وحدت نیوز(سکردو) مجلس وحدت مسلمین گلگت بلتستان کے سیکریٹری جنرل اور مجاہد عالم دین علامہ آغا سید علی رضوی نے کہاکہ سر زمین اہلبیت ؑمیں یوم حسین ؑپر پابندی سمجھ سے بالاتر ہے۔ یونیورسٹی آف بلتستان میں آج یوم حسینؑ کے موقع پر متعصب رجسٹرار نے بلاوجہ تعطیل کا اعلان کرکے اپنے آپ یزیدی ہونے کا ثبوت دیا ہے۔

انہوں نے یوم حسینؑ کمیٹی سے گزارش کی کہ جس دن بھی یونیورسٹی کھلے اسی دن یوم حسینؑ منائیں۔ یونیورسٹی کسی کے باپ کی جاگیر نہیں۔ اب ہر قیمت پر یوم حسینؑ یونیورسٹی میں ہی ہونا چاہیے، کسی قسم کی ناخوشگواری کی صورت میں تمام تر ذمہ داری متعصب رجسٹرار پر عائد ہوگی۔ اور یاد رکھیں جو بھی حسینیت سے ٹکرائے اس کا انجام اپنے آباو اجداد کی طرح ہوگا۔

وحدت نیوز(اسلام آباد) کشمیر میں ظالم نے اپنے ظلم اور مظلومین نے اپنے صبر کی نئی تاریخ رقم کی ہے،وادی کشمیرمیں ہمارے مظلوم کشمیری بھائی گذشتہ چوراسی دنوں سے محصور ہیں،حکومت کشمیری مظلومین کی ہر ممکن مدد کو یقینی بنائے۔ان خیالات کا اظہار سربراہ مجلس وحدت مسلمین پاکستان علامہ راجہ ناصر عباس جعفری نے27اکتوبر یوم سیاہ کشمیرکے موقع پرمیڈیا سیل سے جاری بیان میں کیا۔

 انہوں نے کہا کہ کشمیر پاکستان کی تکمیل کا نامکمل ایجنڈا ہے،اور ہم اپنے کشمیری بھائیوں کی حقوق کے لئے ہر محاذ پر ان کے شانہ بشانہ کھڑے ہیں،کشمیری مظلومین غزہ،لبنان اور یمن کے مظلومین سے درس حریت لیتے ہوئے غاصب انڈیا کیخلاف قیام کرے،انشااللہ ظالم جلد رسوا ہوگا اور کشمیری مسلمانوں کی آزادی کی یہ مقدس تحریک ضروت کامیابی سے ہمکنار ہوگی۔

انہوںنے مزیدکہاکہ انڈیا جنوبی ایشیا کے امن کے لئے مستقل خطرہ بن چکا ہے،پاکستان کیخلاف کسی بھی جارحیت کا پوری قوم مل کر بھرپور جواب دینگے،قانون الہی ہے کہ ظالم رسوا ہوکر رہے مظلوم کشمیری مسلمان مسلم امہ کی جانب بھی دیکھ رہے ہیں کہ کب دیگر مسلم ممالک بھی مظلومین کشمیرکی حمایت کے لئے آگے بڑھیں۔اور دنیا میں حمایت مظلومین کشمیر کی صدا ہر کونے کونے سے بلند کریں ۔

وحدت نیوز(آرٹیکل)نئے عراق کا فاتح امریکہ ہے اور عراق میں امریکی نفوذ بہت زیادہ ہے.
1- وہ اسے ایران کے خلاف استعمال کرنا چاھتا ہے.
2-  وہ اسے تین حصوں میں تقسیم کرنا چاھتا ہے.
3- وہ اپنی 100% وفادار حکومت قائم کرنا چاھتا ہے.      
4- مقاومت کے بلاک کو توڑنا یا دراڑ ڈالنا چاھتا ہے.

عملی طور پر مقاومت کے بلاک کی حکمت عملی سے امریکہ چاروں اھداف کے حصول میں ناکام رھا ہے.

مقاومت کے بلاک کی بڑی طاقت شیعہ ہیں. اب اس نے تشیع کو کمزور کرنے کے لئے انکے درمیان داخلی جنگ کے ایجنڈے پر زور دیا ہے. اور وہ تمام تر شیعہ جو ایم آئی 6 یا سی آئی اے یا دیگر امریکی بلاک کی ایجنسیوں سے مربوط تھے انہیں ایران اور مقاومتی بلاک کے خلاف زمینہ سازی کے لئے میدان میں اتارا ہے. جن میں شیرازی ، سرخی ، کاطع اور دیگر مجھول نام نہاد علماء جو عراق ،امارت، بریطانیہ و امریکا اور دیگر ممالک میں مقیم ہیں انہیں سوشل میڈیا ودیگر ذرائع سے ملک کی فضاء آلودہ کرنے کے لئے فعال کیا جا چکا ہے.عراقی سابق وزیر داخلہ بیان جبر کہتا ہے کہ عراقیوں کو صربیا میں امریکی حکام نے بحرانی کیفیت ایجاد کرنے اور افراتفری پھیلانے کی ٹریننگ دی ہے.

عراق میں سعودی ایجنڈہ

سعودی انٹیلی جنس کا سعودی فرمانروا کو لکھا جانے والا خفیہ مراسلہ سوشل میڈیا میں کل سے گردش کر رہا ہے جس میں سعودی اھداف مندرجہ ذیل بیان ہوئے ہیں.

  ۱. پارلیمانی نظام کا خاتمہ اور اسکی جگہ صدارتی نظام کا قیام.
۲. آرمی ، امنیتی نظام اور حشد شعبی کی تحلیل.
۳. شیعہ مسلح گروہوں کا خاتمہ جو کہ سعودی عرب کی امنیت کے لئے خطرہ ہیں.
۴ . عراقی امنیتی فورسز کی جانب سے مظاہرین پر تشدد کی کوریج تاکہ رائے عامہ ہموار کرنے  میں مدد کرے.

لمحہ فکریہ ▪

▪لیکن تعجب اس بات پر ہے کہ " امریکہ برا برا " کا نعرہ نہیں

 ▪ سعودیہ جس نے سیکڑوں خود کش حملے کروائے اور کھل کر داعش کی مدد کی "سعودیہ برا برا" کا نعرہ نہیں

. ▪اسرائیل نے کھلے عام عراق پر میزائل داغے اور عراقی اسلحے کے ڈپو تباہ کئے اور اسبسے پہلے انکا ایٹمی پراجیکٹ تباہ کیا  اور عوام کو قتل کیا لیکن "اسرائیل برا برا "کا نعرہ نہیں.

 ▪لیکن جنھوں نے عراق کو داعش کے شر سے بچایا.  ▪جنہوں نے عراق کو ٹوٹنے نہیں دیا انہیں کے خلاف ہی نعرے لگتے ہیں.  

یہ وہی پروپیگنڈہ ہے کہ جس کے تحت شامی کہتے تھے کہ کیا علی (علیہ السلام ) نماز بھی پڑھتے تھے!!!؟

الزامات اور پروپیگنڈہ ایران کے خلاف

عراق ایران کا ہمسایہ ملک ہے اسے کچھ نہیں کرنا چاہیے انتظار کریں کہ ایک اور صدام جنگ مسلط کرے. اور داعش وھابیت مقامات مقدسہ کو جنت البقیع کی طرح مسمار کر دے. لیکن چار سمندر پار سے آکر امریکہ کو سب کچھ کرنے کا حق ہے۔

 

تحریر: علامہ ڈاکٹرسید شفقت شیرازی

وحدت نیوز(روہڑی) شہید موسی کاظم کی پہلی برسی کے موقع پر مجلس ترحیم مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی ترجمان علامہ مقصود علی ڈومکی نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ شہادت وہ انعام ہے جو عاشقان خدا کو ملتا ہے اور شہید وجہ اللہ پر نظر کرتا ہے۔

انہوں نےکہا کہ امریکہ شیطان کی جملہ نحوستیں موجود ہیں اس لئے حضرت امام خمینی رح نے امریکہ کو شیطان بزرگ کہا ظلم دھشت گردی جھوٹ وعدہ خلافی دھوکہ محسن کشی فساد سمیت ہر فساد کی جڑ امریکہ ہے۔

انہوں نےکہا کہ نظام امامت و ولایت شجرہ طیبہ بن کر پھیل رہا ہے اور دشمن کے تمام تر سازشیں اور شیطنت ناکام ہو چکی ہے آج عالمی استکبار اور طاغوت کی صفوں میں ذلت و رسوائی اور شکست کا احساس نمایاں ہے۔

انہوں نےکہا کہ آل سعود نے سر زمین وحی کے تقدس اور احترام کو پامال کیا ہے سر زمین قرآن و اسلام پر ناچ گانے کی محفلیں جوا اور قمار خانوں کا افتتاح اور مقدسات کی توہین نا قابل برداشت ہے امت مسلمہ آل سعود کے اسلام دشمن اقدامات پر خاموش تماشائی بننے کی بجائے صدائے حق بلند کرے۔

وحدت نیوز(بغداد) سیکرٹری امور خارجہ مجلس وحدت مسلمین پاکستان جناب حجت الاسلام و المسلمین ڈاکٹر سید شفقت حسین شیرازی نے عراقی مجلس اعلیٰ کے سربراہ اور عراقی پارلیمنٹ کے سابق نائب رئیس جناب شیخ ھمام باقر حمودی سے ملاقات کی۔ شعبہ امور خارجہ ایم ڈبلیو ایم پاکستان کے دفتر سے جاری ایک بیان کے مطابق اس ملاقات کا مقصد پاکستانی زائرین کو درپیش ویزا مشکلات کے مستقل حل کے حوالے عراق کی سیاسی و مذہبی قیادت کو مطلع کرنا اور انہیں اس مسئلے کے حل میں اپنا کردار ادا کرنے کی درخواست کرنا ہے۔

شعبہ امور خارجہ ایم ڈبلیو ایم پاکستان کے دفتر سے جاری بیان میں بتایا گیا ہے کہ اس ملاقات کا دوسرا مقصد عراق کی سیاسی و مذہبی قیادت کو مسئلہ کشمیر کی اہمیت کی طرف متوجہ کرنا اور خطے کی امن و سلامتی پر مسئلہ کشمیر کے اثرات کے پیش نظر عراق کی سیاسی و مذہبی قیادت کو اپنا ممکنہ کردار ادا کرنے پر قائل کرنا ہے۔عراق کی دستور ساز کمیٹی کے سربراہ اور اہم عراقی سیاست دان جناب شیخ ھمام باقر حمودی سے ہونے والی اس ملاقات میں سیکرٹری امور خارجہ ایم ڈبلیو ایم پاکستان جناب ڈاکٹر سید شفقت حسین شیرازی نے پاکستانی زائرین کو درپیش ویزا مسائل پر عراقی سیاسی و مذہبی قیادت کے تعاون کا شکریہ ادا کیا اور اس مسئلے کے مستقل حل کی ضرورت پر زور دیا۔ جناب شیخ ھمام حمودی نے ویزا و دیگر مسائل کے مستقل حل کے لیے تعاون کا یقین دلایا۔

حجت الاسلام و المسلمین جناب ڈاکٹر سید شفقت حسین شیرازی نے مسئلہ کشمیر کی اہمیت اور علاقائی امن و سلامتی پر اس مسئلے کے اثرات کے حوالے سے جناب شیخ حمودی کو بریف کرتے ہوئے کہا پاکستان اور ہندوستان دو جوہری طاقتیں ہیں۔ اگر مسئلہ کشمیر کا کوئی پائیدار حل نہیں نکالا گیا تو جوہری جنگ کا خطرہ خطے کے سر پر منڈلاتا رہے گا۔ انہوں نے کہا موجودہ ہندوستانی حکومت کے توسیع پسندانہ عزائم اور ظالمانہ اقدامات نے دونوں ممالک کے درمیان ممکنہ جنگ کے خطرے کو مزید بڑھا دیا ہے۔

ڈاکٹر سید شفقت حسین شیرازی نے مسئلہ کشمیر کو اجاگر کرنے اور اس کے حل کے لیے عالم اسلام کے ٹھوس اقدامات کی ضرورت پر زور دیا۔ عراقی پارلیمنٹ کے سابق نائب رئیس شیخ ھمام باقر حمودی نے اس حوالے سے کہا کہ وہ پہلے دن سے استصواب رائے کو مسئلہ کشمیر کا اصل حل سمجھتے ہیں اور اس سے قبل کئی بار اس حوالے سے عراقی و دیگر سیاستدانوں اور حکمرانوں کو اس طرف متوجہ کر چکے ہیں۔ انہوں نے کشمیر میں ہونے والے مظالم کی شدید الفاظ میں مذمت کی اور کہا میں عراقی حکومت اور سیاسی و مذہبی قیادت کو مسئلہ کشمیر پر دو ٹوک موقف اپنانے اور اس مسئلے کے حل میں ممکنہ کردار ادا کرنے کی تاکید کرتا ہوں۔

عراقی پارلیمنٹ کے سابق نائب رئیس اور مجلس اعلیٰ عراق کے سربراہ جناب شیخ ھمام باقر حمودی نے ڈاکٹر سید شفقت حسین شیرازی کو عراق کی موجودہ صورتحال پر بریف کرتے ہوئے بتایا کہ موجودہ بحران کے پیچھے امریکہ اور اسرائیل کا ہاتھ ہے۔ انہوں نے کہا امریکہ کا یہ وطیرہ رہا ہے کہ وہ اپنے ناپسندیدہ حکمرانوں کو کبھی قبول نہیں کرتا۔ امریکہ کی کوشش ہوتی ہے کہ جو حکمران اس کو پسند نہیں ہیں ان کا تختہ الٹ دیا جائے یا ان کے لیے مشکلات کھڑی کی جاتی رہیں تاکہ وہ اپنے ملک کی عوام کی فلاح و بہبود کے لیے مستحکم قدم نہ اٹھا سکیں۔

انہوں نے کہا موجودہ عراقی حکومت کی خارجہ پالیسی امریکہ کو پسند نہیں ہے لہذا وہ عادل عبد المہدی کی حکومت کے خلاف ایک محاذ بنانے کی کوشش کر رہا ہے۔ انہوں نے کہا اس سلسلہ میں امریکہ پہلے مرحلے پر عوام کی ایک تعداد کو سڑکوں پر لایا ہے اگلے مرحلے میں چند بے بصیرت سیاسی رہنماؤں اور فوجی افسروں کو عادل عبد المہدی کی حکومت کے خلاف اکسایا اور یوں اس حکومت کا تختہ الٹنے کی کوشش کی جائے گی۔

 عراق کی آئین ساز کمیٹی کے سربراہ جناب شیخ ھمام باقر حمودی نے کہا کہ عراقی عوام اور سیاسی و مذہبی قیادت کو امریکہ کی اس سازش سے نمٹنے کے لیے انتہائی بصیرت سے کام لینا ہوگا۔ایک گھنٹے سے زیادہ جاری رہنے والی اس ملاقات میں مجلس اعلیٰ عراق کے سربراہ جناب شیخ ھمام حمودی نے پاکستان میں مجلس وحدت مسلمین کے کردار اور موقف کو سراہا اور ملکی امن و استحکام اور بین المذاھب ہم آہنگی کے لیے بطور سیاسی و مذہبی جماعت مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے بھرپور کردار ادا کرنے کی ضرورت پر زور دیا۔ شیخ ھمام حمودی نے اہم بین الاقوامی مسائل کے حوالے سے پاکستانی حکومت خصوصاً وزیراعظم پاکستان کے موقف اور کوششوں کو سراہا اور اس امید کا اظہار کیا کہ پاکستانی وزیراعظم اور دیگر مسلمان رہنماؤں کی کوششوں سے خطہ جلد پائیدار امن اور سلامتی کا حامل ہوگا۔

وحدت نیوز(بغداد) گزشتہ روز مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی سیکرٹری امور خارجہ حجت الاسلام و المسلمین ڈاکٹر سید شفقت حسین شیرازی نے سابق عراقی نائب صدر اور وزیر اعظم، حزب الدعوۃ عراق کے سربراہ نوری المالکی سے ملاقات کی۔ ملاقات میں ڈاکٹر سید شفقت حسین شیرازی نے امسال اربعین حسینی کے موقع پر زائرین کو درپیش ویزا مسائل پر عراقی حکومت اور خصوصاً عراق کی سیاسی قیادت کے فوری اور مثبت ردعمل پر نوری المالکی کا شکریہ ادا کیا۔ ڈاکٹر سید شفقت حسین شیرازی نے پاکستانی زائرین کے لیے عراقی ویزا کے مسائل کے مستقل حل کی ضرورت پر زور دیا اور کہا کہ ویزا کے حوالے سے درپیش مسائل کو مستقل بنیادوں پر حل کرنے کی ضرورت ہے۔

انہوں نے کہا اربعین حسینی کے اہم موقع پر ویزا جاری کرنے میں درپیش مسائل کیوجہ سے پاکستانی زائرین کا کروڑوں روپے کا نقصان ہوا ہے۔ پاکستانی شہریوں کو درپیش ویزا مسائل کے حوالے سے نوری المالکی نے کہا کہ میں نے اپنے دورِ حکومت میں ویزا مسائل کو سیاحتی کمپنیوں کے ذریعے مستقل بنیادوں پر حل کرنے کی جانب قدم بڑھایا تھا اور میں بہت جلد موجودہ حکومت خصوصاً وزارت داخلہ سے اس مسئلے کو مستقل بنیادوں پر حل کرنے کی بات کروں گا۔

ایک گھنٹہ جاری رہنے والی اس ملاقات میں حجت الاسلام و المسلمین ڈاکٹر سید شفقت حسین شیرازی نے مسئلہ کشمیر پر بات کرتے ہوئے کہا کہ ہندوستانی حکومت نے گزشتہ پانچ اگست سے کشمیر کو ایک جیل بنا رکھا ہے اور کشمیر میں ایک ملین ہندوستانی فوج داخل کرکے تاریخ کے بدترین مظالم ڈھائے جارہے ہیں۔ انہوں نے کہا اگر عالمی برادری خصوصاً امتِ مسلمہ مسئلہ کشمیر پر نہ اٹھی تو کشمیر میں ایک ایسا انسانی المیہ رونما ہوسکتا ہے جس کے آثار کئی نسلوں کو متاثر کریں گے اور یہ مسئلہ انتہائی گھمبیر شکل اختیار کرلے گا۔

 سابق عراقی وزیر اعظم نوری المالکی نے کہا ہم مسئلہ کشمیر کے حوالے سے تشویش کا شکار ہیں اور مختلف عالمی اور علاقائی فورمز پر اس مسئلے کی سنگینی کے پیش نظر موثر اقدامات کی بھرپور حمایت کرنے کے لیے تیار ہیں۔ انہوں نے کشمیر میں بھارتی مظالم کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا مسئلہ کشمیر پر امت مسلمہ کے فوری اور متفقہ اقدامات کی اشد ضرورت ہے۔

ملاقات میں نوری المالکی نے علاقائی امن و سلامتی کے حوالے سے پاکستانی وزیراعظم عمران خان کے موقف اور کوششوں کو سراہا۔ سابق عراقی وزیر اعظم نوری المالکی نے کہا میں عراقی حکومت کو تاکید کرتا ہوں کہ وہ پاکستان کے ساتھ تعلقات میں مزید بہتری لائے۔ ملاقات میں دونوں سیاسی اور مذہبی رہنماؤں نے حزب الدعوۃ عراق اور مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے درمیان باہمی دلچسپی کے امور میں تعاون جاری رکھنے پر اتفاق کیا۔

Page 9 of 193

مجلس وحدت مسلمین پاکستان

مجلس وحدت مسلمین پاکستان ایک سیاسی و مذہبی جماعت ہے جسکا اولین مقصد دین کا احیاء اور مملکت خدادادِ پاکستان کی سالمیت اور استحکام کے لیے عملی کوشش کرنا ہے، اسلامی حکومت کے قیام کے لیے عملی جدوجہد، مختلف ادیان، مذاہب و مسالک کے مابین روابط اور ہم آہنگی کا فروغ، تعلیمات ِقرآن اور محمد وآل محمدعلیہم السلام کی روشنی میں امام حسین علیہ السلام کے ذکر و افکارکا فروغ اوراس کاتحفظ اورامر با لمعروف اور نہی عن المنکرکا احیاء ہمارا نصب العین ہے 


MWM Pakistan Flag

We use cookies to improve our website. Cookies used for the essential operation of this site have already been set. For more information visit our Cookie policy. I accept cookies from this site. Agree