی لیاری میںگذشتہ دنوں زمین بوس ہونے والی پانچ منزلہ رہائشی عمارت کے ایک درجن سے زائد متاثرہ خاندانوں میں راشن بیگز تقسیم کیئے گئے۔

 المجلس ڈیزاسٹر مینجمنٹ سیل کراچی ڈویژن کے ڈائریکٹر برادر زین رضا رضوی کی زیر نگرانی ان متاثرہ خاندانوں میںراشن بیگز کی تقسیم کے موقع پرمتاثرہ خاندانوں نے ایم ڈبلیوایم کے فلاحی شعبے کا شکریہ ادا کیا جنہوں نے مشکل کی اس گھڑی میں انہیں یاد رکھا۔ اس موقع پر کراچی ڈویژن کے رہنما برادر رضوان پنجوانی بھی موجودتھے۔

وحدت نیوز(بیروت) پاکستان میں سوشل میڈیا پرشام میں اموی خلیفہ حضرت عمر بن عبدالعزیز کے مزار کی بےحرمتی کے حوالے زیر گردش افواہوں پر لبنان کے معروف سنی عالم ومفتی اور عالمی اتحاد علمائے مقاومت کے سربراہ الشیخ ڈاکٹر ماہر حمود نے مجلس وحدت مسلمین کے توسط سے پاکستان کے شیعہ سنی عوام کے نام کے ایک اہم ویڈیو پیغام جاری کیا ہے جس کا اردو متن پیش خدمت ہے ۔

الحمد لله والصلاة والسلام على محمد رسول الله وآله وصحبه أجمعين،مجلس وحدت مسلمین سے تعلق رکھنے والے میرے عزیز بھائیو! السلام عليكم ورحمة الله وبركاته،

آپ کے توسط سے پاکستان کی عزیز عوام کی خدمت میں عرض ہے، شام میں طویل عرصہ سے جنگ، اور امریکہ اور اسرائیل کی زور زبردستی اور استکبار کے سامنے شام کے نہ جھکنے والے موقف نے ان کی ساری سازشیں خاک میں ملا دی ہیں، یہی وجہ ہے کہ سازش کرنے والے جھوٹ کا سہارا لینے پر مجبور ہو گئے، بہت سارے جھوٹے پروپیگنڈوں میں سے ایک یہ جھوٹا پروپیگنڈا کیا گیا، کہ شامی فوج نے خلیفہ راشد عمر بن عبد العزیز رضی اللہ تعالی عنہ کی قبر کھود کر ان کی بے حرمتی کی گئی، ہمیں بھی یہ خبر 10 دن پہلے پہنچی، تو ہم نے بھی اعلی سطح پر رابطے کئے، جس کے بعد شام کے وزارت اوقاف نے ویڈیو اور تصویروں سمیت ایک بیان جاری کیا، جس میں یہ دیکھا جا سکتا ہے، کہ ضریح کو کوئی نقصان نہیں پہنچا ہے، وہ بالکل سالم حالت میں ہے، صرف کچھ دیواروں کو نقصان پہنچا ہے، وہ بھی ان مسلح دہشت گردوں کی طرف سے، جنہوں نے اس ضریح پر قبضہ کیا تھا۔

جو بھی حق جاننا چاہتے ہیں، ان سب سے کہنا چاہتا ہوں، کہ حقیقت ہی ہماری سردار ہے، حق کبھی باطل نہیں بن سکتا، اور باطل کبھی حق، اگرچہ باطل کی طرف بلانے والوں کی آوازیں بلند ہی کیوں نہ ہوں، اور ان کی تعداد زیادہ ہی کیوں نہ ہو۔

جھوٹ کی کئی قسمیں ہیں، ان میں سے ایک یہ کہ بات کو بڑھا چڑھا کے پیش کرنا، بات کو بیان کرتے وقت مبالغہ کرنا، دوسری قسم یہ کہ آدھی حقیقت بیان کرنا، تیسری قسم یہ کہ بات گھڑ لینا، جسے لغت میں بہتان کہتے ہیں، عمر بن عبد العزیز کی ضریح مبارک پر حملے کی خبر بہتان ہے، اور مکمل طور پر گھڑا ہوا قصہ ہے، جس کی کوئی حقیقت نہیں، اور جس میں ذرا برابر بھی سچائی نہیں،

سب یہ بات جان لیں کہ جو کچھ کہہ رہا ہوں حقیقت ہے، کسی چینل کی خبر نہیں، اور ہمیں اللہ کی رضا کے سوا کسی بھی چیز کی پروا نہیں،

جب سے شام میں بحران شروع ہوا ہے، ان کے جھوٹ سن سن کر ہم عادی ہو گئے ہیں، کبھی کسی بچے کی کہانی گھڑ لیتے ہیں، کہ اسے قتل کیا گیا ہے، بعد میں دیکھتے ہیں کہ وہی بچہ زندہ ہے، اسی طرح سے کیمیائی اسلحہ کی کہانی گھڑی گئی، اور بعد میں پتہ چلا، کہ وہ سب کچھ جھوٹی تصویروں پر مبنی فسانہ تھا، اسی طرح اور بھی مثالیں دی جا سکتی ہے، جن کے ذکر کا ابھی وقت نہیں۔

البتہ اس جھوٹ نے ہمیں بہت تکلیف دی، کیونکہ یہ بالکل بھی گھڑی گئی کہانی ہے، جس کی کوئی بھی حقیقت نہیں، جس میں ایک ایسی شخصیت کا انتخاب کیا گیا ہے، جو سب کے نزدیک قابل احترام ہیں، اور جنہوں نے تاریخ میں بہت اچھا کردار ادا کیا، اور بڑی مصیبت یہ ہے، کہ جنہوں نے یہ فسانہ گھڑا ہے، اور جھوٹ بولا ہے، وہ خود مقدس شخصیات کی قبروں کو ڈھانا جائز سمجھتے ہیں، یہ وہی لوگ ہیں، جنہوں نے گرامی قدر صحابی حجر بن عدی، عمار بن یاسر، اور بہت سارے اللہ کے صالح بندوں کی قبریں کھودنے اور ان کی بے حرمتی کرنے پر فخر کیا، اور انہوں نے یہی سیرت لیبیا بلکہ جہاں بھی گئے اپنائی، وہ خود یہ غلط اور بیہودہ کام کرتے ہیں اور پھر دوسروں کو مورد الزام ٹھہراتے ہیں،

اس تذکرے کے ساتھ کہ حضرت عمر بن العزیز کی قبر مبارک پہلے سے مٹی ہوئی ہے، یعنی قبر کے اوپر کوئی چیز بنی نہیں ہے، بلکہ مٹی ہے، اور قبر کے اوپر مسجد نما عمارت بنی ہوئی ہے، تو اس قسم کی قبر خود ان (وھابیوں اور تکفیریوں) کے نزدیک بھی شرعی حیثیت رکھتی ہے، اور اس میں کوئی بدعت نہیں۔

ہم یہ سب سے کہتے ہیں، خوف خدا کریں، اللہ سے ڈریں، شام میں سازش مکمل طور پر بے نقاب ہو چکی ہے، شروع میں کہا کہ یہ ظلم و ستم کے خلاف جنگ ہے، بعد میں انہوں نے حکومت کی طرف منسوب کرنے والے ظلم و ستم سے کئی گناہ بڑھ کر وہاں کے لوگوں پر ظلم و جور کیا، انہوں نے کہا، کہ یہ سب کچھ شامی عوام کے لئے ہے، جبکہ ہم نے دیکھا کہ خود شامی عوام نے اپنے صدر کی حمایت کی، ان کو ٹھکرایا، اور ان سے برات کا اظہار کیا، کہا کہ یہ اقتصاد کی خاطر ہے، ابھی خود شام کا اقتصادی محاصرہ کیا ہوا ہے، کہا یہ اسلام کی خاطر ہے، جبکہ دیکھا گیا کہ خود کفر کر رہے ہیں، قتل کر رہے ہیں، اور ان خوارج کی طرح ذبح کر رہے ہیں جو دین سے نکل گئے تھے۔

شام میں جو کچھ بھی ہوا، وہ ان نعروں کے بالکل مخالف اور برعکس تھا جو شروع میں ان کی طرف سے بلند کئے گئے، سب کو اور خصوصا ان  لوگ کو کہتا ہوں جو یہ پروپیگنڈے کرتے ہیں،اب وقت آگیا ہے، کہ وہ یہ کام بند کردیں، اور اللہ کی رضا کے حصول کی کوشش کریں، اور صلح کی طرف آگے بڑھیں جس میں امت کی وحدت کا پیغام ہو، جس میں ساری قوتوں کو اسرائیل اور امریکی استکبار کے خلاف مقاومت کی خاطر یکجا کرنے کی دعوت ہو،

قران میں ارشاد رب العزت ہے
يَآ اَيُّـهَا الَّـذِيْنَ اٰمَنُـوْا كُـوْنُـوْا قَوَّامِيْنَ بِالْقِسْطِ شُهَدَآءَ لِلّـٰهِ وَلَوْ عَلٰٓى اَنْفُسِكُمْ اَوِ الْوَالِـدَيْنِ وَالْاَقْرَبِيْنَ ۚ اِنْ يَّكُنْ غَنِيًّا اَوْ فَقِيْـرًا فَاللّـٰهُ اَوْلٰى بِـهِمَا ۖ فَلَا تَتَّبِعُوا الْـهَوٰٓى اَنْ تَعْدِلُوْا ۚ وَاِنْ تَلْوُوٓا اَوْ تُعْـرِضُوْا فَاِنَّ اللّـٰهَ كَانَ بِمَا تَعْمَلُوْنَ خَبِيْـرًا (135) صدق اللہ العظیم

اے ایمان والو! انصاف پر قائم رہو (اور وقت آنے پر) اللہ کی طرف گواہی دو اگرچہ خود پر ہو یا اپنے ماں باپ اور رشتہ داروں پر، اگر کوئی مالدار یا فقیر ہے تو اللہ ان کا تم سے زیادہ خیر خواہ ہے، سو تم انصاف کرنے میں دل کی خواہش کی پیروی نہ کرو، اور اگر تم کج بیانی کرو گے یا پہلو تہی کرو گے تو بلاشبہ اللہ تمہارے سب اعمال سے با خبر ہے۔

والسلام علیکم ورحمة الله وبركاته.

مترجم:  ڈاکٹر محمد اشفاق

وحدت نیوز(لاہور) مجلس وحدت مسلمین شعبہ خواتین کی مرکزی سیکرٹری جنرل اور رکن پنجاب اسمبلی محترمہ سیدہ زھرا نقوی نے پاکستان پیپلز پارٹی کے پنجاب اسمبلی میں پارلیمانی لیڈرسید حسن مرتضیٰ سے دوران اجلاس ملاقات کی اور انھیں مدینہ منورہ میں جنت البقیع اور روضہ بنت رسول حضرت فاطمہ الزھرا سلام اللہ علیھا کی تعمیر کے لیے پنجاب اسمبلی میں پیش کی جانے والی قرارداد پر مبارکباد پیش کی ۔

اس موقع پر محترمہ سیدہ زھرا نقوی کا کہنا تھا کہ جنت البقیع کی دوبارہ تعمیر سے محبان رسول و آل رسول ص کے دلوں کو قرار حاصل ھوگا ان کا کہنا تھا کہ اس سلسلے میں ہر ممکن تعاون کو یقینی بنایا جائے گا۔ سید حسن مرتضی کی جانب سے روضہ جناب فاطمہ سلام اللہ علیھا کی تعمیر پر ہونے والے تمام تر اخراجات ادا کرنے کے اظہار پر محترمہ زھرا نقوی کا کہنا تھا کہ میں اس کام میں مکمل طور پر آپ کے ساتھ شامل ھوں اور یہ بات میرے لیے بھی باعث فخر ہوگی کہ اس مقدس فریضے کی انجام دہی میں بھی اپنا حصہ ڈال سکوں۔

وحدت نیوز(ملتان) مجلس وحدت مسلمین ضلع ملتان کی جانب جامع مسجد الحسین نیو ملتان میں مومنین کو تجہیز و تکفین و تدفین اور غسل میت کے  مسائل کی تربیت دینے کے لیے ایک ورکشاپ منعقد کی گئی۔ جس میں بزرگ عالم قاضی نادر علوی، مولانا عمران ظفر صاحب، ڈاکٹر موسی کاظم کاظمی اور یونٹس کے برادران نے شرکت کی۔

 اس موقع پر علماء نے تجہیز و تکفین و تدفین و غسل میت کے شرعی مسائل اور ان کی اہمیت وقت پر روشنی ڈالی جبکہ ڈاکٹر موسی کاظم کاظمی نے کرونا وائرس سے انتقال کر جانے والے لوگوں کی میتوں سے اپنی حفاظت اور ان کے غسل میت پر کی جانے والی حفاظتی تدابیر سے آگاہ کیا۔

 اس پر ضلعی سیکرٹری جنرل مرزا وجاہت علی کا کہنا تھا کہ ان شاءاللہ ضلع ملتان کمیٹیاں تشکیل دے گا جو کرونا وائرس سے انتقال کر جانے والوں کو بلامعاوضہ غسل میت اور تدفین کی سہولیات مہیا کرے گی۔

وحدت نیوز(کوئٹہ) مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی ترجمان علامہ مقصودڈومکی نے کوئٹہ پریس کلب میں صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ اس وقت پوری دنیا امریکہ کے زوال اور ذلت و رسوائی کا سفر دیکھ رہی ہے۔ امریکہ کے اندر گزشتہ طویل عرصے سے سرخ فام ریڈ انڈین اور سیاہ فارم جس ظلم اور بربریت کا شکار رہے ہیں اس کے نتائج ظاہر ہو رہے ہیں۔ اور اب صورتحال یہ ہے کہ پولیس کے ہاتھوں ایک سیاہ فام امریکی شہری کے قتل کے نتیجے میں میں ایک بہت بڑی تحریک اٹھ چکی ہے ہم سمجھتے ہیں کہ 21 ویں صدی میں نسل پرستی کی بناء پر اپنے ہی شہریوں کے ساتھ امتیازی سلوک امریکہ کے چہرے کی نقاب کشائی ہے۔ دین مقدس اسلام اور حضرت سید الانبیاء محمد مصطفی صلی اللہ علیہ وسلم نے 14 سو سال قبل بتا دیا تھا کہ کالے کو گورے پر اور گورے کو کالے پر کسی قسم کا کوئی امتیاز حاصل نہیں ہے انسان کے امتیاز کا واحد سبب اس کا تقوی اور اعلی کردار ہے۔اس موقع پر علامہ شیخ ولایت حسین جعفری ڈپٹی سیکرٹری جنرل ایم ڈبلیو ایم بلوچستان، احسن بھائی صدر آئی ایس او کوئٹہ ڈویژن اور سید شبیر علی شاہ کاظمی بھی موجود تھے ۔

انہوں نے کہا کہ اس وقت امریکہ دنیائے اسلام کے مختلف ممالک پر قابض ہے افغانستان عراق اور عرب ممالک میں موجود ہے جبکہ دنیا کے متعدد ممالک میں امریکا کی مداخلت جاری ہے۔ لیبیا شام لبنان سمیت دنیا کے مختلف ممالک میں امریکہ نے جو کردار ادا کیا ہے وہ انتہائی افسوس ناک ہے وطن عزیز پاکستان کے عوام آج تک امریکہ کی اس بربریت کو نہیں بھولے کہ جب امریکی ڈرون طیارے پاکستان کی سالمیت خودمختاری اور ہماری قومی غیرت پر حملہ کرتے ہوئے وطن عزیز پاکستان میں مختلف مقامات کو نشانہ بناتے رہے۔ جبکہ دنیا جانتی ہے کہ دنیا بھر میں دھشت گردی کا بانی خود امریکہ ہے۔ یہ امریکہ ہی ہے جس نے اسرائیل اور بعض عرب ممالک کے ساتھ مل کر داعش جیسی بدنام زمانہ دھشت گرد تنظیم کی بنیاد رکھی اور اس کی مکمل سرپرستی کی۔ دنیا کے مختلف ممالک میں مداخلت کی انہیں اپنا غلام بنایا۔ اس وقت صورتحال یہ ہے کہ عراق کے عوام منتخب پارلیمنٹ اور عراقی حکومت امریکہ سے قابض امریکی افواج کے انخلاء کا مطالبہ کر رہے ہیں جبکہ امریکہ مکمل بے شرمی اور ڈھٹائی سے سرزمین عراق خالی کرنے سے انکاری ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ امریکہ کے اندر نسل پرستی کی بنا پر سیاہ فام اور سرخ فام شہریوں سے امتیازی سلوک کی تاریخ بہت پرانی ہے۔ جب امریکہ کے اصلی باشندوں یعنی ریڈ انڈینز سرخ فام شہری جو وہاں کے اصل باشندے تھے اور فرزند زمین تھے ان کی نسل کشی کی گئی۔ اس وقت سے لے کر امریکہ کے اندر سیاہ فام اور سرخ فام مسلسل امتیازی سلوک کا شکار رہے ہیں۔ امریکا نے پوری دنیا میں دہشتگردی کی جو آگ لگائی آج وہ آگ مکافات عمل کے نتیجے میں اس کے اپنے گھر کو جلا رہی ہے ایسی صورتحال میں ہم یہ واضح کرنا چاہتے ہیں کہ امریکہ عالمی معاملات میں ابھی سپرپاور نہیں رہا بلکہ امریکہ کی گرفت عالمی معاملات میں ہر گزرتے دن کے ساتھ کمزور سے کمزور تر ہوتی چلی جارہی ہے۔

 علامہ مقصودڈومکی نے کہا کہ ایک طرف سے کرونا کی وجہ سے امریکا میں جو نقصانات ہوئے اس نے امریکی دعوے کو بے نقاب کر دیا دوسری طرف سے مشرق وسطیٰ میں امریکہ کا سب سے بڑا اتحادی اسرائیل اس وقت بدترین پوزیشن پر آ چکا ہے۔ صدر ٹرمپ اور امریکہ کی ریاست کی فلسطین کے حوالے سے پالیسی گزشتہ نصف صدی میں ظلم اور ظالم کا ساتھ دینے پر مبنی ہے یہی سبب ہے کہ امریکہ کے موجودہ صدر ٹرمپ نے بیت المقدس جو کہ تمام ادیان کے لئے اور فلسطین کے مظلوم عوام کے لئے امت مسلمہ کے لئے عقیدت اور محبت کا مرکز ہے اسے یک طرفہ فیصلہ کرتے ہوئے اسرائیلی دارالخلافہ کے طور پر اعلان کر دیا۔ ڈیل آف سینچری کے نام سے فلسطینیوں کے ساتھ بہت بڑی خیانت کی گئی۔ہم سیاہ فام امریکیوں کی تحریک کی حمایت کرتے ہیں امریکہ نے پوری دنیا میں جو ظلم و بربریت کیا ہے اور خود اپنے عوام کے خلاف جس ظلم و بربریت کا اظہار کیا ہے وہ قابل مذمت ہے اور امریکہ کے سیاہ فام اور سرخ فام مظلوم شہری پوری دنیا م کی حمایت کے حقدار ہیں۔ صدر ٹرمپ نے اپنے ہی عوام کے خلاف جو گولیاں چلانے کی دھمکی دی وہ امریکی صدور کی پست ذہنیت کی بہترین عکاسی کرتی ہے امریکہ کے شہریوں کا یہ کہنا ہے کہ ہم سانس نہیں لے پا رہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ یہ دنیا کے ان تمام مظلوم ممالک کی اور مظلوم قوموں کی آواز ہے کہ جہاں امریکہ نے اپنی ظلم و بربریت سے ان کی آواز کو دبایا ہے اور وہ قومیں جنہیں  امریکہ اپنی کالونی سمجھتا ہے یہ ان سب کی آواز ہے کہ ہم امریکہ کے مظالم سے تنگ ہیں اور ہم سانس نہیں لے پا رہے۔ یہی داستان عراق کی ہے یہی داستان شام کی ہے اور یہی داستان خطے کے ان ممالک کی ہے جہاں امریکہ کا قبضہ ہے۔ ایسی صورتحال میں ہم مطالبہ کرتے ہیں کہ امریکی قابض افواج عراق افغانستان اور خطے کے تمام ممالک سے نکل جائیں کیوں کہ اب غلامی کا دور ختم ہو چکا ہے اب قوموں کو اپنے مقدر کا فیصلہ کرنے کا اختیار دیا جائے ہم سمجھتے ہیں کہ اقوام عالم کے لئے اور مظلوم قوموں کے لیے وہ دن عید کا دن ہو گا کہ جس دن امریکہ کی غلامی سے انہیں نجات حاصل ہو۔ ہم پوری قوم اور پوری امت مسلمہ سے اپیل کرتے ہیں کہ وہ روز جمعہ کو ظالم اور غاصب امریکا سے نجات کے لئے یوم دعا کے طور پر منائیں۔ پاکستان حکومت امریکہ میں سیاہ فام شہریوں پر جاری امتیازی سلوک کی مذمت کرے۔

وحدت نیوز(اسلام آباد) مجلس وحدت مسلمین پاکستان کی جانب سےراولپنڈی صدرہاتھی چوک دھماکےاور قیمتی انسانی جانوں کے نقصان کی شدید مذمت کی گئی ہے۔ایم ڈبلیوایم کے مرکزی ڈپٹی سیکریٹری جنرل سید ناصرعباس شیرازی نے کہا کہ شر پسند عناصر ملک کی سلامتی کے خلاف ایک بار پھر متحرک ہو رہے ہیں،شدت پسندی کا خاتمہ تکفیری رجحان کے خاتمے سے مشروط ہے،دھماکے کے ذمہ داران اور سہولت کار عبرت ناک سزاؤں کے مستحق ہیں،عوام کی جان و مال کا تحفظ ریاست کی اولین ذمہ داری ہے۔

بعدازاں ناصرشیرازی نے ایم ڈبلیوایم ضلع راولپنڈی کے سیکریٹری جنرل علامہ سید علی اکبر کاظمی ودیگر رہنماؤں کے ہمراہ ہیڈ کوارٹر ٹیچنگ ہسپتال راولپنڈی کا دورہ کیا اور دھماکے میں زخمی ہونے والے مسجد فاطمیہ کے پیش امام مولانا خرم ملتانی سمیت دیگر زخمیوں کی عیادت کی۔ اس موقع پرناصرشیرازی نے کہاکہ دھماکے میں زخمی ہونے والوں کو مکمل طبی سہولیات کی فراہمی یقینی بنائی جائے۔

وحدت نیوز (اسلام آباد) مجلس وحدت مسلمین ضلع چنیوٹ کے ضلعی سیکرٹری جنرل سید اخلاق الحسن شاہ نے مرکزی سیکرٹریٹ اسلام آباد میں صوبائی سیکرٹری جنرل جناب علامہ عبد الخالق اسدی سے ملاقات کی۔ ملاقات میں دونوں رہنماؤں نے تنظیمی امور پر تبادلہ خیال کیا خصوصاً امسال ممکنہ طور پر محرام الحرام کے پروگراموں کا وبا کے دنوں کے ساتھ بیک وقت آنے پر ملت تشیع میں پائی جانی والی تشویش کو مدنظر رکھتے ہوئے دونوں رہنماؤں نے اس بات پر زور دیا کہ حکومت وقت محرم کی مجالس و عزداری کے حوالے سے واضح، قابل عمل اور متوازن پالیسی اپنائے۔

دونوں رہنماؤں نے ممکنہ طور پر پیش آنے والی مشکلات کو زیر غور لاتے ہوئے مومنین کی جانب سے وبا کے ایام میں مجالس و عزاداریاں منعقد کرتے ہوئے شیعہ فقہا و مراجع کی تاکید کے پیش نظر طبی ماہرین کی ہدایات پر سختی سے عمل کو بھی یقینی بنانے پر غور کیا۔ دونوں رہنماؤں نے اس بات کو بھی زیر غور لایا کہ مجالس و عزداری پر کسی قسم کا سمجھوتہ نہیں کیا جائے گا البتہ احتیاطی تدابیر کو ممکنہ حد تک یقینی بنانے میں مجلس وحدت کے کارکنان، بانیان مجالس اور دیگر عزادار اپنا بھرپور کردار ادا کریں گے۔

مرکزی سیکرٹریٹ کے دورہ کے موقع پر ضلعی سیکرٹری جنرل سید اخلاق الحسن نے وفد کے ہمراہ معروف عالم دین علامہ محمد امین شہیدی کے ساتھ ان کی رہائش گاہ پر ملاقات بھی کی اور انہیں ان کے بھائی کی وفات پر ضلع چنیوٹ کے ایم ڈبلیو ایم کے کارکنان اور عہدیداروں کی جانب سے تعزیت کا پیغام پہنچایا۔ وفد میں ان کے ہمراہ ایم ڈبلیو ایم کے ضلعی رہنما سید عاشق حسین بخاری بھی شامل تھے۔

وحدت نیوز(پشاور) مجلس وحدت مسلمین خیبر پختونخوا کے صوبائی سیکرٹری جنرل علامہ سید وحید کاظمی نے کہا کہ پاراچنار اور بنگش کے علاقے میں زمینی تنازعات کے حل میں غیر ضروری طوالت سنگین مسائل کا سبب بن سکتی ہے۔انہیں ہنگامی بنیادوں پر حل کرنا ہوگا۔ پاراچنار میں قبضہ مافیا پوری قوت کے ساتھ متحرک ہے۔

زمینوں پر غیر قانونی قبضے اور حکومتی خاموشی دیکھ کر لگتا ہے کہ وہاں قانون کی بجائے طاقت کی حکمرانی ہے۔اگر قابضین اسی طرح آزادانہ اپنی کاروائیوں میں مصروف رہے تو پھر مختلف طاقتور گروہوں کے درمیان خونریزی کے خدشات کو رد نہیں کیا جا سکتا۔ علاقائی امن کی خاطر قبضہ مافیا کو لگام دینا ہو گی۔  صوبائی حکومت اور قومی سلامتی کے  اداروں کی توجہ اس سنگین مسلے کی طرف بارہا مبذول کرائی گئی لیکن ذمہ داران کی طرف سے کوئی نوٹس نہیں لیا گیا۔

انہوں نے مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ  پاراچنار، علاقہ بنگش اور ڈی ائی خان کے کوٹلی امام حسین ع کی زمینیں ان کے اصل حق داروں تک پہنچائی جائے۔ تاکہ فرقہ وارانہ فسادات برپا کرنے والوں کے پاس شرپسندی کا کوئی جواز باقی نہ رہے۔ پاراچنار کی ضلعی انتظامیہ بھی کسی جانب داری کا مظاہرہ کرنے کی بجائے  زمینوں کی دیرینہ مسائل کا حل کاغذات مال کے ذریعے کرے تاکہ اصل حقدار محروم نہ رہیں۔

 

وحدت نیوز(کراچی) پانچ نکاتی ایجنڈے پرپاکستان پیپلزپارٹی سندھ کے زیراہتمام کثیر الجماعتی کانفرنس کا انعقاد وزیر اعلیٰ ہاؤس کراچی میں کیا گیا، کثیر الجماعتی کانفرنس کی صدارت پی پی پی سندھ کے صدر نثار کھوڑو نے کی۔ کانفرنس میں وزیراعلی سندھ سید مراد علی شاہ سمیت پیپلزپارٹی کے دیگر کئی صوبائی وزرا ءاور رہنماء موجود تھے جبکہ مجلس وحدت مسلمین کی نمائندگی صوبائی سیکریٹری جنرل علامہ سید باقرعباس زیدی اورصوبائی ڈپٹی سیکریٹری جنرل سید علی حسین نقوی نے کی ۔

کثیر الجماعتی کانفرنس کے ایجنڈے میں کورونا وائرس اور موجودہ صورتحال ، این ایف سی کی غیر آئینی تشکیل اور ایوارڈ کے اعلان میں طویل تاخیر، اسٹیل مل ملازمین کی غیر آئینی اور غیر قانونی برطرفیاں،ملک بھرمیںٹڈی دل کے حملےاور اٹھارویں ترمیم کو متناذعہ بنانے کی کوشش شامل تھی۔

اس موقع پر اظہار خیال کرتے ہوئے ایم ڈبلیوایم کے صوبائی رہنما سیدعلی حسین نقوی نے اٹھارویں ترمیم پر مجلس وحدت مسلمین کے تحفظات سے آگا ہ کیااور اختلافی نوٹ پیش کیا۔ جبکہ انہوں نے اسٹیل مل ملازمین کی غیر قانونی برطرفیوں کی بھرپومذمت کی ۔ انہوں نے کہاکہ سندھ حکومت کوروناوائرس کی روک تھام کیلئے موثر اقدامات کرے ،محرم الحرام میں ملت جعفریہ کسی پابندی کو قبول نہیں کرے گی اور عزاداری امام حسین ؑ میںکوئی رکاوٹ قبول نہیں کرے گی چاہے جتنی ایف آئی آرز کٹیں یا جتنی گرفتاریاں ہوں۔

کانفرنس میں مسلم لیگ ن کے شاہ محمد شاہ،ایم کیو ایم پاکستان سے خواجہ اظھارالحسن، محمد حسین، پی ایس پی سے شبیر قائمخانی، جے یو آئی سے مولانا راشد محمود سومرو ،جماعت اسلامی سے حافظ نعیم ، ممتاز حسین سہتو ، ٹی ایل پی کے پارلیمانی لیڈرمفتی قاسم فخری، سندھ ترقی پسند پارٹی سے ڈاکٹر قادر مگسی ،ایس این پی سمیت عوامی جمھوری پارٹی کے ڈاکٹر وشنو مل، پی ڈی پی کے بشارت مرزا،شیعہ علماء کونسل سندھ کے صدر مولانا ناظر تقوی سمیت مسلم لیگ ق، عوامی جمہوری پارٹی، جمعیت علماء پاکستان، اے این پی، پختوا خواہ عوامی ملی پارٹی اور سنی تحریک کے رہنماؤں کی شرکت۔

وحدت نیوز (گلگت) نگران وزیر اعلیٰ اور وزراء کا انتخاب اہلیت کی بنیاد پر عمل میں لایا جائے ۔ کسی بھی پریشر گروپ کے تحفظات کویکسر نظرانداز کرکے علاقے کے بہتر مفاد میں فیصلے کئے جائیں ۔ ماضی میں اہم عہدے اور تقرریاں میرٹ کی بجائے بیلنس پالیسی کے تحت انجام دے کر تعصبات کو ہوا دی گئی ۔ وزیر اعلیٰ اور اپوزیشن لیڈر علاقے کے بہتر مفاد میں ہم آہنگ ہوکر نگران وزیر اعلیٰ کا انتخاب کریں ۔

مجلس وحدت مسلمین گلگت بلتستان کے سیکرٹری سیاسیات غلام عباس نے کہا کہ الیکشن قریب آتے ہی متعصبانہ بیانات اور فرقہ وارانہ سوچ ابھی سے الیکشنزکو متنازعہ بنارہی ہیں ۔ مجلس وحدت مسلمین اہلیت کی بنیاد پر نگران وزیر اعلیٰ کا انتخاب چاہتی ہے جو شفاف انداز میں الیکشن منعقد کرواکر اپنی ذمہ داری سے سبکدوش جائیں ۔

انہوں نے کہا کہ نگران وزیر اعلیٰ اور اس کی کابینہ مسلکی و سیاسی وابستگی سے بالاتر ہوں تاکہ آزادانہ الیکشن کی راہ میں کوئی رکاوٹ نہ ہو ۔ کسی بھی اہم عہدے کیلئے میرٹ پر اترنے والے کو محض اس کے مسلکی وابستگی کی بنیاد پر رد کرنا یا قبول کرنا عقل ومنطق کے منافی اقدام ہے اور تمام ادیان الٰہی کی تعلیمات میں عدل وانصاف کے قیام پر زور دیا گیا اور عدل وانصاف کا تقاضا یہ ہے کہ اہلیت کی بنیاد پر عہدے تقسیم کئے جائیں ۔

 ماضی میں حکمرانوں کی غلط پالیسیوں ،عدم برداشت اور متعصبانہ سوچ نے گلگت بلتستان کے عوام کو ناقابل تلافی نقصان پہنچایاہے جس کا ازالہ صدیوں تک ناممکن ہے لہٰذا ریاست پاکستان کے ذمہ دار سوچ سمجھ کر اور علاقے کے عوام کے بہتر مفاد کو پیش نظر رکھ کر فیصلے کریں اور جو بھی عوامی مفاد کے خلاف تعصبانہ سوچ کی بنا پر دباءو ڈالنے کی کوشش کرے ان کے خلاف تادیبی کاروائی کی جائے ۔ انہوں نے وزیر اعلیٰ اور اپوزیشن لیڈر سے اپیل کی کہ وہ مسلکی وابستگی سے بالاتر ہوکر اہلیت کی بنیاد پر نگران وزیر اعلیٰ کی نامزدگی پر متفق ہوجائیں ۔

Page 4 of 1048

مجلس وحدت مسلمین پاکستان

مجلس وحدت مسلمین پاکستان ایک سیاسی و مذہبی جماعت ہے جسکا اولین مقصد دین کا احیاء اور مملکت خدادادِ پاکستان کی سالمیت اور استحکام کے لیے عملی کوشش کرنا ہے، اسلامی حکومت کے قیام کے لیے عملی جدوجہد، مختلف ادیان، مذاہب و مسالک کے مابین روابط اور ہم آہنگی کا فروغ، تعلیمات ِقرآن اور محمد وآل محمدعلیہم السلام کی روشنی میں امام حسین علیہ السلام کے ذکر و افکارکا فروغ اوراس کاتحفظ اورامر با لمعروف اور نہی عن المنکرکا احیاء ہمارا نصب العین ہے 


MWM Pakistan Flag

We use cookies to improve our website. Cookies used for the essential operation of this site have already been set. For more information visit our Cookie policy. I accept cookies from this site. Agree