The Latest

وحدت نیوز(سکردو) مجلس وحدت مسلمین پاکستان بلتستان ڈویژن کے شعبہ فلاح و بہبود نے بلتستان میں موجود 381 مستحق یتیموں میں 20  لاکھ روپے سے زائد رقوم کے سکالرشپ کا اجراء کیا۔ مالی طور پر کمزور اور مستحق یتیموں میں رقوم کی تقسیم کا مقصد ان کی کفالت کرنا، تعلیمی اور دیگر اخراجات کو پورا کرنا ہے۔ واضح رہے کہ مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے شعبہ فلاح و بہبود خیرالعمل فاونڈیشن نے پورے ملک میں مستحق طالب علموں کی کفالت کے سلسلے میں ایک پروجیکٹ کا آغاز کیا ہے، یہ بھی اسی سلسلے کی ایک کڑی ہے۔ اس پروجیکٹ کے ذریعے ہر تین ماہ بعد مالی طور پر کمزرو مستحق طلبہ کی مالی معاونت کی جا رہی ہے۔ ذرائع کے مطابق ایم ڈبلیو ایم ابتک چھ قسطیں اسی مد میں ایتام کے لئے تقسیم کرچکی ہے۔ ایم ڈبلیو ایم بلتستان کے شعبہ فلاح و بہبود کے مسئول نے وحدت نیوز سے گفتگو میں کہا ہے کہ ایم ڈبلیو ایم بلتستان ڈویژن بلتستان میں تعلیم، صحت اور فلاح و بہبود کے میدان میں سرگرم عمل ہے اور اس سلسلے میں بلتستان کے حوالے سے جامع منصوبہ رکھتی ہے، جس پر بتدریج کام کیا جا رہا ہے۔

وحدت نیوز(گلگت) گلگت بلتستان کے عوام کو آئینی حقوق سے محروم رکھ کر ٹیکسوں کا نفاذ غیر آئینی اقدام ہے وفاقی حکومت کو چاہئے کہ گلگت بلتستان کے عوام کو آئینی حقوق دیکر 68سالہ محرومیوں کا ازالہ کرے ۔وفاقی حکومتوں کی بدنیتی پر مبنی اقدامات اور حیلے بہانوں سے حقوق نہ دینا مجرمانہ فعل ہے ۔صوبائی حکومت کا ٹیکنو کریٹ اور خواتین اراکین اسمبلی کو ترقیاتی بجٹ میں حصہ دار نہ بنانے کا فیصلہ بدنیتی پر مبنی اقدام ہے ،علاقے کی نصف آبادی کو شراکت اقتدار سے دور رکھنا نواز لیگ کی عوام دشمنی کا منہ بولتا ثبوت ہے،ان خیالات کا اظہار مجلس وحدت مسلمین کے رہنما اور رکن صوبائی اسمبلی محترمہ بی بی سلیمہ نے اپنے ایک بیان میں کیا ہے ۔

انہوں نے کہا کہ گلگت بلتستان کے عوام 68 سالوں سے وفاقی حکمرانوں سے آس لگائے بیٹھے ہیں جبکہ مختلف حیلے بہانوں سے حکومتیں گلگت بلتستان کو پاکستان کا حصہ بنانے اور آئینی حقوق دینے میں مخلص نظر نہیں آرہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ نواز حکومت کا گلگت بلتستان کے عوام کو قومی اسمبلی اور سینٹ میں نشستیں مخصوص کرنے کا اخباری بیان ڈھونگ ہے جس کی عملی طور پر کوئی حقیقت نہیں۔حکومت علاقے کے عوام سے مخلص ہو تو مہینوں اور دنو ں کی بجائے گھنٹوں میں حقوق دینے پر قادر ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ایمپاورمنٹ آرڈر اور بزنس رولز میں ٹیکنیکل انداز میں علاقے کے عوام کو محروم رکھا گیا ہے ،بزنس رولز میں موجود نقائص کو دور کرکے اعلیٰ ملازمتوں میں گلگت بلتستان کے عوام کو ترجیح نہ دی گئی تو مستقبل قریب میں عوام کا غم و غصہ بے قابو ہوسکتا ہے ،لہٰذا عوام کا اعتماد بحال کرنے اور احساس محرومی کے خاتمے کیلئے ضروری ہے کہ حکومت فوری طور علاقے کو آئینی حقوق دینے میں دیر نہ کرے۔انہوں نے کہا کہ آئینی حقوق کے بغیر عوام پر ٹیکسوں کا بوجھ لادنا خلاف قانون و خلاف آئین اقدام ہے ،گلگت بلتستان کے عوام کو ٹیکسوں کے دائرے میں لانے سے پہلے آئینی حقوق دیئے جائیں بصور ت دیگر ٹیکسوں کا نفاذ عملا ممکن نہیں۔انہوں نے کہا کہ ٹیکنو کریٹ اور خواتین اراکین کو ترقیاتی بجٹ میں حصہ دار نہ بنانا علاقے کے عوام سے بد نیتی پر مبنی اقدام ہے جس کی اسمبلی کے اندر اور باہر بھرپور مزاحمت کرینگے۔

وحدت نیوز (کراچی) مجلس وحدت مسلمین ضلع ملیر کے فلاحی شعبے خیرالعمل فائونڈیشن اورڈونر محترمہ بشریٰ مبین صاحبہ کے اشتراک عمل سےضلع ملیر کے مضافاتی علاقے بگٹی گوٹھ میں شیعہ سنی مساجد اور چوراہوں پر پانی کی فراہمی کےایک لاکھ روپے کی لاگت سے پانچ ہینڈ پمپ نصب کردیئے گئے، ایم ڈبلیوایم ضلع ملیر کے سیکریٹری فلاح وبہبود اسدعلی زیدی نے وحدت نیوز سے گفتگوکرتے ہوئے کہا کہ بگٹی گوٹھ کے رہائشی عوام پینے کے صاف پانی کی تلاش میں دور دور بھٹکنے پر مجبور تھے، چھوٹے چھوٹے بچے کودور دراز علاقوں سے پانی بھر کر لانا پڑتا تھا ،الحمد اللہ  خیر العمل فائونڈیشن کی نشاندہی اور اپیل پر محترمہ بشریٰ مبین صاحبہ نے بگٹی گوٹھ کے پانچ مقامات جن میں مسجدو امام بارگاہ  پنجتنی (ع)،مسجد حضرت عمرفاروق اور دیگر تین چوراہوں پر پینے کے صاف پانی کے ہینڈ پمپ لگاکر عوام کی مشکلات کو حل کرنے میں ہمارے ساتھ تعاون کیا، امید ہے کہ محترمہ بشریٰ مبین آئندہ بھی فلاحی کاموں میں خیر العمل فائونڈیشن کے ساتھ اپنا تعاون جاری رکھیں گی۔

وحدت نیوز(جامشورو) مجلس وحدت مسلمین کی جانب سے اندرون کے سیلاب متاثرین کی بحالی کے لئے ہنگامی بنیادوں پر اقدامات جاری ہیں ، ا س حوالے سے ایم ڈبلیوایم کراچی ضلع وسطی کی جانب سے لاکھڑا پاور اسٹیشن ضلع جامشورو میں 42متاثرہ خاندانوں میں ایک ماہ کا راشن فراہم کیا گیا، امدادی سامان ضلعی سیکریٹری جنرل برادر زین رضا کی سربراہی میں کراچی سے جامشورو پہنچا، وفد میں ایم ڈبلیوایم کراچی ڈویژن کے رہنما مولانا صادق جعفری ، مظاہر حسین اور دیگر بھی شامل تھے، جبکہ ایم ڈبلیوایم صوبہ سندھ کے سیکریٹری فلاح وبہبود بردار الفت عالم کربلائی نے امداری کاروان کا استقبال کیا، اس موقع پر ضلعی سیکریٹری جنرل جامشورو برادر کاشف حسین الحسینی بھی اپنی کابینہ کے اراکین کے ہمراہ موجود تھے، عالم کربلائی کا متاثرین سیلاب سے خطاب کرتے ہوئے کہنا تھا کہ ایم ڈبلیوایم مظلوموں اور محروموں کی آواز ہے ، ہم کسی مشکل وقت میں اپنی اہل وطن کو تنہا نہیں چھوڑیں گے، انشاءاللہ بہت جلد مزید سیلاب متاثرہ علاقوں میں بھی امدادی سرگرمیاں شروع کردی جائیں گیں ۔

وحدت نیوز( گلگت) نااہل حکمرانوں نے سرکاری تعلیمی اداروں کا مستقبل تاریک کردیا ہے ،پورے گلگت بلتستان میں ایک بھی سرکاری تعلیمی ادارہ ایسا نہیں جوخاطر خواہ نتائج دے سکے۔غریب عوام پرائیویٹ تعلیمی اداروں کے اخراجات برداشت کرنے سے قاصر ہیں جبکہ سرکاری تعلیمی ادارے مکمل طور پر تباہ ہوچکے ہیں ۔نظامت تعلیمات ایک یتیم ادارہ بن چکا ہے جس کا کوئی پرسان حال نہیں،بھاری بھرکم تنخواہوں سے لطف اندوز ہونے والے اساتذہ کے خود اپنے بچے پرائیویٹ سکولوں میں پڑھ رہے اور ان کی عدم توجہ سے سرکاری تعلیمی ادارے مفلوج ہوچکے ہیں۔ان خیالات کا اظہار مجلس وحدت مسلمین کے پلیٹ فارم سے منتخب رکن اسمبلی بی بی سلیمہ نے اپنے ایک بیان میں کیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ گلگت بلتستان میں ٹیلنٹ تو موجود ہے لیکن تعلیمی اداروں میں بہتر نظام تعلیم اور رہنمائی کے فقدان کی وجہ سے قوم کے معماروں کا مستقبل تاریک ہونے کے ساتھ ساتھ قوم کا مستقبل بھی تاریک ہوجائیگا۔ماضی میں بھاری رشوتوں کے عوض ملازمتیں فروخت کی گئیں اور ذمہ داروں کے خلاف تاحال کوئی کاروائی نہ ہوسکی ہے۔محکمہ تعلیم میں قابل ذہین اور تجربہ کار افراد کی کوئی کمی نہیں ،انتظامی معاملات کی نادرستگی اور سفارش کلچر کی وجہ سے نااہل افراد پورا نظام بگڑا ہوا ہے جس کی از سر نو تنظیم کی ضرورت ہے۔حکومت فی الفور محکمہ تعلیم پر توجہ دیکر ہزاروں بچوں کے مستقبل کو خراب ہونے سے بچانے میں اپنا کردار ادا کرے ۔

انہوں نے کہا کہ پرائیویٹ تعلیمی ادارے گونا گوں مسائل کے باوجود بچوں کو بہتر تعلیم و تربیت سے آراستہ کررہے ہیں جبکہ تمام تر وسائل کی موجودگی کے باوجود سرکاری تعلیمی ادارے انتہائی ناقاقص کارکردگی پیش کررہے ہیں۔حکومت اور عوام کے عدم تعاون سے سرکاری تعلیمی ادارے زبوں حالی کا شکار ہیں ،ان تعلیمی اداروں کو بچانے کیلئے ضروری ہے کہ حکومت، اساتذہ اور عوام آپس میں کوآرڈینیشن کو فروغ دیکر کمزوریوں کی نشاندہی کریں تاکہ یہ تعلیمی ادارے قوم کے معماروں کی بہتر رہنمائی میں اپنا کردار ادا کرسکیں۔

وحدت نیوز (اسلام آباد) مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی سیکرٹری فلاح بہبود و چیئر مین خیر العمل فائونڈیشن پاکستان نثار علی فیضی نے کہا  ہے کہ سیلاب سے متاثرہ علاقوںمیں امدادی کام جاری ہے مجلس وحدت مسلمین متاثرین کو تنہا نہیں چھوڑے گی لیکن افسوس کا مقام ہے کہ حکومت ان سیلاب کی روک تھا م کے حوالے سے کوئی منصوبہ بندی نہیں کررہی ہر سال عوام کو اپنی بیڈ گورننس کا تحفہ دیتی ہے جس سے غربت سے تنگ آئے ہوئے عوام مزید ابتر زندگی گزارنے پر مجبور ہوتے جارہے ہیں۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے سیلاب کی صورتحال اور متاثرہ علاقوں میں امدادی سرگرمیوں کا جائزہ لینے کے حوالے سے خیر العمل فائونڈیشن کی کور کمیٹی کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔نثار علی فیضی نے کہا کہ اس وقت مجلس وحدت مسلمین کی جانب سے لیہ ، مظفر گڑھ اور بلتستان میں امدادی کام جاری ہے جس میں خوراک لباس ادویات اور پانی کی سپلائی لائینوں کے سلسلے میں کام ہور ہا ہے ۔ مجلس کے کارکنان اور مسئولین نے سیلابی علاقوں کے تفصیلی دورہ جات بھی کیے ہیں ۔ انہوں نے مزید کہا کہ سیلاب کی صورتحال پر پاکستان اور پاکستان سے باہر مخیر حضرات اور اداروں سے ورابط بھی جاری ہیں تاکہ ابتدائی ریلیف و ریسکیوکا کام اور بہتر انداز میں چلایا جا سکے۔ اجلاس میں فلڈ کی موجودہ صورتحال پر تفصیلی گفتگو کی گئی اور اس حوالے سے حکمت عملی بھی مرتب کی گئی۔

وحدت نیوز (گلگت) ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ہسپتال غریب مریضوں کیلئے عزرائیل بن گیا ہے،لیڈی ڈاکٹرز کی عدم دستیابی اوروقت پر ہسپتال نہ پہنچنے کی وجہ سے اس ہفتے دو ڈیلوریز ضائع ہوگئیں،جگہ جگہ گندگی کے ڈھیر لگے ہوئے ہیں جس سے مریض اور ان کی دیکھ بھال کرنے والوں کو سخت تکلیف کا سامنا ہے۔دوائی نام کی کوئی چیز میسر نہیں ،وقت پر ڈاکٹرز اپنی ڈیوٹی پر حاضر نہیں ہوتے ہیں اور ایمرجنسی کیسز کیلئے گھروں سے ڈاکٹرز کو بلانا پڑتا ہے۔ایسا لگ رہا ہے کہ موت و حیات کی کشمکش میں مبتلا مریضوں کو زندگی کی نوید دینے والا یہ ادارہ بالکل بے آسرا ہے اورحکومت کی عدم توجہ نے اس ادارے کو بے حال کردیا ہے۔ان خیالات کا اظہارمجلس وحدت مسلمین کی  رکن صوبائی اسمبلی بی بی سلیمہ نے ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ہسپتال کے دورے کے بعد کیا۔

انہوں نے کہا کہ بیشتر ڈاکٹر ز اپنے ذاتی کلینک میں زیادہ ٹائم دیتے ہیں اور اکثر ہسپتال سے غائب رہتے ہیں جس سے مریضوں کو سخت پریشانی کا سامنا ہے۔ ڈی ایچ کیو ہسپتال خواتین ونگ میں تین لیڈی ڈاکٹرز تعینات ہیں لیکن یہ اکثر ڈیوٹی سے غیر حاضر رہتی ہیں اور اگر کوئی ایمرجنسی پیش آئے تو ان کو گھروں سے بلانا پڑتا ہے۔ ایک ایل ایچ وی نے تمام ہسپتال کا نظام سنبھالا ہوا ہے اور وہ بغیر ڈاکٹر کے تمام ڈلیور یز سرانجام دیتی ہیں۔انہوں نے کہا کہ شہر کا واحد ہسپتال ہے جہاں مریضوں کی سب سے زیادہ تعداد رخ کرتی ہے لیکن جدید سہولتوں اور ماہر ڈاکٹر ز کے فقدان کی وجہ سے آئے روز شکایات موصول ہوتی رہتی ہیں۔انہوں نے کہا اس ادارے سے قابل اور ماہر ڈاکٹرز کا فوری طور پر تبادلہ کیا جاتا ہے جو غریب مریضوں کے ساتھ انتہائی زیادتی ہے،ڈاکٹرز کی تعداد انتہائی کم ہونے سے مریضوں کو گھنٹوں لائن میں کھڑا رہ کر ا پنی باری کا انتظار کرنا پڑ رہا ہے اور کمزور مریض اپنی باری آنے تک بے حال ہوجاتے ہیں ۔انہوں نے وزیر صحت اور چیف سیکرٹری سے ادارے کو جدید سہولتوں سے مزین کرنے اور مریضوں کی بہتر نگہداشت کی خاطر فوری نوٹس لینے مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ ہسپتال میں ڈاکٹرز کی تعداد بڑھائی جائے خاص طور لیڈی ڈاکٹرز ،جن کی کمی کی وجہ سے مریض انتہائی پریشان رہتے ہیں۔

وحدت نیوز(لیہ)مجلس وحدت مسلمین کے فلاحی شعبہ خیرالعمل فاونڈیشن کے زیر اہتمام پنجاب میں سیلاب متاثرین کے لئے لیہ میں امدادی و میڈیکل کیمپ لگا دیا گیا ہے
ہزار سے زائد متاثرین سیلاب کی مفت ٹریمنٹ،خیرالعمل فاونڈیشن کے رضاکار متاثرین سیلاب کے لئے ریسکیو سمیت دیگر امدادی کاموں میں دن رات مصروف،خیرالعمل فاوُنڈیشن پاکستان کے ایگزیکٹیو ممبر اور صوبہ پنجاب کے مسئول سید مسرت کاظمی کا کہنا تھا کہ سیلاب نے جنوبی پنجاب کو بری طرح متاثر کیا ہے حکومتی اقدامات نہ ہونے کے برابر ہیں محض فوٹوسیشن کے لئے حکومتی نمائندے آتے ہیں ،متاثرین کی بحالی اور امدادی کاموں میں کوئی دلچسپی نہیں لے رہا متاثرین سیلاب کھلے آسمان تلے گرمی اور حبس کی شدت میں زندگی گذارنے پر مجبور ہیں،وبائی امراض پھیل رہے ہیں ،محکمہ صحت نمائشی کیمپوں کے انعقاد کے سوا کوئی کام نہیں کر رہا،انہوں نے کہا کہ لیہ اب تک ہم نے ہزار سے زائد مریضوں کو مفت ادویات فراہم کی ہے،متاثرین سیلاب کے لئے خیرالعمل فاوُنڈیشن نے خشک راشن اور خیموں کا بھی اہتمام کیا جارہا ہے،انشااللہ ہماری کوشش ہے کہ پانی نکل جانے کے بعد بحالی کے کاموں میں بھی بڑھ چڑھ کر حصہ لیں گے،سید مسرت عباس کاظمی کا کہنا تھا کہ مخیر حضرات سیلاب سے متاثر ہمارے ہم وطنوں کی امداد کے لئے دل کھول کر حصہ ڈالیں،مجلس وحدت مسلمین کے ہر کارکن دکھ کی اس گھڑی میں اپنے بھائیوں کیساتھ ہیں،انشااللہ متاثرین کی مکمل بحالی تک ہم امدادی کاموں کو جاری رکھیں گے۔

selab layyah1selab layyah2

selab layyah3selab layyah4

وحدت نیوز (چنیوٹ) مجلس وحدت مسلمین شعبہ خواتین ضلع چنیوٹ  کی جانب سے مرکزی امام بارگاہ ٹھٹی شرقی میں ١5 دن کی ورکشاپ لی جس میں عالمہ انجم کاظمی نے  خواہران کو  سورہ مومینون کی تفسیر,نحج البلاغہ کے آخری 60 خطبات,احکام دین اور اصولِ عقاءد کی تعلیم دی اور ٹیسٹ کے زریعے خواھر بشرا اود خواھر نساء نے پوزیشن حاصل کی۔

آخری عشرے میں تنظیم کی خواہران نے تنظیم کے انڈر چلنے والے قرآن سینٹرز کی بچیوں سے لے کے میٹرک تک کی بچیوں کی ورکشاپ رکھی..جس میں سکینہ ع کلاس کو 10 سورتیں,نماز اور 7 انبیاہ ع کی زندگی کے بارے میں مختصر بتایا اور ٹیسٹ کے زریعے اس کلااس کی سب سے چھوٹی بچی تاثیر فاطمہ نے فسٹ پوزیشن, عالین نے سیکنڈ اور مناحل نے تھرڈ پوزیشن لی۔work chinnute2

زینب ع کلاس کو 12احادیث بمہ عربی,احکام دین,معرفت امامِ وقت عج اور انبیاء ع کی زندگی کے بارے میں مختصر تعلیم دی اور ٹیسٹ کے زریعے تحریم زھراء نے فسٹ, مریم بخاری نے سیکنڈ اور مرضیہ اور خدیجہ نے تھرڈ پوزیشن حاصل کی۔work chinnute 3

فاطمہ ع کلااس نے احادیث بمہ عربی, نحج البلاغہ سے کلماتِ کثار,احکامِ دین, معرفتِ امامِ زمانہ عج کی تعلیم لی اور ٹیسٹ کے زریعے فاطمہ بخاری اور شھربانو نے پوزیشن لی..
انعامات کی تقسیم کیلیے مجلس وحدت مسلمین شعبہ خواتین کے زیر ِاہتمام  پروگرام ہوا جس میں ورکشاپ کی بچیوں  ٹیبلو پیش کیا.. آخر میں خانم صائمہ زیدی نے بچیوں سے خطا ب کیا اورکشاپ کااختتام دعا سلامتی امام زمانہ ؑسے کیا گیا۔work chinnute1

وحدت نیوز(حیدرآباد) مجلس وحدت مسلمین شعبہ خواتین صوبہ سندھ کی سیکرٹری جنرل خانم ہما مہدی جعفری نے انہدام  8شوال انہدام جنت البقیع کو تاریخ اسلام کا وه سیاه ترین دن قرار دیتے ہوئے کہا کہ ،8شوال جس روز آل سعود نے اھلبیت ع اور اصحاب رض کے مزارات کو اپنے یہودی آقاؤن کی ایماء پر شہید کردیا.اس دن تمام عاشقان اھلبیت ع کا غم تازه ہوجاتا ہے اور نگاہوں میں اس اجڑی ہوئی جنت کی تصویر پھرنے لگتی ہے۔

افسوس کا مقام ہے کہ نصف صدی سے زیاده کا عرصه گذر جانے کے باوجود ان مقدس مقامات کی تعمیرنو ممکن نہ ہوسکی ،جس کی اہم وجہ اہل اسلام کا اس مسئلے کو کما حقہ اہمیت نہ  دینا ہے۔

ضرورت اس امر کی ہے کہ تعمیر بقیع کیلئے عالمگیر تحریک چلائی  جاۓ اور اس حوالے سے سعودی حکومت پردباؤ ڈالا جاۓ،برادران اهلسنت سے اس حوالے سے خصوصی تعاون کی درخواست کی جاۓ تاکه آل سعود کے اس ظلم جو که عراق و شام مین مزارات اصحاب رض اور مساجد کے انہدام کی صورت مین ظاہر ہوا ہے، راسته روکا جاسکے.

مجلس وحدت مسلمین پاکستان

مجلس وحدت مسلمین پاکستان ایک سیاسی و مذہبی جماعت ہے جسکا اولین مقصد دین کا احیاء اور مملکت خدادادِ پاکستان کی سالمیت اور استحکام کے لیے عملی کوشش کرنا ہے، اسلامی حکومت کے قیام کے لیے عملی جدوجہد، مختلف ادیان، مذاہب و مسالک کے مابین روابط اور ہم آہنگی کا فروغ، تعلیمات ِقرآن اور محمد وآل محمدعلیہم السلام کی روشنی میں امام حسین علیہ السلام کے ذکر و افکارکا فروغ اوراس کاتحفظ اورامر با لمعروف اور نہی عن المنکرکا احیاء ہمارا نصب العین ہے 


MWM Pakistan Flag

We use cookies to improve our website. Cookies used for the essential operation of this site have already been set. For more information visit our Cookie policy. I accept cookies from this site. Agree