The Latest

وحدت نیوز(ہالا) مجلس وحدت مسلمین کے زیر اہتمام نشتر پارک کراچی میں منعقدہ استحاکم پاکستان وامام مہدی عج کانفرنس کی عوامی رابطہ مہم کے سلسلے میں ایم ڈبلیوایم شعبہ خواتین صوبہ سندھ کی رہنماوں کے مختلف اضلاع گوٹھوں اور قصبوں کے دورہ جات جاری ہیں ، اس سلسلے  میں ایم ڈبلیوایم کی صوبائی رہنما محترمہ سیمی نقوی نے گوٹھ غلام حسین  لغاری ،ملوک خان لغاری،تلہار،ٹنڈو بھاگو،حاجی کرڑن،ٹنڈوغلام علی،کوٹھ حاجی ساون نو تکانی،آبادگار ،ٹنڈو محمد  خان، ماتلی،بدین،نیندو،کڈن،گوٹھ مانت کادورہ کیا اور خواتین کو جلسہ عام میں شرکت کی دعوت دی۔

ضلع ھالا کے گوٹھہ  غلام حسین  لغاری میں خواھر سیمی نقوی ورکنگ کمیٹی  رابطہ  سیکرٹری  صوبہ سندھ نے  امام بارگاہ حسینی  میں 21مئی  کو ہونے والی استحکام پاکستان و امام مہدی کانفرنس کی حوالے سے بریفنگ دی جس میں کثیر تعداد میں خواتین نے  شرکت  کی ،خواھر سیمی  نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ  دور حاضر میں  خواتین کا کردار کیسا ہونا چاہئے عورت مرد کے بغیر نہیں  چل سکتی اور مرد عورت کے  بغیراگر عودت کے بغیر زندگی  بے کیف ہے تو مرد کے  بغیر گھر ویران ہے لہزا دونوں گاڑی کے دو پییے ہیں اور معاشرہ بھی انہی دونوں سے تشکیل اور اپنے ارتقائی منزل طے کرتا ہے معاشرے کو بہترین بنانے میں خواتین کا۔نہایت اہم کردار ہے جہاں کی خواتین حق اور باطل میں فرق  کرنا جانتی ہوگی ظلم کے خلاف آواز اٹھانا جانتی ہوں گی وہ ہی معاشرہ ترقی بھی کرتا ہے اور ایسے معاشرے میں پھر ایک عارف حسین الحسینی جیسی ہستی پیدا نہیں ہوتی بلکہ کئ عارف حسین الحسینی ایسے معاشرے میں تیار ہوتے ہیں.اس لئے21 مئ کو مرد اور  عورت دونوں کو گھر سے نکل کر میدان عمل میں  لبیک کہنا ہوگا۔مومنات کی  آمادگی  اور خواہش کودیکھتے ہوئے یہاں کے یونٹ سازی کی گئی جس میں  چھ خواتین کو ذمہ داری دی گئ اور ان کو تین مہینے کا بر نامہ دیا گیا جس کے بعددعاے امام زمانہ عج سے  اختتام کیا گیا۔

رکن ورکنگ کمیٹی رابطہ سیکرٹری صوبہ سندھ  شعبہ خواتین خواہر سیمی  نقوی نے اپنے خطاب نے سیرت حضرت زہراء  ع بیان کرتے ہو کہا کہ خواتین پر لازم ہے کہ وہ سیرت جناب سیدہ پر چلتے ہوئے اپنی ذمہ داری اور وظیفے کو سمجھے  لہذا ہماری ذمہ داری کیا ہے؟ پردہ، عبادت گزاری، اہل و عیال سے خوش اخلاقی،  شوھر داری ان سب باتوں کومدنظر رکھتے ہوئے ہم اپنی زندگی  کو سنوار سکتے ہیں یہ تو ایک خاتوں کی انفرادی ذمداری تھی تو کیا پھر پرودگار نے عورت پر اجتماعی کو ئی  ذمداری عائد نہیں کی؟ہرگز ایسا نہیں پروردگار قرآن میں واضع الفاظ میں فرماتا ہے کہ تم سب سے یعنی مرد و زن سے اجتماعی زمہ داریوں کے  حوالے سے سوال کیا جائے گا جس میں سے ایک معاشرہ سازی کے حوالے سے سوال ہوگا۔ یقیناََ ایک  با کردار  عورت کا بڑھتا ہوا ہر قدم تاریک کیلے اجلی یادوں کو تابناک  بناتا ہے اور بہترین معاشرہ تشکیل پتا ہے لہذا ہمیں شرعی حدود کا پاس رکھتے ہوئے اپنے مکمل حجاب کے ساتھ معاشرہ سازی کرنی ہوگی ظالموں اور منافقوں کے چہرے سے حضرت زینب ع کی طرح نقاب کو  نوچ اتارنا ہوگا جس طرح جناب زینب نے بنو امیہ کے چہرہ بے نقاب کیا تھا اور انکو تاریخ میں ہمیشہ کے لیے رسوا کیا بلکہ ہمیں بھی انکی سیرت پرویسے ہی عمل کرنا ہوگا آج یزیدمعلون نہیں مگر کچھ یزید جیسے ضرور ہیں جن کو حیدری جوانوں سے نفرت ہے تو ان کوبلا جواز گرفتار کر کے نامعلوم مقام پرمنتقل رکھ کر ظلم و بربریت کانشانہ نبا رہ ہیں تو کہی ہماری عزاداری کو محدود کرنے کی سازش کی جاری ہیں لہذا اب وقت ہے کی زینبی کردار ادا کیا جائے لوگوں نے  لبیک  یا زینب علیہ السلام کے  نعروں سے محفل کو پر جوش بنادیا. خواتین کی آمادگی دیکھنے ہوئے خواہر سیمی  نقوی نے  یونٹ تشکیل دی اور حلف لیا دعائے امام زمانہ  عج سے اختتام کیا۔

مجلس وحدت مسلمین شعبہ خواتین صوبہ سندھ کی ورکنگ کمیٹی کی رابطہ سیکرٹری  خواہر سیمی  نے 21مئ  استحکام پاکستان  و امام مہدی کے حوالے سے منعقد کی گئ ایک نشست میں بریفنگ دیتے ہوئے کہا کہ  کربلا  میں امام حسین  علیہ السلام نے  وقت  عصر جو آواز استغاسہ بلند کی تھی آج ھمارےشیر دل لیڈر مجلس وحدت مسلمین جناب علامہ  راجہ ناصر  عباس نے سیرت سید شہداؑ پر عمل کرتے ہوئے اس وقت کے فرعون کو نست و نابود کرنے کے لئے  ہم حسینیوں کو ایک پلیٹ فارم پر بلایا ہے اور ہمارا دینی فریضہ ہے کی ان کیآواز پر لبیک کہتے ہوئے 21 مئی کو اپنے  گھروں کو چھوڑ کر نشترپارک میں  جمع ھوکر دشمن کو بتادیں کہ ہم سب ایک ہیں ہم عزاداری سید شہدا پر کسی بھی طرح کی پابندی برداشت نہیں کرئے گے اس عرض پاک کی آدازی کے لیےہمارے اجداد نے اس لیے  ج قربانی نہیں دی تھی کہ جنھوں نے اس ملک کی خاطر اپنی جانیں  دی انکو اس ملک میں انکے بنیادی حقوق سے محروم کردیا جائے انکی نسل کشی کی جائے  پھر انہی کے گھر والوں کو اسیر کیا جائے انہی پر جھوٹے مقدمے چلائیں جائیں۔انہی کے خلاف نیشل ایکشن پلان کواستعمال کیا جائے اب وقت آگیا ہے کہ ہم اپنے حقوق کے لیے آواز بلند کریں  ،مولا سیدالشہدا ؑ کا قول ہے"ظلم کے خلاف جتنی دیر سے قیام کرو گے قربانی اتنی زیادہ دینی پڑئے گی تو بس ہمیں ظلم کے خلاف آواز بلد کرنی ہو گی کیا آپ خواتین کردار زینبی ادا کرنے کے لیے آمادہ ہیں جس پر خواتین نے لبیک یا حسین ع کے نعرے لگاکر اپنی بھر پور شرکت کا اعلان کیا۔اس پروگرام کے بعد خواتین نےمجلس وحدت مسلمین میں شمولیت کی شدید خواہش کا اظہار کیا لہذا خواتین ک آمادگی کومدنظر رکھتے ہوئے  وھاں یونٹس تشکیل دیاگیا۔

وحدت نیوز(کراچی) مجلسِ وحدت مسلمین شعبہ خواتین کراچی نے "استحکامِ پاکستان و امامِ مہدی عج کانفرنس" 21 مئی نشتر پارک، کے سلسلے میں بھر پور انداز میں ملت کی خواتین میں عوامی رابطہ مہم کو جاری رکھتے ہوئے خواہر ام البنین مرکزی معاون خواہر زہرہ نقوی سیکرٹری جنرل ایم ڈبلیوایم شعبہ خواتین پاکستان ، خواہر تفسیر اور  ضلع کورنگی کی جنرل سیکرٹری خواہر ثروت زہرہ کیساتھ ضلع کورنگی کا دورہ کیا اور مختلف مقامات پر خواتین کے اجتماعات میں "استحکامِ پاکستان و امام مہدی عج کانفرنس" کے حوالے سے تفصیلی بریفنگ دی۔خواتین نے انشاء اللہ 21 مئی کو "استحکامِ پاکستان و امامِ مہدی کانفرنس " میں اپنی شعوری بیداری اور کنیزانِ سیدہ س و کنیزانِ زینب س ہونے کا بھر پور ثبوت دیتے ہوئے بمعہ اپنے اہل و اعیال کے شرکت کرنے کا اعلان بلند تر نعروں سے دیا اور مجلسِ وحدت مسلمین شعبہ خواتین کی خواہران کی حوصلہ افزائی کی۔جن میں عوامی کالونی، مرکزی امام بارگاہ الحسینی، ناصر کالونی شامل ہیں ۔عوامی رابطہ مہم کیساتھ ہی ان علاقوں میں یونٹ سازی کی بنیاد بھی رکھی گئیں۔اسکے علاوہ ضلع کورنگی کی جنرل سیکرٹری خواہر ثروت اب بھی مسلسل عوامی رابطہ مہم کے سلسلے میں اپنے علاقے کے دورہ جات میں مصروف ہیں۔

وحدت نیوز(اسلام آباد) خیرالعمل ویلفیئر اینڈ ڈویلپمنٹ ٹرسٹ پاکستان کے چیئرمین علامہ سید باقرعباس زیدی نے کہا کہ اس سال ماہ رمضان میں انشاء اللہ دس ہزار سے زائد(10000) مستحقین افراد میں راشن تقسیم کرینگے جس میں آٹا،دالیں،چینی،چائے،گھی،کھجوریں،مشروبات،مصالحہ جات  و اشیاء خوردونوش شامل ہونگی۔اسکے لیئے تمام صوبوں اور اضلاع میں فلاح و بہبود کے سیکر ٹریز پر مشتمل کمیٹیاں بنا دی گئی ہیں جو تمام تر انتظامات کی نگرانی کر رہے ہیں۔ما ہ رمضان برکتوں اور رحمتوں والا مہینہ ہے یہ مہینہ اللہ تعالی کی طرف سے ہمارے لیئے ایک انمول تحفہ ہے جس میں ہمیں دکھی انسانیت کی خدمت کرنے کا موقع میسر آتا ہے۔ خیرالعمل ویلفیئر اینڈ ڈویلپمنٹ ٹرسٹ بھی دکھی انسانیت کی خدمت کا جذبہ لیکر میدان عمل میں ہے گزشتہ سالوں کی طرح اس سال بھی ماہ مبارک رمضان میں غریب،پسماندہ، مستضعف ومستحق لوگوں کوراشن پہنچانے کا عزم لیکر خیرالعمل ویلفیئر اینڈ ڈویلپمنٹ ٹرسٹ کا ہر کارکن انشاء اللہ اپنی ذمہ داری ادا کرے گا ان خیالات کا اظہار انہوں نے  اپنے ایک بیان میں کیا۔ علامہ سید باقر زیدی نے کہا کہ ماہ مقدس کے مہینے سے ہمیں  زیادہ  سے زیادہ استفادہ کرنا چاہیے دکھی انسانیت کی خدمت کے لیئے بڑھ چڑھ کر اپنا کردار ادا کریںاور ساتھ ساتھ دوسروں کو بھی اس کار خیر میں شامل ہونے کی ترغیب دینی چاہیے اس موقع پر انہوں نے تمام درد دل رکھنے والے افراد سے اپیل کی کہ وہ آئیں اور معاشرے کے مستحق افراد کی بنیادی ضرورتوں کا احساس کرتے ہوئے  ماہ مبارک رمضان میں خیرالعمل ویلفیئر اینڈ ڈویلپمنٹ ٹرسٹ کا اس کار خیر میں ساتھ دیں اس کار خیر میں ہر فرد کو شامل ہو کر اپنا کردار ادا کرنا چاہیے تاکہ ہماری آخرت سنور جائے ۔

وحدت نیوز(کراچی) مجلسِ وحدت مسلمین شعبہ خواتین کراچی ضلع ملیر کی جانب سے 21 مئ "استحقامِ پاکستان اور امام مہدی عج" کانفرنس کے سلسلے میں  خواہر ام البنین مرکزی معاون برائے خواہر زہرہ نقوی اور ضلع ملیر کی جنرل سیکرٹری خواہر تفسیر اور ڈپٹی سیکرٹری خواہر رفعت کیساتھ ضلع ملیر کے مختلف علاقوں میں خواتین کے ساتھ بھر پور عوامی رابطہ و آگاہی   مہم کے سلسلے میں ضلع ملیر کے مختلف علاقوں کے دورے کئےگئے، جن میں جعفرِ طیار، غازی ٹاون،417,بیتِ فاطمہ،  مدینہ کالونی محمدی ڈیرہ،قائد آباد حسینی امام بارگاہ بگٹی گوٹ ،چوکنڈی،خدا بخش گوٹ ،گلشنِ حدید، اسٹیل ٹاون،شاہ فیصل کا تفصیلی دورہ کیا اور 21 مئ کے حوالے خواتین کو بریفنگ دی ۔خواہران نے اپنے خطاب میں یہ شعور اجاگر کیا کہ ظالم و جابر حکمرانوں سے اپنے حقوق کے دفاع اور تقاضے کے لئے ہمیں مل کر وحدت کی صورت میں اپنی آواز کو بلند کرنا ہے۔آج اپنے وطنِ عزیز پاکستان اور ملتِ تشیع کے حقوق کیلئے بیدار ہونا درحقیقت امامِ وقت عج کے ظہور کی تیاری ہے۔  21 مئی  تجدیدِ عہد کا دن ہے کہ ہم اپنے زمانے کے امام عج سے اور ملکِ خدا داد پاکستان سے۔ہمیں وطنِ عزیز  پاکستان کے حوالے سے بیداری کا ثبوت دینے اور اپنے حق کیلئے آواز بلند کرنے کیلئے اپنے گھروں سے نکلنا ہے اور حکمرانوں کو احساس دلانا ہے۔الحمد اللہ ملتِ تشیع کی بیدار خواتین نے بھر پور انداز سے شرکت کرنے کا اعلان لبیک یا زینب س اور لبیک یا امام عج کی بلند نعروں کے ساتھ دیا۔ان تفصیلی دوروں کے ساتھ ہی ان علاقوں میں مجلسِ وحدت مسلمین شعبہ خواتین ضلع ملیر کی یونٹ سازی بھی عمل میں لائی گی۔

وحدت نیوز(کراچی) مجلس وحدت مسلمین شعبہ خواتین کی جانب سے استحکام پاکستان و امام مہدی کانفرنس کی عوامی رابط و آگاہی  مہم کے حوالے سے سولجربازار  میں ایم ڈبلیو ایم کے صوبائی آفس میں  "جشن ولادت امام مہدی عج" انعقاد کیا جسمیں خواتین اور بچوں نے بھر پور شرکت کی۔جشن کی نظامت کی ذمداری مرکزی ڈپٹی سیکرٹری خواہر ام البنین زہراء نے ادا کی جبکہ بطور مہمان خصوصی خواہر ندیم زہراء معروف مذہبی  اسکالر و ذاکرہ اہل بیت (سیکرٹری شعبہ تعلیم و تربیت ایم ڈبلیوایم شعبہ خواتین) اور فاضلہ قم خانم  سیدہ سحر کاظمی صاحبہ نے شرکت فرمائی۔جشن میں موجود مومنات کو منقبت پڑھنے کی دعوت دی گئ جس پر حاضرین محفل نے نہایت خوشی کا اظہار کرتے ہوئے بارگاہ امام مہدی زما عج کی خدمت میں ہدیہ نعت رسول ص ،منقبت اور دورود سلام پیش کیے ۔مومنات نے اس منفرد انداز سے منعقد کیے گئے جشن کو نہایت سراہا۔اسکے علاوہ مجلس وحدت مسلمین شعبہ خواتین کی جانب سے بچوں اور خواتین میں "مہدی موعود" کے عنوان سے کوئز رکھا گیا اور صحیح  جوابات دینے والوں میں انعامات تقسیم  کیے گئے اسکے علاوہ بچوں میں عیدی بھی تقسیم کی گئ۔ جس کے بعد خواہر ندیم زہراء نے ماہ شعبان کی اہمیت اور فضیلت اور امام مہدی عج کے عنوان پر خطاب فرمایا اور غیبتِ امام میں منتظر  خواتین کی خصوصیات پر تفصیلی روشنی ڈالی۔ آپکا کہنا تھا کہ ماہ شعبان  خود سازی کے لیے بہترین  ہیں اس ماہ میں کی گئ ہر عبادت کا بے حد ثواب اور اجر ہے اس ماہ میں ہمارے پاس بہترین موقع ہوتا ہے کہ ہم خواتین جو منتظرینِ امام کا دعوٰی کرتی ہیں وہ خود کو اپنے امام وقت کے   اعوان و انصار میں شامل ہونے کے لئے اہل بنا سکیں  اپنے اندر وہ تمام تر خوصیات  اور خوبیاں شامل کرسکیں تاکہ کی امام زمانہ عج کے ظہور میں تعجیل ہوسکےتجدیدِ عہد کریں۔

خواہر ندیم زہرہ نے کراچی میں ہونی والی "استحکامِ پاکستان و امامِ مہدی عج کانفرنس " کے حوالے سے خطاب کرتے ہوئے   مزید کہاکہ ہمیں غور کرنا چاہیے  کہ آخر کیا وجہ ہے کہ ظہور نہیں ہورہا آخر کیا وجہ ہے کہ ہمارا معاشرہ  روز با روز پستی اور زلت  کے دلدل میں دہستہ جا رہا ہے کیوں ہم پر  کرپٹ وظالم حکمرانوں کے مسلط ہونے کا ناختم ہونے والا  سلسلہ جاری و ساری ہے بلکہ روز انکے ظلم و بربریت  اور غرور میں اضافہ ہوتا جا رہا ہے  کیونکہ ہم نے خاموش رہ کر ظالم کو مزید  ظالم بنایا  اگر ہم کو یہ احساس ذمداری ہے کہ ہمارا امام عج پردہ غیبت میں ہمارا منتظر ہے تو ہمیں بحثیت خاتون  پہلے مرحلے کا آغاز اپنے گھر سے کرنا ہے۔ گود میں موجود اولاد کو کربلا کی ماؤں کی طرح حجتِ خدا کی نصرت کے لئے اپنے ہاتھوں سے تیار کرنا ہے ،ظہور کی راہ ہموار کرنے کے لیے  پہلا مرحلہ ہی خود سازی اور پھر معاشرہ سازی ہے۔  ملک، شہر گلی محّلوں کو آمادہ کرنا ہے، اور اپنے ملک و وطنِ عزیز کے استحکام اور ملت کے حقوق کیلئے گھروں سے نکلنا ہے۔

 خواہر ندیم زہراء کے خطاب کے بعد فاضلہ قم خواہر سیدہ سحر کاظمی صاحبہ نے   "غیبت کی اقسام اور فلسفہ غیبت " کے عنوان پر  خطاب کیا آپ نے اپنے خطاب میں شخصی غیبت اور شخصیت کی غیبت کے فلسفے کو  واضح  کیا اپکا کہنا تھا کہ اگر ہم چاہتے ہیں کہ امام زمانہ کی غیبت ختم ہو اور انکا ظہورر جلد ہو تو ہمیں فلسفہ شخصیت کے اسباب کو سمجھنا ہوگا کیونکہ  شخصیت کی غیبت کے اسباب میں سے ایک اہم سبب  یقیناََ  خود سازی اور معاشرہ سازی ہے مگر معاشرہ سازی کے لیے معاشرے  کا زندہ ہونا ضروری ہے حرکت ضروری  ہے  ۔زندہ معاشرے کی شناخت کیسے کی جائے  تو اسکے لیے دیکھنا ہو گا آیا  وہاں خدا کے احکامات پر عمل ہورہا ہے کے نہیں ،مظلوم پر ظالم کے ظلم کے خلاف آواز اٹھانے والے موجود ہیں کے نہیں ۔،ظالم کے ظلم کے خلاف آواز اٹھانے والے موجود ہیں یا نہیں۔یہ ہیں زندہ معاشرے کی علامت اور یہ ہی منتظر امام عج کی زمداری جو منتظر ہوگا عہ کبھی ہاتھ پر ہاتھ رکھے نہیں بیٹھے گا بلکہ میدان عمل میں موجود  رہتا ہے اور یہ ذمہ داری مرد و زن دونوں کی یکساں  ہے جیسے آج مجلسِ وحدت  مسلمین شعبہ خواتین نے یہ ایک بہترین اور ایک منفرد کاوش کی۔آخر میں مرکزی میڈیا سیکرٹری ایم ڈبلیوایم شعبہ خواتین پاکستان  خواہر سیدہ ثناء  جمیل عابدی نے 21مئ کے پروگرام کے حوالے سے تفصیلی بریفنگ دی اور استحکامِ پاکستان  و امام مہدی عج کانفرنس کے حوالے سے شریک مومنات کو آگاہی دی اور انکو کو شرکت کی دعوت دی ۔خواتین نے بھر پور شرکت کی یقین دہانی لبیک یا امام و لبیک یا زینب کے نعروں کیساتھ کرائی  ۔پروگرام کا اختتام  دعائے سلامتی امام زمانہ و ملک و ملت کے استحکام کی دعاوں سے کیا گیا۔اور میلاد کے سلسلے میں انتظامی امور میں بھر پور تعاون کے حوالے سے ایم ڈبلیوایم  ضلع جنوب کا شکریہ ادا کیا گیا۔شریک خواتین اور بچوں میں تبرک تقسیم کیا گیا۔

وحدت نیوز(سکردو) وحدت یوتھ بلتستان کی جانب سے یوم جوان کے عنوان سے ایک عظیم الشان تقریب کا انعقاد کیا گیا جس میں جوانوں کی کثیر تعداد نے شرکت کی۔ مرکزی سیکریٹری وحدت یوتھ پاکستان ڈاکٹر یونس حیدری نے خصوصی طور پر پروگرام میں شرکت کی اور جوانوں کی اس کاوش کو سراہتے ہوئے مختلف میدانوں میں موثر رول پلے کرنے پر زور دیا۔ انہوں نے عصر غیبت میں جوانوں کے کردار پر روشنی ڈالتے ہوئے جوانوں کے سامنے یوتھ کا سالانہ پروگرام پیش کیا اور جوانوں کو بھرپور کردار ادا کرنے اور اسے عملی جامہ پہنانے پر زور دیا۔

پروگرام کے صدر محفل حجۃ الاسلام والمسلمین علامہ شیخ احمد نوری معرفت امام زمانہ عج اور عصری تقاضوں کے عنوان سے خطاب کرتے ہوئے اس بات پر زور دیاکہ جوانوں کو تعلیم و تربیت کے ساتھ عصری تقاضوں سے بھی ھماھنگ ہونے کی ضرورت ہے۔ انہوں نے مغربی ثقافتی یلغار کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ دشمن کی یہی کوشش ہے کہ وہ جوانوں سے ان کی غیرت دینی کو چھین لیں۔انہوں نے اقبال کےشاہین کا مکھیوں کی طرح ھر گندی چیز پر بیٹھنے کو معاشرے کا المیہ قرار دیتے ہوئے جوانوں کو حقیقی معنوں میں اقبال کا شاہین بننے پر زور دیا پروگرام کے اختتام پر جوانوں کوحوصلہ افزائی کے لئے نفیس انعامات سے بھی نوازا گیا۔

وحدت نیوز(گلگت)  مجلس وحدت مسلمین گلگت بلتستان (شعبہ خواتین) کے زیر اہتمام ولادت حضرت قائم آل محمد ؐ کے حوالے سے ایک پروقار تقریب بعنوان " بقیۃ اللہ کانفرنس" العصر پبلک سکول گلگت میں منعقد ہوئی جس میں ہزاروں کی تعداد میں پیروان حضرت زینب سلام اللہ علیہا نے شرکت کی۔اس کانفرنس میں مختلف سکولوں کے بچیوں نے حمد، نعت شریف اور ترانوں سے محفل کے حسن کو دوبالا کیا۔تقریب صبح 9 بجے شروع ہوئی اور دن دو بجے اختتام پذیر ہوئی۔

حجۃ الاسلام والمسلمین سید راحت حسین الحسینی اس مبارک محفل کے مہمان خصوصی تھے ۔انہوں نے اپنے خطاب میں منتظمین کو مبارکباد پیش کرتے ہوئے انتظار امام مہدی کو دین کی ضروریات میں سے قرار دیا . انہوں نے کہا کہ پاکستان اسلام کے نام پر بنا ہے لیکن اس ملک کے حکمران آج تک ملک میں اسلام کے سنہرے قوانین کو نافذ کرنے میں ناکام دکھائی دے رہے ہیں۔مسلمان کرپشن میں اپنا ثانی نہیں رکھتے ،سیاستدان جب تک جھوٹ نہ بولیں ان کا کھانا ہضم نہیں ہوتا۔اگر ملک کے حکمران سچے اور عادل مزاج ہوں تو عوام بھی عدل پسند اور سچے ہونگے، پانامہ لیکس میں صرف نواز شریف ہی کا نام نہیںتھا بلکہ آئی لینڈ کے وزیر اعظم کا نام بھی پانامہ سیکنڈل میں آیا تھا جنہوں نے فوری طور پر قوم سے معافی مانگ کر استعفیٰ دیدیا لیکن اسلامی ملک کا سربراہ ہونے کے باوجود نواز شریف بڑی ڈھٹائی کے ساتھ وزیر اعظم کی کرسی پر بیٹھے ہیں۔انہوں نے کہا کہ حکمران پانچ سالوں تک ٖصرف اعلانات کی حد تک ترقیاتی منصوبے مکمل کرچکے ہیں۔
مجلس وحدت مسلمین شعبہ خواتین کی کوارڈینیٹر خواہر سائرہ ابراہیم نے اپنے خطاب میں کہا کہ قیام امام مہدی کسی ایک فرقے یا علاقے کا مسئلہ نہیں بلکہ یہ عالم اسلام کا مسئلہ ہے ۔آج امام مہدی کے دشمن ان کے ظہور پر ان کے خلاف جنگ کرنے کیلئے صف آرا ہوچکے ہیںلیکن وہ خیبر و خندق کے بیٹوں کو بھول چکے ہیں۔انہوں نے کہا کہ عالم اسلام بیدار ہوچکا ہے اور کرائے کے فوجیوں کے اتحاد کو مسترد کرچکاہے ۔یہ جاہل لوگ لاکھ  تدبیریں کریں لیکن امام مہدی کا ظہور خانہ کعبہ میں ہی ہوگا اور پوری دنیا پر ان کی عادلانہ حکومت قائم ہوگی۔انہوں نے کہا کہ مجلس وحدت مسلمین امام مہدی کے ظہور پرنور کیلئے زمینہ فراہم کررہی ہیں اور اس سلسلے میں ملکی و بین الاقوامی سطح پر حتی الامکان کوشاں و متحرک ہے۔مجلس وحدت نے پاکستان بھر کے صوفیاء، مشائخ و سجادہ نشینوں کو مجتمع کیا ہے اور اہلسنت کو منظم کرکے ظالم شکن اور مظلوم دوست سیاسی جماعتوں کے ساتھ ملکر دہشت گردی، کرپشن، چور بازاری اور اقربا پروری کے خاتمے کیلئے میدان عمل میں موجود ہے۔آج ضرورت اس امر کی ہے کہ فکر سے فکر ملاکر،عمل سے عمل کو قوت دیکر زینب کبریٰ کی سنت کو زندہ کریں،قوم کی پژمردگی اور مایوسی کو ختم کرنے کی ضرورت ہے،لوگوں کے حوصلے بلند کرنے کی ضرورت ہے اور یہ تمام کام انفرادی و اجتماعی تقویٰ کے ذریعے ہی سے حاصل ہوسکتا ہے۔
مجلس وحدت مسلمین شعبہ خواتین کی رہنما و رکن قانون ساز اسمبلی بی بی سلیمہ نے کہا کہ مظلوم کی داد رسی اور ظالم حکمرانوں کے خلاف قیام ہی مجلس وحدت مسلمین کے قیام کا سبب بنا ہے اور آج پورے ملک میں مجلس وحدت مسلمین کے قائدین و کارکنان ظلم و جبر کے خلاف سینہ تان کے کھڑے ہیں۔

وحدت نیوز(ٹنڈو محمد خان)  مجلس وحدت مسلمین صوبہ سندھ شعبہ خواتین کی سیکریٹری جنرل  خواہر کنیزالحسن جوادی اورخواہر سیمی نقوی نے ٹنڈو محمد خان کے گاوں آباد شوگر مل کادورہ کیا اور  مولانا منور سے  ملاقات  کی اور استحکام پاکستان وامام مہدی عج کانفرنسں کے حوالے سے پروگرام  رکھاگیا جس میں خواہر  سیمی نے  21مئی کے حوالے سےبریفنگ دی کہ اس دورہ حاضر میں  ھم خواتین  کی کیا ذمہ داری ہے اب وہ وقت نہیں رہا کہ ہم شہداء کی شہادت پر گھر بیٹھے اور صرف افسوس آنسو  بہائیں جائیں  بلکہ اب وقت ہے کہ اس پر آشوب دور میں ہم پر لازم ہے ہم امام زمانہ عج کے ظہور کی راہ ہموار کرنے کے لیے اس عالمی تحریک انقلاب میں اعظم زینبی علیہ اسلام کے ساتھ اپنا کردار ادا کریں اسکے لیے ہمیں سیرت معصومین ع پر عمل کرنا ہوگا اور یہ ہمارے معصومین ع کی ہی سیرت ہے کہ جب مظوم انسانیت پر جابر ظالم حکمران مصلت ہوئے تو ہمارے آئمہ حق نے ہمیشہ ظلم کے خلاف آواز اٹھائی بلکے ظلم و بربریت کو روکنے کے لیے کربلا تک گئے آپنے اہل ع عیال کی قربانی دی   بیبیوں کو اسیر کیا گیا مولا سید شہدا ع کیا نہیں جانتے تھے کہ بیبیوں کو اسیر کیا جائے گا؟ نہیں ایسا نہیں بلکہ ہم دیکھتے ہیں مولا حسین ع خود بیان فرمارہے ہیں کہ زینب ع آپ کو بازاروں میں اسیر کرکے لے جایا جائے گا اسکے جواب میں اعظم زینبی ع دیکھیں بی بی ع نے کہاکہ بے شک اگر دین حق کی سر بلندی کے لیے یہ قربانی دینی پڑی تو میں دوں گی ظالم وجابر کو زلیل و رسوا کروں گی ۔تو آج ہمارے لیے بیبی زینب ع کی سیرت نشان راہ ہے بینی ع ہمیں ان موجودہ حالات میں ہمیں ہمارا وضیفہ بیان فرما رہی ہیں کہ جب تم۔دیکھو کہ حق پر عمل نہیں ہو رہا اور مظلوموں پر جابر ظالم حکمران مسلط ہےتو بس لبیک کہتے ہوئےگھروں سے نکلو اور ظلم کے خلاف آواز بلند کرو چاہے اس راہیں میں کتنی ہی تکلیفیں برداشت کرنا پڑیں ۔ الحمدلله  سب خواتین نےنہایت جوش وخروش کا اظہار کیا اور استحکام  پاکستان  وامام مہدی کانفرنس میں  شرکت  کی یقین دھانی کروائی۔

اس کے جناب یعقوب  حسینی (ڈپٹی سیکرٹری صوبہ سندہ) کی رہائش گاہ پر  اطراف  کی خواتین  کیساتھ ایک میٹینگ کا اہتمام کیا گیا تھا جسمیں خواتین کو ۲۱ مئی کے حوالے سے بریفینگ دی گئی۔استحکام  پاکستان وامام مہدی  کانفرنس کے  بارے  میں  خواتین  کو آگاھی دیی گئ۔خواتین نے لبیک یا زینب کے  نعروں کے  ساتھ  شرکت کی، یقین دہانی کروائی اسکے بعد انتظامی امور کے حوالے سے  برادر یعقوب  سے بھی مختلف امور پر گفتگو اور تبادلہ خیال کیا گیا۔

وحدت نیوز(ہری پور) دمہ کے عالمی دن کی مناسبت سے مجلس وحدت مسلمین کے شعبہ فلاح وبہبود خیرالعمل ورکنگ اینڈ ڈیولپمنٹ ٹرسٹ کے زیر اہتمام ہری پورمیں ایک آگاہی سیمینار کا انعقاد کیا گیا جس میں زندگی کے مختلف شعبوں سے تعلق رکھنے والی خواتین نے شرکت کی ممتاز خاتون معالج و سماجی شخصیت ڈاکٹر شائستہ بابر نے دمہ کی بیماری کے حوالے سے شرکاء کو خصوصی لیکچر دیتے ہوئے کہا کہ دمہ ایک ایسی بیماری ہے جس کا کوئی مستقل علاج نہیں یہ پیدائشی طورپر بھی ہوتی ہے اس کے علاوہ الرجک اور نان الرجک وجوہات کی وجہ سے بھی ہوسکتی ہے الرجک وجوہات میں پولن الرجی ،آلودگی ،گندگی ،کسی چیز کی خوشبو یا بدبو اور نان الرجک میں سردی فلو بخار ٹینشن عدم برداشت اور قوت مدافعت کی کمی اور دیگر وجوہات بھی ہوسکتی ہیں اس بیماری کو نارمل نہیں لینا چاہیے بلکہ اس کی وجہ سے موت بھی واقعہ ہوسکتی ہے سانس میں تکلیف اس کی اہم علامت ہے اس بیماری کا شکار مریضوں کو مرض لگنے یا بڑھنے کی وجوہات بننے والی تمام چیزوں سے پرہیز کرنی چاہیے ڈپریشن اور ٹینشن کا شکار نہیں ہونا چاہیے او ر علاج کے طور پرڈاکٹر کی ہدایت کے مطابق اینٹی الرجک ادویات ان ہیلر اور انجکشن استعمال کیے جاسکتے ہیں انھوں نے بتایا کہ اس بیماری کے حوالے سے زیادہ سے زیادہ عوام میں شعور اجاگر کرنے کی ضرورت ہے اور وہ احتیاطی تدابیر مستقل علاج اور پرہیز کے ذریعے اس بیماری پر قابو پاسکتے ہیں .

وحدت نیوز(حیدرآباد) صوبہ سندھ کی ورکنگ کمیٹی کی استحکام پاکستان و امام مہدی عج کانفرنس کے انتظامی امور کے حوالے سے ایک اہم منٹنگ صوبہ سندھ کی رابطہ سیکرٹری محترمہ سیمی کے گھر منعقد ہوئی جسمیں محترمہ  کنیز الحسن جوادی سیکرٹری صوبہ سندھ کی شعبہ تنظیم سازی نے بھی شرکت کی۔میٹنگ میں مرکزی سیکرٹری  تنظیم  سازی مہدی عابدی اور صوبہ سندھ کے سیکرٹری  نشرواشاعت برادر ندیم جعفری نے بھی شرکت کی۔میٹنگ میں مہدی عابدی نےاستحکام پاکستان و امام مہدی کانفرنس کے انتظامی امور کے حوالے سے تفصیلات  سے آگاہ کیا اور صوبہ سندھ کی مسئولین کو انکی ذمہ داریوں سے آگاہ کیاجبکہ محترمہ سیمی اور محترمہ کنیز جوادی نے سندھ میں شعبہ خواتین کی رابط مہم کے حوالے سے آگاہ کیااور مجلس وحدت مسلمین شعبہ خواتین سندھ کی جانب سے  طرف سے مکمل تعاون کی یقین  دہانی کروائی ۔

مجلس وحدت مسلمین پاکستان

مجلس وحدت مسلمین پاکستان ایک سیاسی و مذہبی جماعت ہے جسکا اولین مقصد دین کا احیاء اور مملکت خدادادِ پاکستان کی سالمیت اور استحکام کے لیے عملی کوشش کرنا ہے، اسلامی حکومت کے قیام کے لیے عملی جدوجہد، مختلف ادیان، مذاہب و مسالک کے مابین روابط اور ہم آہنگی کا فروغ، تعلیمات ِقرآن اور محمد وآل محمدعلیہم السلام کی روشنی میں امام حسین علیہ السلام کے ذکر و افکارکا فروغ اوراس کاتحفظ اورامر با لمعروف اور نہی عن المنکرکا احیاء ہمارا نصب العین ہے 


MWM Pakistan Flag

We use cookies to improve our website. Cookies used for the essential operation of this site have already been set. For more information visit our Cookie policy. I accept cookies from this site. Agree