The Latest

00 ziyaratquaidhouse-1371286794-918-640x480وحدت نیوز (کوئٹہ) دہشت گردوں نے قائد اعظم ریذیڈنسی کی تاریخی عمارت کو راکٹوں اور بموں کے  حملے سے مکمل طور پرتباہ کر دیا ہے جب کہ فائرنگ سے ایک پولیس اہلکار بھی جاں بحق ہوگیا۔ تفصیلات کے مطابق جمعے اور ہفتے کی درمیانی رات قریبی پہاڑوں سے دہشتگرد عمارت میں داخل ہوئے اور وہاں بارودی مواد نصب کرکے فرار ہوگئے جس کے بعد عمارت پر کئی راکٹ داغے گئے جس سے عمارت کو آگ لگ گئی۔ دھماکوں کی آوز سن ایک پولیس اہلکار وہاں پہنچا تو شر پسندوں نے اس پر فائرنگ کردی جس کے نتیجے میں وہ موقع پر ہی جاں بحق ہوگیا۔ زیارت میں فائر بریگیڈ کا عملہ نہ ہونے کی وجہ سے امدادی کاموں میں تاخیر ہوئی جس کے باعث قائد اعظم کے زیر استعمال رہنے والی کئی اشیاء اور فرنیچر جل کر خاکستر ہوگیا۔ کوئٹہ سے 4 گھنٹے بعد فائر بریگیڈ ٹیم نے موقع پر پہنچ کر آگ پر قابو پایا۔

 

دوسری جانب بم ڈسپوزل اسکواڈ نے عمارت کے قریب نصب 4 بم ناکارہ کر دیئے ہیں جن میں ہر ایک کا وزن 3 سے 4 کلو گرام ہے۔ حکام کا کہنا ہے کہ اگر بم پھٹ جاتے تو علاقے میں بڑی تباہی آسکتی تھی۔ واقعے کے بعد قانون نافذ کرنے والے اہلکاروں نے علاقے کو گھیرے میں لے کر  دہشت گردوں کی تلاش شروع کردی ہے۔ سیکیورٹی ذرائع کا کہنا ہے کہ دہشت گردی کے اس حملے میں بلوچستان لبریشن آرمی ملوث ہے۔ واضح رہے کہ یہ عمارت 1884ء میں تعمیر کی گئی تھی اور بابائے قوم قائد اعظم محمد علی جناح نے اپنے آخری ایام اسی عمارت میں گزارے تھے، اس عمارت کو 2008ء کے زلزلے میں میں شدید نقصان پہنچا تھا تاہم دہشت گردوں کے اس حملے میں عمارت مکمل طور پر تباہ ہوگئی ہے۔

00 hasan nasrallahوحدت نیوز (مانیٹرنگ ڈیسک) ولادت باسعادت حضرت ابولفضل العباس ع  کے موقع پر منائے جانے والے یوم الجریح (یعنی مجروحین اور زخمیوں کے دن) کی مناسبت سے حزب اللہ کے سیکریٹری جنرل سید حسن نصر اللہ نے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ میں ان عظیم اور اہم عیدوں کی مناسبت سے آپ سب کو مبارکباد پیش کرتا ہوں، میں نواسہ رسول اللہ سید شباب اہل الجنۃ اور امام زین العابدین ع اور حضرت ابوالفضل العباس ع کی ولادت کی مناسبت سے آپ سب کو مبارکباد پیش کرتا ہوں۔ انہوں نے کہا کہ آج اسلامی تحریک مزاحمت کیخلاف ایک وسیع، عالمی اور منظم پروپیگنڈے کا آغاز ہوا ہے جس کا ہدف یہ ہے کہ ملک میں محب وطن اور ملک کی خاطر قربانیاں دینے والوں کو پیچھے دھکیلا جائے اور خائن لوگوں کو محب وطن بناکر آگے لایا جائے۔

 

حسن نصراللہ نے کہا کہ ہمارے پاس دوسروں کی طرح ڈویل نیشنلٹی نہیں ہے، ہمارے پاس ملک سے باہر کسی قسم کے کوئی اثاثے نہیں ہیں، ہمارا سب کچھ یہاں ہے، یہیں ہم نے جینا ہے یہیں مرنا ہے اور یہاں ہی ہم دفن ہونگے۔ انہوں نے لبنان میں آنے والے انتخابات کے بارے میں کہا کہ دستوری کونسل جو بھی فیصلہ کرے گی وہی ہوگا، ہم نہیں جانتے کہ ان کا فیصلہ کیا ہے لیکن امریکی سفارت خانے کی جانب سے اس مسئلے میں مداخلت اور ڈکٹیشن کو ہم برداشت نہیں کرینگے۔ انہوں نے اپنے خطاب کے ایک حصے میں لبنان میں گذشتہ چند روز قبل بدامنی پھیلانے کی کوشش کے بارے میں کہا کہ تمام لبنانیوں خاص کر اسلامی تحریک مزاحمت کے چاہنے والوں کو میری نصیحت ہے کہ وہ ہر اس کوشش کے سامنے صبر اور تحمل کا مظاہرہ کریں جو اندرونی چپقلش کی سازش کا پیش خیمہ ہے۔

 

حزب اللہ کے سیکریٹری جنرل نے کہا کہ شام میں تکفیری گروہ قتل، ذبح اور چھری پھیرنے کی باتیں کر رہے ہیں اور ایسے اقدامات بھی کررہے ہیں، ان کی کوشش ہے کہ اب مذہبی منافرت اور فرقہ واریت کا کارڈ استعمال کریں، جن کے پاس منطق اور عقل نہ ہو وہ ایسا ہی کرتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ کچھ معروف عربی ٹی وی چینلز اسی طرح انٹرنیٹ اخبارات سب میں یہی صورت حال ہے البتہ ہمارے حوالے سے یہ کوئی نئی بات نہیں لیکن مذہبی منافرت اور فرقہ واریت کی یہ کوششیں بزدلانہ عمل ہے۔ انہوں نے کہا کہ شام کے مسئلے میں ہم دو سال سے کہتے آئے ہیں اور کوشش کی ہے کہ مذاکرات سے حل ہو اور ہم اب بھی یہی چاہتے ہیں۔

 

انہوں نے شام میں اسلامی تحریک مزاحمت کی موجودگی کے بارے میں کہا کہ اس بحران میں ہم آخری تھے جو عملی طور پر اور انتہائی محدود پیمانے پر وارد ہوئے ہیں کیونکہ ہم دیکھ رہے ہیں کہ شام میں امریکہ اور اسرائیل ایک ایسے وسیع ایجنڈے کو نافذ کرنا چاہتے ہیں جس سے نہ صرف وہ شام بلکہ خطے میں فلسطین قبل اول سمیت متعدد اہم مسائل کو اپنے حق میں کرنا چاہتے ہیں، ہمیں اس ایجنڈے کا مکمل ادراک ہے اور یہ ایجنڈا پورے خطے کو تباہ و برباد کرے گا۔ انہوں نے کہا کہ آپ مجھے بتائیں کہ جسے یہ شامی اپوزیشن کہہ رہے ہیں وہ کون ہے؟ کیا شام کی عوام ہے؟ شامی اپوزیشن کی چھتری تلے دسیوں ہزار غیر ملکی مسلح افراد جو پوری دنیا سے اکھٹے ہوئے ہیں کو جمع کیا گیا اور عرب ممالک ان کی پشت پر بیٹھے ہیں اور جمہوریت اور تبدیلی کی بات کر رہے ہیں جن کے اپنے ملک میں انتخابات تک نہیں ہوتے۔

 

انہوں نے کہا کہ ہماری جانب سے شامی عوام کی مدد کو بیرونی مداخلت کہا جارہا ہے لیکن اگر ہم شدت پسندوں کی مدد کر رہے ہوتے تو یہ نہ صرف مداخلت شمار نہ ہوتی بلکہ کئی ملکوں اور گھر گھر میں ہمارے جھنڈے لہرا رہے ہوتے۔ انہوں نے مزید کہا کہ ایسا نہیں ہے کہ ہم شام کے چپے چپے میں موجود ہیں جیسا کہ پروپگنڈہ کیا جارہا ہے ہم نے گذشتہ آخری ہفتوں میں انتہائی محدود پیمانے پر شدت پسندوں کیخلاف آپریشن میں مدد کی ہے۔ سید حسن نصر اللہ نے کہا کہ ہم اپنے موقف کو چھپاتے نہیں اور نہ ہی ہم نے اپنے شہداء کو چھپایا ہے، ہم جانتے ہیں کہ ہم کہاں جارہے ہیں اور وہاں کے حالات کیا ہیں اور ہمیں کیا کرنا ہے۔

 

انہوں نے کہا کہ اس امریکی اسرائیلی اور تکفیری ایجنڈے کے خلاف جس قسم کی بھی قربانی دی جائے وہ بحق ہے۔ انہوں نے بعض ممالک کی جانب سے کئے جانے والے پروپگنڈے کے بارے میں کہا کہ ہمیں ناسزا کہا جارہا ہے، گالم گلوچ دی جارہی ہیں، ہم سمجھ سکتے ہیں کہ جنہوں نے امریکی اور اسرائیلی ایجنڈے کی تکمیل کے لئے اپنی سیاسی ساخت اور بلینز ڈالرز لگائے ہیں اور اب وہ سب کو ڈوبتا دیکھ رہے ہیں وہ ایسا ہی کرینگے۔ انہوں نے آخر میں ایران میں ہونے والے انتخابات کے بارے میں گفتتگو کرتے ہوئے کہا کہ ایرانی عوام کو انتخابی عید کی خوشی مبارک ہو، جہاں ملک کی سب سے بڑی قیادت ولی فقیہ بھی ایک عام شہری کی طرح صرف ایک ووٹ کا حق رکھتا ہے، امید ہے کہ اس طرح کی خوشی کے ایام ہم اپنے عرب ممالک میں بھی دیکھ سکیں جہاں کی بادشاہتیں مطلق العنان ہیں۔

 

خطاب کے شروع میں سید حسن نصر اللہ نے ولادت باسعادت حضرت ابولفضل العباس ع کی مناسبت سے یوم الجریح یعنی مجروحین اور زخمیوں کے دن کی مناسبت سے مبارک باد پیش کی۔ یہ خطاب ویڈیو لنک کے توسط سے تین شہروں دیر قانون بعلبک اور بیروت میں بیک وقت دکھایا گیا۔ اس تقریب میں ایران، شام کے سفراء کے ساتھ ساتھ لبنانی کی اہم سیاسی و مذہبی شخصیات نیز حکومتی نمائندوں نے بھی شرکت کی جبکہ دنیا کی مختلف زبانوں میں اسے براہ رست ترجمے کے ساتھ نشر کیا گیا۔

logo shareوحدت نیوز ( لاہور)مجلس وحدت مسلمین پنجاب کے زیر اہتمام رہبر انقلاب اسلامی امام خمینی کی برسی کے مناسبت سے ایک سیمناربعنوان ،،امام خمینی اور عالم اسلام کی بیداری،،16 جون بروز اتوار ایوان اقبال لاہور میں منعقد ہوگی جس میں مختلف سیاسی، مذہبی جماعتوں کے نمائندہ شخصیات ،سینئرجرنلسٹ خطاب کریں گے سیمینار کے انتظامی کمیٹی کا اجلاس کوارڈینٹر سید اسد عباس نقوی کے زیر صدارت صوبائی سیکرٹریٹ مسلم ٹاوُن میں منعقد ہوا جس انتظامی امور کا جائزہ لیا گیا۔

quaidوحدت نیوز (اسلام آباد) سالہائے گزشتہ کی طرح امسال بھی شہید قائد علامہ عارف حسین الحسینی (رہ) کی برسی کا مرکزی اجتماع 25 اگست کو اسلام آباد میں منعقد ہوگا۔ یہ فیصلہ  مجلس وحدت مسلمین پاکستان کی مرکزی کابینہ کے اجلاس میں کیا گیا۔  اجلاس میں مجلس وحدت مسلمین کی آئندہ پالیسیوں پر بھی سیر حاصل گفتگو کی گئی۔ اجلاس کے فیصلہ جات کے مطابق شہید مظلوم، قائد شہید علامہ عارف حسین الحسینی (رہ) کی برسی کا مرکزی اجتماع ۲۵ اگست کو اسلام آباد میں منعقد کیا جائے گا، جس میں پاکستان کے طول و عرض سےپیروان شہید حسینی (رہ) اپنی بھرپور شرکت سے اپنے محبوب قائد کی روح کو خراج عقیدت پیش کریں گے جبکہ دوسرے فیصلے کے مطابق ماہ رمضان المبارک میں امام خمینی (رہ) کے فرمان پر یوم القدس کو شایان شان طریقے سے منایا جائے گا۔ یوم القدس کے موقع پر ملک بھر میں عوامی اجتماعات، کانفرنسز، سیمینارز اور ریلیاں منعقد کی جائیں گی۔

tassawar jawwadiوحدت نیوز (مظفرآباد) مجلس وحدت مسلمین پاکستان الیکشن کمیشن آف پاکستان کے بعد الیکشن کمیشن آف آزاد کشمیر میں بھی رجسٹرڈ ہو گئی ہے ، اور آئندہ ریاستی انتخابات میں انتخابی نشان خیمہ پر ہی الیکشن لڑے گی ، اس بات کا اعلان مجلس وحدت مسلمین پاکستان آزاد جموں کشمیر کی ریاستی سیکریٹری جنرل علامہ سید تصور حسین نقوی الجوادی نے کیا ۔

ان کا کہنا تھا کہ انشاء اللہ وہ وقت دور نہیں کہ جب مجلس وحدت مسلمین پاکستان سمیت آزاد کشمیر میں بھی مظلوم اور محروم کشمیریوں کے حقوق کی پاسبانی کرے گی ، ہم شیعہ سنی ، بریلوی اور الحدیث مسلمان بھائیوں کو دعوت دیتے ہیں کہ آئیں پاکستان اور بالخصوص ریاست جموں کشمیر کی عوام کی خدمت اور ترقی کے لیئے باہمی اتحاد اور وحدت کے دامن کو تھام کر ایم ڈبلیو ایم کے پلٹ فارم پر جمع ہوں ۔

ان کاکہنا تھا کہ مجلس وحدت مسلمین پاکستان کی باحیثیت سیاسی جماعت الیکشن کمیشن آف آزاد کشمیر میں رجسٹریشن خوش آئند قدم ہے ،ایم ڈبلیو ایم آئندہ ریاستی انتخابات میں بھر پور کردار ادا کرے گی ، اور تمام محب وطن سیاسی و مذہبی جماعتوں کے ساتھ دوستانہ تعلقات کے قیام کی خواہش مند ہے ۔

mwm flag 300x200وحدت نیوز(کوئٹہ) مجلس وحد ت مسلمین پاکستان کوئٹہ ترجمان نے کہا کہ پاکستان اسلام کے نام پر حاصل کیا گیا ہے اور اسلام کے بنیادی اصولوں میں سے ایک اصل عدل و انصاف ہے ۔لیکن شیطانی طاقتوں کے بے جا مداخلت اور اسلامی تعلیمات سے دوری کی وجہ سے پاکستانی عوام عدل و انصاف کی فضیلت سے محروم رہے ہیں ۔جسکی وجہ سے ملک مسلسل مختلف قسم کی مشکلات سے دوچار رہا ہے ۔مشرقی پاکستان کی علیدگی بھی اسی وجہ سے پیش آئی اور فی الحال بلوچستان کے گھمبیر مسائل عدل و انصاف کے نہ ہونے کی وجہ سے پیش آئی ہیں ۔

اگر کوئی بلوچستان کے مسائل کو حل کرنے کے سلسلے میں سنجیدہ ہے تو انہیں اسی عدل و انصاف کی طرف جانا چاہتے اور عدل و انصاف کے ذریعے زندگی کی سہولیات سمیت تمام و سایل کو عادلانہ انداز میں تمام صوبوں اور علاقوں کے درمیان تقسیم ہونا چاہئے ۔اور اسی سے ملک بچ سکتا ہے ۔قومی و صوبائی اسمبلیاں عادلانہ انداز میں خواتین پاس کرے ۔

بیان میں مزید کہا گیاکہ حضر ت علی علیہ السلام نے فرمایا کہ ملک کفر سے تو بچ سکتا ہے لیکن ظلم سے نہیں بچتا ۔اب جبکہ امریکہ اور اسرائیل مسلمانوں اور اسلام کے خلاف سخت ترین سازشوں اور دشمنوں میں مصروف ہیں ملک کو بچانے کیلئے صرف ایک راستہ باقی ہے اور وہ یہ کام ملک میں ہر اقدام عدل و انصاف کی بنیاد پر ہوں ۔

mwm logo officialوحدت نیوز (پشاور)مجلس وحدت مسلمین خیبر پختونخوا کے ترجمان کا کہنا ہے کہ صوبائی حکومت نے پشاور میں جاری ٹارگٹ کلنگ اور سانحہ امامیہ کالونی کے متاثرین کو کسی قسم کا معاوضہ ادا نہیں کیا اور نہ ہی اب تک کوئی حکومتی شخصیت ان کی خبر گیری کو آئی ہے۔ جاری کردہ ایک بیان میں ترجمان نے کہا ہے کہ پشاور میں رواں سال سے اب تک ٹارگٹ کلنگ کے نتیجے میں 15اہل تشیع افراد شہید ہو چکے ہیں، جن میں ڈاکٹرز، وکیل،سیاسی شخصیات سمیت مختلف شعبہ ہائے زندگی سے تعلق رکھنے والے افراد شامل ہیں۔ جبکہ ان قاتلانہ حملوں میں کئی افراد زخمی بھی ہوئے، تاہم اب تک کسی قسم کی اعلیٰ سطحی تحقیقات ہوئی ہیں اور نہ ہی مجرموں تک پہنچنے کی کوشش کی گئی ہے۔

اس کے علاوہ گزشتہ دنوں پشاور کے علاقہ امامیہ کالونی میں دھماکہ کے نتیجے میں 4افراد شہید اور 14زخمی ہوئے، اس سانحہ کے محرکات کو بھی منظر عام پر نہیں لایا گیا۔ ایم ڈبلیو ایم کے ترجمان کے مطابق ان تمام دہشتگردی واقعات کے متاثرین کی حکومتی سطح پر کسی قسم کی خبر گیری تک نہیں کی گئی، اور نہ ہی متاثرین کو کوئی معاوضہ ادا کیا گیا۔ترجمان کا کہنا ہے کہ اس سلسلے میں مجلس وحدت مسلمین نے نئے وزیر اعلیٰ پرویز خٹک سمیت دیگر متعلقہ حکام کو خط ارسال کیا ہے، جس میں مطالبہ کیا گیا ہے کہ دہشتگردی کے ان متاثرین کو فوری طور پر معاوضہ ادا کیا جائے، کیونکہ بلخصوص سانحہ امامیہ کالونی کے متاثرین انتہائی غریب ہیں اور ان کے گھرانوں کے واحد کفیل شہید ہوچکے ہیں۔

jashan biltistanوحدت نیوز (بلتستان) دنیا بھر کی طرح بلتستان میں بھی یوم ولادت امام حسین (ع) نہایت شایان شان طریقے سے منایا گیا۔ اس سلسلے میں اصغریہ ویلفئیر آرگنائزیشن پاری کھرمنگ کے زیر اہتمام عظیم الشان محفل عید کا انعقاد ہوا جس میں خصوصی طور پر مجلس وحدت مسلمین پاکستان بلتستان ڈویژن کے سیکرٹری جنرل علامہ آغا علی رضوی نے شرکت کی۔ نوجوانون نے سیکرٹری جنرل مجلس وحدت مسلمین کا پرتپاک استقبال کیا۔ محفل عید میں مولوی غلام رضا، مولوی شریف، شیخ رضا نجفی، مرتضی انصاری، علامہ شیخ محمد علی طاہری، علامہ شیخ غلام حیدر شہیدی، علامہ سید محمد علی شاہ رضوی اور علامہ آغا علی رضوی نے خطاب کیا۔

allama s a rوحدت نیوز(بلتستان)  مجلس وحدت مسلمین پاکستان بلتستان ڈویژن کے سیکرٹری جنرل علامہ آغا علی رضوی نے شہنشاہ وفا حضرت عباس (ع) کی یوم ولادت کے موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ حضرت عباس (ع) روحانیت و معرفت، تسلیم و رضا، علم و حلم اور وفا کے عرش کا نام ہے۔ ان کی پاکیزہ زندگی سے اطاعت امام کا درس ملتا ہے، انہوں نے اپنی زندگی میں اطاعت امام میں کوئی دقیقہ فروگذاشت نہیں کیا۔ جہاں حضرت عباس (ع) نے اپنے بابا فاتح بدروحنین سے وراثت میں بہادری و شجاعت حاصل کی ہے وہاں سلونی کے ممبر کے وارث سے علم و فقاہت بھی حاصل کی اور اپنی زندگی میں تشنہ گان علم و معرفت کو سیراب کرتے رہے۔ انہوں نے کہا کہ امام سجاد (ع) کی حدیث ہے کہ حضرت عباس (ع) کا شمار اپنے زمانے کے فقیہوں میں ہوتا تھا۔ اکثر عوام کے سامنے ان کے شخصیت کے ایک ہی پہلو شجاعت کو بیان کیا جاتا ہے جبکہ آپ (ع) ہمہ گیر شخصیت کے حامل تھے۔

انہوں نے کہا کہ سانحہ کربلا میں حضرت عباس (ع) نے حق والوں کو رزق وفا بانٹا ہے، ظالموں اور فاسقوں کے خلاف قیام کرنے کی توانائی بخشی ہے، یزیدوں سے نمٹنے کا سلیقہ سکھایا ہے، شمر اور خولی صفت لوگوں کے لئے خدا کی زمین کو تنگ کرنے کا حوصلہ بخشا ہے۔ حضرت عباس (ع) کے انسانیت پر احسانات لفظوں میں بیان ہوسکتا ہے اور نہ نام عباس سے جو احساسات، جذبات، روحانیت، معرفت، فداکاری اور وفا حاصل ہوتی ہے اسے بیان کرنا ممکن ہے۔

asadi imam hussainوحدت نیوز (لاہور) مجلس وحدت مسلمین پنجاب کے سیکرٹری جنرل علامہ عبدالخالق اسدی نے صوبائی سیکرٹریٹ میں یومِ ولادت باسعادت حضرت امام حسین (ع) کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ آج کا دن حریت پسندوں، حق پرستوں، ظلم کیخلاف ڈٹ جانے والوں، اسلام اور انسانیت کے پرستاروں، ظالم و جابر حکمرانوں کے سامنے کلمہ حق کہنے والوں کے پیشوا نواسہء رسول، جگر گوشہ ء بتول، سردار جوانانِ جنت حضرت امام حسین (ع) کی ولادت باسعادت کا دن ہے، اِن کی شخصیت کیلئے بس آقائے دو جہاں (ص) کا فرمان ہمارے لئے مشعلِ راہ ہے جس میں آپ (ص) نے فرمایا ہے’’حسین (ع) مجھ سے ہے اور میں حسین (ع) سے ہوں‘‘۔

انہوں نے کہا امام عالی مقام حضرت امام حسین علیہ السلام نے دین محمدی صلی اللہ علیہ وآلہٖ وسلم کیلئے اپنی اور اپنے اہل و عیال کی جان و مال کی قربانی دے کر نہ صرف اسلام کو ابدی حیات دے گئے بلکہ انسانیت کو جینے کا ڈھنگ سکھا گئے، آپ نے اُس وقت کے بدترین آمر، فاسق و فاجر حکمران یزیدلعین کے مدمقابل ایسے کھڑے ہوئے کہ سر تو کٹا دیا لیکن جھکایا نہیں بلکہ ظلم و بربریت اور فکرِ یزیدیت کو رہتی دنیا تک کیلئے ذلیل و رسواء کر دیا، یہی وجہ ہے کہ آج دنیا میں حریت پسندوں کیلئے نامِ حسین (ع) ایک شعار بن گیا ہے۔ علامہ عبدالخالق اسدی نے اپنے خطاب میں کہا کہ آج اکیسویں صدی میں یزیدیت سے ہمارا مقابلہ ہے اور وہ یزیدیت امریکہ و اسرائیل کی صورت میں ہمارے مدِمقابل ہیں۔

انہوں نے کہا کہ آج یزیدِ وقت امریکہ و اسرائیل مسلمانوں کیخلاف گھناؤنی سازشوں میں مصروف ہے، مسلمانوں کو مسلمانوں سے لڑایا جا رہا ہے، قاتل اللہ کا نام لیکر مظلوم لوگوں کو قتل کر رہا ہے تو مقتول اللہ کا نام لیکر قتل ہو رہے ہیں، اسلام کو بدنام کرنے کیلئے مخصوص نام نہاد مغربی درندوں کو مسلمانوں کے روپ میں مسلم ممالک میں داخل کئے جا رہے ہیں تاکہ قتل و غارت گری کے بازار گرم ہوں اور یہود و نصاری اپنے نشریاتی ذرائع سے لوگوں کو دکھائیں کہ اسلام اور مسلمان کی شناخت دہشت گردی ہے جبکہ اسلام امن و سلامتی کا دین ہے۔ انہوں نے کہا کہ اِن یزیدی فکر رکھنے والی قوتوں کے سامنے تمام امتِ مسلمہ کو باہم متحد ہو کر قیام کرنے کی ضرورت ہے۔

انہوں نے اپنے خطاب میں مزید کہاکہ درسِ حریت ہمیں سیدنا حضرت امام حسین علیہ السلام میدانِ کربلا میں دے گئے ہیں، حق پرستوں اور حسینی فکر رکھنے والوں کا یہ شیوا ہے کہ وہ باطل کے سامنے ڈٹ جاتے ہیں اور فتح و نصرت اُن کے قدم چومتی ہے۔ علامہ اسدی کا کہنا تھا کہ امام عالی مقام (ع) کی ذات اقدس اُمتِ مسلمہ کی مشترکہ میراث ہے اور مکتبِ اسلام کا ہر مسلک اُن سے محبت کو جزوِ ایمان اور اُن کی سیرت کو اپنے لئے راہِ نجات سمجھتا ہے۔ آخر میں پاکستان کی سالمیت، استحکام ، آزادی قدس و فلسطین اور کشمیر و بحرین کیلئے دعا کی گئی۔

مجلس وحدت مسلمین پاکستان

مجلس وحدت مسلمین پاکستان ایک سیاسی و مذہبی جماعت ہے جسکا اولین مقصد دین کا احیاء اور مملکت خدادادِ پاکستان کی سالمیت اور استحکام کے لیے عملی کوشش کرنا ہے، اسلامی حکومت کے قیام کے لیے عملی جدوجہد، مختلف ادیان، مذاہب و مسالک کے مابین روابط اور ہم آہنگی کا فروغ، تعلیمات ِقرآن اور محمد وآل محمدعلیہم السلام کی روشنی میں امام حسین علیہ السلام کے ذکر و افکارکا فروغ اوراس کاتحفظ اورامر با لمعروف اور نہی عن المنکرکا احیاء ہمارا نصب العین ہے 


MWM Pakistan Flag

We use cookies to improve our website. Cookies used for the essential operation of this site have already been set. For more information visit our Cookie policy. I accept cookies from this site. Agree