The Latest

وحدت نیوز(ملتان)وحدت مسلمین ضلع ملتان کی ضلعی کابینہ کا اجلاس آج ڈپٹی سیکرٹری جنرل برادر غلام حسنین انصادی کی رہائش گاہ پر منعقد ہوا جس کی صدارت سیکرٹری جنرل ملتان برادر وجاہت علی مرزا نے کی اجلاس میں کرونا وائرس کی وبا سے پیدا ہوئی صورت حال پر طویل گفتگو ہوئی اور آئندہ کی ورکنگ اور لائحہ عمل کا جائزہ لیااس موقع پر مہم کے پہلے فیز کی تکمیل اور اہداف کی حصولی اور مہم کے دوران برادان کی کاوش کو سراہا گیا ۔ وہیں اب مہم کے فیز 2 کی تیاری اور اہدافات کا تعین کیا گیا جس کے تحت مخیر خضرات اور دیگر آرگنائزیشنز و ورکنگ گروپس سے کوائرڈنیٹ کر کے عوام کے گھروں میں راشن کی تقسیم اور ممکنہ بگڑتی صورت حال کے دوران ہنگامی حکمت عملی جیسے مسائل پر گفتگو ہوئی ۔

اس کے علاوہ شہر کے مختلف علاقوں میں گھر گھر ناشتے کروانے کی مہم کی بھی منظوری دی گئی اس موقع پر ڈپٹی سیکرٹری جنرل برادر حسنین انصاری کو کوائرڈنیٹر کرونا مہم نام زد کیا گیا اور مجلس وحدت مسلمین ضلع ملتان کے ذیلی ادارے المجلس ڈیزاسٹر مینجمنٹ سیل  کی فعالیت کے حوالے سے امور کا جائزہ لیا گیا۔۔اس موقع پر مولانا عمران ظفر ،عمران نقوی ،حسنین رضا کربلائی حسن عباس گھلو ،قیصر عباس حسنین رضا انصاری ،نسیم بھائی بھی موجود تھے

وحدت نیوز(اسلام آباد) مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی سیکریٹری جنرل علامہ ناصر عباس جعفری نے اب تک نیوز چینل کے پروگرام’ ٹو نائٹ ود فریحہ‘ میں شہید ڈاکٹر اسامہ ریاض کو کرونا وائرس کے خلاف جنگ کرتے ہوئے شہید ہونے پرزبردست خراج تحسین پیش کیا اور کہا کہ ان کی خدمات کو ہرگز فراموش نہیں کرنا چاہیئے ۔

انہوں نے کہاکہ پوری قوم کو کرونا وائرس سے مقابلہ کرنا ہوگا ۔ کرونا وائرس کے اثرات پندرہ روز بعد ظاہر ہوتے ہیں ،جولوگ خود کو صحت مند خیال کرکے مساجد میں جائیں گے ،ممکن ہے کہ وہ کرونا کا شکار ہو اور دوسروں کو اثرات منتقل کرنے کا باعث بن جائے ۔ اس لئے دینی اور قومی مفادات کو سامنے رکھ کر فیصلے کرنے ہوں گے ۔ مراجعین اور عالم اسلام کی بڑی جامعات نے اجتماعات سے منع کردیا ہے ۔ پھر اس کے بعد ایسے فتوؤں کی کوئی جگہ نہیں رہتی جو لوگوں میں اضطراب کا باعث بنے ۔

 علامہ ناصر عباس جعفری کا کہنا تھا کہ انسان کی ذمہ داری ہے کہ وہ زند ہ رہے ۔ اسلام نے انسان کی جان کو بہت قیمتی جانا ہے ۔ ایک آدمی کی وجہ سے کوئی بیمار ہوا تو ا س کے علاج کی ذمہ داری پہلے پر ہوگی ۔ مسجد میں نمازجماعت پڑھنا مستحب ہے ،اپنی اور دوسروں کی جان بچانا واجب ہے ۔ مساجد میں لوگوں کو ایک دوسرے سے یقینی خطرہ ہے ۔ اس بناء پر احتیاط پر عمل کرنا ضروری ہے ۔

 علامہ ناصرعباس جعفری نے کہا کہ تفتان سرحد پر قرنطینہ سینٹر صحیح تقاضوں کے مطابق نہیں بنایا گیا تاہم الحمد اللہ اس کے باوجود بھی ایران سے آنے والے تاحال محفوظ ہیں ۔ اس طرح کے ابہامات اصل مسئلہ سے دو ر کرنے کا سبب ہے ۔ کورنا وائرس سے لوگوں کی توجہ کو تبدیل کرنا غیر ذمہ دارانہ عمل ہے ۔

وحدت نیوز(کراچی) علامہ کاظم عباس نقوی نے بی بی زینب ؑ کی ولادت باسعادت کے موقع پر آن لائن خطاب کیا ۔ ا س موقع پر انہوں نے کہا کہ بی بی زینب ؑ اپنے زمانہ کی سیدہ تھیں ،خواتین جب یہ سوچتی ہیں کہ بی بی سیدہ زہراؑ کا مرتبہ بہت بلند ہیں ہم کیسے آگے بڑھ سکتے ہیں ؟ تویہ کیفیت حجاب بن جاتی ہے جبکہ بی بی سیدہ اور بی بی زینب کو نمونہ بناکر خدا کا قرب حاصل کرنا زیادہ آسان ہوجاتا ہے ۔

 انہوں نے کہا کہ شہید ڈاکٹر شریعتی کے مطابق ہر انقلاب کے دو رخ ہوتے ہیں ۔ ایک رخ خونی ہوتا ہے اور دوسرا پیغام کا رخ ہوتا ہے ۔ امام حسینؑ نے کربلا کا ایک رخ مکمل کیا اور بی بی زینب ؑ  نے دوسرے رخ کی تکمیل کی ۔ انہوں نے کہا کہ بی بی زینب ؑ انتہائی باعظمت خاتون تھیں ۔ ایک ایسے موقع پر جب نہضت کربلا کو جس کام کی ضرورت تھی عین اسی موقع پر آپ نے شریکتہ الحسین ؑ بن کر اسے بھرپور سہارادیا ۔ علامہ کاظم عباس نقوی نے کہا کہ جس انقلاب میں زینبی فکر نہیں ہوتی اور خواتین کا کردار نہیں ہوتا وہ انقلاب اپنی بقاء کا ضامن نہیں بن پاتا ۔ انقلاب اسلامی ایران کے لئے خواتین نے زینبی ؑ کردار ادا کیا،جنہیں امام خمینی نے بھی سراہا ہے ۔

 علامہ کاظم عباس نقوی نے کہا کہ دین خواتین کو چار دیواری میں مقید نہیں کرتا مگر باہر نکلنے کی وجہ بھی بیان کرتا ہے ۔ خواتین کوباعظمت اور پاکیزہ ہونے کی بناء پر صرف الہی مقاصد کےلئے باہر آنے کی اجازت ہے ۔ انہوں نے حالیہ کرونا وائرس کی وباء کے متعلق گفتگوکرتے ہوئے کہا کہ کرونا وائرس کے باعث یہ موقع ہے کہ ہم یمن ،کشمیر اور تمام مظلومین جہاں کی بھوک ،پیاس اور مظالم کا احساس کرلیں ۔ انہوں نے کہا کہ احتیاط ضروری ہے مگر ساتھ خوف کی کیفیت سے باہر بھی آنا ہوگا ۔ جب اشیاء کا خوف دل میں آجائے تو خوف خدا دل سے نکل جاتا ہے ۔ دشمن تین طرح سے حملہ آور ہیں ۔ بائیلوجیکل وار کے ذریعے ،خوف کے ذریعہ اور خوف پھیلانے کے بعد نفسیاتی وار کے ذریعہ ۔

انہوں نے کہا کہ خوف کے ذریعہ حجت خدا سے غافل کیا جارہا ہے ۔ خوف شیطان کا حربہ ہے ۔ خوف کے ذریعہ شیطان ذہنوں اور فکروں کو اغواء کرتا ہے ۔ دشمن کی خواہش ہے کہ ہم میں سوچنے اور سمجھنے کی صلاحیت ختم ہوجائے ۔ کرونا وائرس کے ذریعہ مسلمانان عالم پر ہونے والے مظالم کو چھپادیا گیا ہے ۔ انہوں نے بتایا کہ کربلا سے قبل کوفہ میں خوف ایجادکرکے کوفیوں کے ذہنوں کو یرغمال بنایا گیا تھا ۔ کربلا کے بعد معاشرے میں خوف مکمل طور پر طاری ہوچکا تھا ۔

 انہوں نے بتایا کہ اس موقع پر بی بی زینب ؑ کی شخصیت کو سمجھنے کی ضرورت ہے جواس خوف کی فضاء میں بھی بالکل خوفزدہ نہ تھیں ،اسی لئے جب ظالم حاکم نے ان سے سوال کیا کہ خدا کو کیسا پایا تو انہوں نے جواب دیا کہ میں نے کربلا میں خدا کو انتہائی جمیل پایا ہے اور ایسا آج تک نہیں پایا ۔ یہ مرحلہ ہے بی بی زینب ؑ  کی سیرت پر چلنے کا اور بے خوف ہوکر خوف خدا کو اپنانے کا ۔ جب اس خوف کی کیفیت سے ہم نکل جائیں گے تو  ہمیں بی بی کا یہ جملہ کہ انہوں نے خدا کو انتہائی جمیل پایا ہے ،کی صحیح تفسیر بھی سمجھ آجائے گی اور کرونا وائرس سمیت ہر قسم کے مسائل کا حل بھی نظر آنے لگے گا ۔ انہوں نے کہا بی بی زینب کے اس جملہ کو اگر کوفی سمجھ جاتے تو شام جانے کا مرحلہ نہ آتا بلکہ کوفہ میں ہی انقلاب کربلا مکمل ہوجاتا ۔

 

وحدت نیوز(سکردو)مجلس وحدت مسلمین گلگت بلتستان کے ڈپٹی سیکرٹری جنرل علامہ احمد علی نوری نے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ اس وقت دنیا سمیت وطن عزیز پاکستان اور گلگت بلتستان کے عوام کرونا جیسی موذی بیماری کے خلاف حالت جنگ میں ہے۔اس چیلنج سے نمٹنے کے لئے عوام،اداروں اور ذمہ داروں کو تمام تر اختلاف اور ذاتی پسند ناپسند چھوڑ کر انسانی بنیادوں پر اس کی تدارک کے لئے جدوجہد کرنے کی ضرورت ہے اور یہ وقت سیاسی پوائنٹ اسکورنگ اور علاقائیت کو ہوا دینے کا نہیں بلکہ متحد اور پرعزم ہو کر آگے بڑھنے کا ہے لیکن نہایت افسوس کا مقام ہے کہ گلگت بلتستان کی صوبائی حکومت پرانی ڈگر پر چل رہی ہے اور بلتستان ریجن کو محروم رکھنے میں کوئی کسر باقی نہیں رکھی ہے۔

انہوں نے کہاکہ اس وقت گلگت بلتستان میں سب سے زیادہ کرونا کے کیسز بلتستان سے ہیں لیکن ہمسایہ دوست ملک چین سے ملنے والی امداد میں بھی نا انصافی کی گئی۔صوبائی حکومت کو یہ روش ترک کرنی ہوگی۔ امدادی سامان انسانی،اخلاقی اور ضرورت کی بنیاد پر تقسیم ہونے کی بجائے جو ناانصافی ہوئی ہے اس کا فوری ازالہ ہونا چائیے، اس عمل کی وجہ سے بلتستان ریجن کے عوام میں شدید تشویش پائی جاتی ہے۔

شیخ احمد علی نوری نے مزید کہا کہ پورے بلتستان ریجن میں کرونا ٹیسٹینگ لیبارٹری کا نہ ہونا صوبائی حکومت کی کارکردگی پر سوالیہ نشان ہے۔ ہم صوبائی حکومت اور ریاستی اداروں سے مطالبہ کرتے ہیں کہ اولین فرصت میں ڈی ایچ کیو ہسپتال سکردو میں لیب قائم کیا جائے تاکہ موجودہ ہنگامی صورتحال میں مریضوں کی تشخیص اور علاج ممکن ہو۔

وحدت نیوز(اسلام آباد) مجلس وحدت مسلمین کے ذیلی ادارے المجلس ڈیزاسٹر مینجمنٹ سیل نے وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں کرونا وائرس کے بعدغیر معمولی حالات سے نمٹنے کے لیے اپنی کوششیں تیز کر دی ہیں۔اس سلسلے میں فصیح عباس کو اے ڈی ایم سی اسلام آباد کے چیئرمین کی ذمہ داریاں سونپی گئی ہیں۔

ایم ڈبلیو ایم اسلام آباد کے سیکرٹری جنرل انجینئر ظہیر عباس نقوی نے کہا ہے کہ کرونا سے نمٹنے کے لیے حکومتی اقدامات کے ساتھ ساتھ عوام کو بھی کردار ادا کرنے کی ضرورت ہے۔مشکل کی اس گھڑی میں مخیر حضرات پر یہ ذمہ داری عائد ہوتی ہے کہ وہ اپنے اپنے علاقوں میں ضرورت مند افراد کی ہر ممکن مدد کریں۔مجلس وحدت مسلمین اسلام آباد نے نادار افراد تک مہینے بھر کا راشن پہنچانے کا سلسلہ شروع کر رکھا ہے۔

المجلس ڈیزاسٹر مینیجمنٹ سیل نے اپنے پہلے مرحلے کو مکمل کر کے متعین اہداف حاصل کر لیے ہیں۔جبکہ اگلے اہداف کی تیاریاں حتمی مراحل میں داخل ہیں۔ جس کے تحت مخیر حضرات اور دیگر آرگنائزیشنز و ورکنگ گروپس کے اشتراک سے عوام کے گھروں میں راشن کی تقسیم ، گنجان آباد علاقوں میں سپرے مہم اور ممکنہ بگڑتی صورت حال کے دوران ہنگامی حکمت عملی جیسے مسائل کو ضلعی انتظامیہ سے ہر ممکن تعاون کر کے حل کرنے کا اصولی فیصلہ کیا گیا ہے۔ادارے کی فعالیت کے امور کا روزانہ کی بنیاد پر جائزہ لیا جائے گا۔

وحدت نیوز(ملتان) الحمداللہ قرنطینہ ملتان کے باہر المجلس ڈیزاسٹر منیجمنٹ سیل کے زیراہتمام کیمپ کے دسویں روز بھی زائرین اور طلاب کی ضروریات زندگی کو پورا کرنے کی کوشش کی گئی۔ ہم اپنے مجاہد علماء کو سلام پیش کرتے ہیں جو اس مشن میں پیش پیش ہیں۔ علامہ اقتدار نقوی۔ علامہ قاضی نادر علوی۔ سلیم عباس صدیقی۔ مہر سخاوت علی۔ ثقلین نقوی۔ تیمور بھائی اور ان کی ٹیم پیش پیش رہی۔

 آج 4 شعبان المعظم کو ولادت باسعادت حضرت ابوالفضل العباس علمدار کے موقع پر زائرین کے لیے جشن اور سید ناصر عباس زیدی کی جانب سے نیاز کا اہتمام کیا گیا،انشاءلله خدمت کا یہ سفر جاری رہے گا۔

 اس کے ساتھ ساتھ المجلس ڈیزاسٹر منیجمنٹ سیل ایسے افراد تک پہنچ رہی ہے جو خط غربت سے نیچے ہیں اور ان کی عزت نفس کو مجروح کیے بغیر خدمت کر رہی ہے۔ اب تک جن لوگوں نےالمجلس ڈیزاسٹر منیجمنٹ سیل کے ساتھ تعاون کیا ان کے مشکور ہیں اور اس کام میں مزید تعاون درکار ہے۔ اس وقت زائرین کو ماسک، ہینڈ سینی ٹائزر کی اشد ضرورت ہے تمام مومنین سے تعاون کی اپیل ہے۔

وحدت نیوز(مظفرآباد) سیکرٹری جنرل مجلس وحدت مسلمین آزادکشمیر علامہ سیدتصور حسین جوادی نے برادر سید رضی عباس سبزواری کو المجلس ڈیزاسٹر مینیجمینٹ سیل آزاد جموں کشمیر کا چیئرمین نامزد کر دیا۔سید رضی عباس سبزواری نے علامہ جوادی ان کی رہائشگاہ پر ملاقات کی۔

ملاقات میں کرونا وائرس سے پیدا ہونے والی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا گیا۔اس موقع پر ریاستی سیکرٹری جنرل نے کہا کہ ہمیں کرونا وائرس سے بچاو ٔکے لیے عوام الناس میں حفاظتی اقدامات بارے آگہی مہم کو مزید تیز کرنا ہوگا ،نیز مجلس وحدت مسلمین آزادکشمیر ڈاکٹرز نرسز اور پیرا میڈیکل سٹاف کی کرونا وائرس کے خلاف اپنی جان پر کھیل کر جدوجہد کو خراج تحسین پیش کرتی ہے۔

علاوہ ازیں چوکوں،چوراہوں،پُلوں اور گلی کوچوں میں مامور پولیس،افواج پاکستان اور قانون نافذ کرنے والے اداروں کے اہلکاران کو بھی سلام عقیدت پیش کرتی ہے۔اس موقع پر سید رضی عباس سبزواری نے ذمہ داری سونپنے پر علامہ جوادی کا شکریہ ادا کرتے ہوۓ اس عزم کا اعادہ کیا کہ وہ بہتر اندازمیں متاثرین کرونا اور اس کے بعد پیش آنے والی آفات ارضی و سماوی کے دوران المجلس ذیزاسٹر مینجمنٹ سیل آزادکشمیر کے پلیٹ فارم سے بہترین خدمات سرانجام دیں گے۔

وحدت نیوز (اسلام آباد) کورونا وائرس کے پھیلاؤاور زائرین کے خلاف جاری منفی پروپگینڈے کے حوالے سے نجی ٹی وی کے ٹاک شو میں گفتگو کرتے ہوئے کہاکہ ویزہ ختم ہونے پر زائرین ایران سے واپس آئے انہیں کسی نے نہیں دکھیلا ہے۔ایک ملک جس پر شدید ترین عالمی پابندیاں ہیں وہ کیسے دوسروں کا بوجھ اٹھا سکتا ہے۔تفتان سرحد پر قرنطینہ سینٹر صحیح تقاضوں کے مطابق نہیں بنایا گیا۔اگر بائی روڈ آنے سے کرونا پھیلتا ہے تو بائی ائیر آنے سے بھی کرونا پھیلتا ہے ۔کرونا وائرس کی جنگ میں ایسے معاملات اٹھانے والے دشمن کے ساتھی ہیں،صحافی ،علماء اور سیاستدان دانشمندی کا مظاہرہ کریں ۔

انہوںنے کہاکہ دین اسلام میں انسانی جان کی بہت قدر وقیمت ہے، اسی لیئے قران مجید میں ارشاد باری تعالیٰ ہے کہ جس نے ایک انسان کی جان بچائی گویا اس نے پوری انسانیت کی جان بچائی۔کورونا کی وبائی بیماری میں احتیاط ہر انسان پر لازم ہے، اگر کسی شخص کی لاپرواہی سے کوئی انسان اس مہلک بیماری میں مبتلا ہو اور فوت ہوجائے تو اس شخص پر دیت واجب ہوگی۔

ان کا کہنا تھاکہ شیعہ فقہا اور مراجعین کے فتاویٰ کے مطابق موجودہ حالات میں مذہبی ودیگر مقامات پر جمع ہونا جائز نہیں، لہذٰا نماز جماعت ترک کرے گھروں پر انفرادی عبادات انجام دی جائیں، ہمیں کورونا کے ساتھ اگر قومی سطح پر جنگ لڑنی ہے تو ہر کسی کو حق نہیں پہنچتا کہ وہ مفتی بن کر فتوے دینا شروع کردے۔ ایسے فتوے درست نہیں جو دین اور شریعت کے خلاف ہوں ۔

پاکستان میں تین طرح کے کورونا وائرس پائے جاتے ہیں، ایک تو کورونا وائرس ہے، دوسراسیاسی کورونا ہے اور تیسرافرقہ وارانہ کورونا ہے۔کورونا وائرس کا سب پر حملہ ہے، پوری دنیا کو اس نے اپنی لپیٹ میں لیا ہواہے، اس کا مقابلہ کرنے کیلئے حکومتوں اور عوام کو اکھٹاہواپڑے گا۔سیاسی کورونا یعنیٰ جب سب کو مل کر اس کےخلاف لڑنا ہے تو پوائنٹ اسکورنگ اور سیاسی انتقام کیلئےہمارے ملک میں کنفیوژن پیداکیاجارہاہےاور حالات خراب کیئے جارہے ہیں ۔ایسے وقت میں کہ جب یکسوئی کی ضرورت ہے اضطراب اور بے چینی پیداکی جارہی ہے۔اصل کورونا کی جنگ سے توجہ ہٹاکر سیاسی جنگ شروع کی جارہی ہے ، یہ سیاسی کورونا بہت خطرناک ہے یہ ہمیں آپس میں الجھادے گا ۔


انہوں نے کہاکہ مذہبی کورونابھی دوقسم کا ہےایک مذہبی کورونا والا ایک طبقہ کہتا ہے اگر خانہ کعبہ، روضہ رسول ؐ اور اہل بیت ؑ شفاکے مراکز تھے کیوں بند کردیئے گئے، خالق کائنات نے جن اولیاء، انبیاءاور آئمہ کو ہماری ہدایت کیلئےبھیجا وہ جہاں عبادات اور قرب الہیٰ کی بات کرتے ہیں وہیںلوگوں کو بیماری میں جائے نمازپر بیٹھ جانے کی تلقین نہیں بلکہ علاج معالجے کی تاکید کرتے ہیں۔دوسرا طبقہ کہتا ہے کہ یہ شیعہ وائرس ہے جو زائرین ایران سے لیکر آئے ہیں ، کیا اس طرح ایک عالمی وباکو کسی خاص مسلک کے ساتھ نتہی کرنا دانشمدانہ عمل ہے، کیا اس امریکہ، برطانیہ ، چین اٹلی اور دنیا بھرمیں کورونا وائرس زائرین نے پھیلایا ہے۔

وحدت نیوز (اسلام آباد)مجلس و حدت مسلمین پاکستان کے سربراہ علامہ راجہ ناصر عباس جعفری نے ماہ انوار شعبان اور یوم ولادت امام حسین(ع) اورمولا ابولفضل العباس(ع) کی مناسبت سے وحد ت ہاؤس اسلام آباد سے جاری اپنے تہنیتی پیغام میں کہاکہ سید شہداءحضرت امام حسین(ع) وہ ہستی ہیں جو وجہ تخلیق کائنات ہیں ، امام حسین (ع) خداوند متعال کی آرزؤوں کی تکمیل کا نام ہے ، امام حسین (ع) خدا کی عبادتوں کی بقاءکا نام ہے اورابولفضل العباس(ع)امام حسین(ع) کے سچے اور با وفا پیرو ،مطیع و فرمانبردار کا نام ہے،آج دین مبین اسلام تقاضہ کر تا ہے کہ کوئی اٹھے اوراس دین کی بقاءاورسلامتی کے لیئے اپنا حسینی کردارادا کرے ۔ ان خیالات کا اظہار

علامہ راجہ ناصر عباس جعفری کا کہنا تھا کہ ماہ شعبان خدا کی جانب بلانے والا مہینہ ہے ،مخصوص عبادات و مناجات اس ماہ کا خاصہ ہیں ، اس ماہ میں پرودگار عالم نے عالم بشریت کے لئے انمول نعمتیں آئمہ معصومین (ع)کی صورت میں عطا کیں ، اہل بیت (ع) کی مقدس ہستیوں کی ولادت نے اس ماہ کے ہر دن کو باعث برکت بنا دیا ۔ غرض اس ماہ کا آغاز ہو یا انجام سراپا رحمتوں اور برکتوں کا نزول ہے ۔

انہوں نے مزید کہا کہ امام حسین (ع )اورفقیہ زمان شہنشاہ وفا مولا عباس (ع) کی ولادت کے خوبصورت ایام بھی پر وردگا رعالم نے ہمیں اسی ماہ مبارک میں عطا کیئے ہیں ، ہمیں چاہیئے کہ ان ایام میں امام حسین (ع ) اور حضرت عباس علمدار(ع )کی سیرت کی روشنی میں اپنی زندگیوں کو استور کر نے کی کوشش کریں ، اور اس عزم کا اعادہ کریں کہ جب بھی کبھی اسلام دشمن قوتوں کے ہاتھوں دین مبین خطرے میں پڑے اور کوئی مثل حسین ابن علی ع ہمیں آواز استغاثہ دے تو ہم شہنشاہ وفا حضرت ابوالفضل العباس ع کی طرح میدان استقامت میں ڈٹ جائیں یہاں تک کے ہمارے جسم کے ٹکڑے ٹکڑے کر دیئے جا ئیں اور ہمارے جسم کی راکھ بنا کر ہوا میں ہی کیوں نہ اڑا دی جائے ، لیکن اپنے امام کو تنہا نہ چھوڑیں۔

ان کا کہنا تھا کہ آ ج بھی عالم کفرو نفاق عالم اسلام کے قلب میں خنجر اتارنے کے درپہ ہے ، سیرت امام حسین ومولا عباس ہم سے تقاضہ کرتی ہے کہ ایمانی قوت اور تقویٰ الہیٰ کو اختیار کر تے ہو ئے ہم میدان شجاعت وشہادت میں قدم رکھیں ، اخلاص نیت اوراخلاص عمل ہمارے پیش نگاہ ہو پھر یہ ممکن ہی نہیں کہ خدا اور اس کے مقرب ملائکہ ہماری مدد اور نصرت کے لئے حاضر نا ہوں ۔


وحدت نیوز(ملتان) مجلس وحدت مسلمین ضلع ملتان کی طرف سے ایم ڈبلیو ایم کے ذیلی ادارے المجلس ڈیزاسٹر منیجمنٹ سیل کے پلیٹ فارم سے ایک سو افراد کے لیے راشن بیگ کی تیاری کے بعد غرباء میں تقسیم کا سلسلہ شروع کر دیا گیا ہے، اس موقع پر ضلعی سیکرٹری جنرل مرزا وجاہت علی اور سیکرٹری سیاسیات حسنین کربلائی بھی موجود تھے۔ ''وحدت نیوز'' سے گفتگو کرتے ہوئے مرزا وجاہت علی کا کہنا تھا کہ ملک کے دیگر شہروں کی طرح ضلع ملتان میں المجلس ڈیزاسٹر منیجمنٹ سیل کے پلیٹ فارم سے مستحق، غریب اور نادار افراد میں راشن کی تقسیم کا سلسلہ شروع کر دیا ہے، پہلے مرحلے میں ایک سو افراد کے لیے راشن بیگ تیار کیے گئے ہیں، جبکہ دوسرے مرحلے پانچ سو افراد کے لیے راشن بیگز تیار کیے جائیں گے۔

ضلعی سیکرٹری سیاسیات حسنین کربلائی نے کہا کہ جس طرح ہم کرونا وائرس سے بچاو کے لیے مسلسل مہم چلا رہے ہیں، ان شاء اللہ ہم کوشش کریں گے کہ المجلس کے پلیٹ فارم سے اُن افراد تک امداد پہنچائیں، جو اس لاک ڈاون سے براہ راست متاثر ہوئے ہیں۔ دوسری جانب ایم ڈبلیو ایم جنوبی پنجاب کے سیکرٹری جنرل علامہ اقتدار حسین نقوی نے کہا کہ ملتان، ڈیرہ غازیخان اور علی پور کے ذمہ داران احسن طریقے سے اپنے فرائض انجام دے رہے ہیں، باقی اضلاع بھی جلد المجلس ڈیزاسٹر منیجمنٹ سیل کے پلیٹ فارم اپنی فعالیت شروع کریں گے۔

Page 1 of 1024

مجلس وحدت مسلمین پاکستان

مجلس وحدت مسلمین پاکستان ایک سیاسی و مذہبی جماعت ہے جسکا اولین مقصد دین کا احیاء اور مملکت خدادادِ پاکستان کی سالمیت اور استحکام کے لیے عملی کوشش کرنا ہے، اسلامی حکومت کے قیام کے لیے عملی جدوجہد، مختلف ادیان، مذاہب و مسالک کے مابین روابط اور ہم آہنگی کا فروغ، تعلیمات ِقرآن اور محمد وآل محمدعلیہم السلام کی روشنی میں امام حسین علیہ السلام کے ذکر و افکارکا فروغ اوراس کاتحفظ اورامر با لمعروف اور نہی عن المنکرکا احیاء ہمارا نصب العین ہے 


MWM Pakistan Flag

We use cookies to improve our website. Cookies used for the essential operation of this site have already been set. For more information visit our Cookie policy. I accept cookies from this site. Agree