The Latest

وحدت نیوز(ملتان) علامہ اقتدار حسین نقوی کی ایس ایس پی انوسٹی گیشن سے ملاقات، القدس ریلی کے انتظامات فائنل ۔علامہ اقتدار حسین نقوی کا کہنا تھا کہ ہم اس ملک اور اس کے قانون کے محافظ ہیں ، ہم قانون شکن نہیں ہیں ، یوم القدس کی منظم ریلی فلسطینی اور کشمیری مسلمانوں کے ساتھ اظہار یکجہتی ہوگا۔ ریلی نماز جمعہ کے بعد امام بارگاہ شاہ یوسف گردیز سے شروع ہوگی اور گھنٹہ گھر چوک پر اختتام پذیر ہوگی۔ اسلام ٹائمز۔ مجلس وحدت مسلمین کے وفد کی صوبائی سیکرٹری جنرل علامہ اقتدار حسین نقوی کی قیادت میں یوم القدس کے سلسے میں ایس ایس پی انوسٹی گیشن ملتان ربنواز تلہ سے ملاقات۔

ملاقات کے دوران ملتان میں ہونے والی القدس ریلی کے انتظامات کو حتمی شکل دی گئی۔ اس موقع پر مجلس وحدت مسلمین کے سیکرٹری سیاسیات مہر سخاوت علی اور صوبائی ترجمان ثقلین نقوی کے علاوہ آئی ایس او ملتان کے صدر شہریار حیدر، عاطف حسین ، شعیب جعفری اور شیعہ علما کونسل کے رہنما باقر علی اور علی سجاد نقوی بھی موجود تھے۔ ملاقات کے دوران طے پایا  کہ ریلی میں بچے، بزرگ اور خواتین شریک نہیں ہوں گی۔ ملتان کی مرکزی ریلی حسب سابق تحریک آزادی القدس کے پلیٹ فارم سے امام بارگاہ شاہ یوسف گردیز سے گھنٹہ گھر تک نکالی جائے گی۔

انتطامیہ نے تعاون کی یقین دہانی کراتے ہوئے کہا کہ حالات کو مدنظر رکھتے ہوئے حکومتی ایس او پیز پر عملدرآمد کیاجائے، اس موقع پر علامہ اقتدار حسین نقوی کا کہنا تھا کہ ہم اس ملک اور اس کے قانون کے محافظ ہیں ، ہم قانون شکن نہیں ہیں ، یوم القدس کی منظم ریلی فلسطینی اور کشمیری مسلمانوں کے ساتھ اظہار یکجہتی ہوگا۔ ریلی نماز جمعہ کے بعد امام بارگاہ شاہ یوسف گردیز سے شروع ہوگی اور گھنٹہ گھر چوک پر اختتام پذیر ہوگی۔



وحدت نیوز(کراچی)مجلس وحدت مسلمین سندھ سیکریٹریٹ سولجر بازار میں شب 27رمضان المبارک کی مناسبت سے ایس او پیز کو مدنظر رکھتے ہوئے مختصر پیمانے پراعمال منعقد کئے گئے ۔ اس موقع پر درس سے خطاب کرتے ہوئے شہید قائد علامہ عارف حسین الحسینی کے ساتھی اور مجلس وحدت مسلمین کے مرکزی رہنما ء علامہ مرز ا یوسف حسین نے ’قرآن کی اہمیت ‘ پر گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ قرآن مجید کی تلاوت کا اجر ماہ رمضان میں بہت زیادہ ہے ۔ تاہم قرآن مجید کو سمجھ کر پڑھناچاہیئے ۔ مسلمانوں کی نجات قرآن سے وابستگی میں ہے ۔

انہوں نے بتایا کہ شہید قائد علامہ عارف حسین الحسینی نے 22 تا 27 رمضان المبارک کو ہفتہ قرآ ن کے عنوان سے متعارف کروایا اور شیعہ اور سنی مکتب فکر کو اس کے ذریعے قرآن فہمی پر اکٹھا کیا ۔ تاہم شہید قائد کے دیگر اقدامات کی طرح اس عمل کو بھی پس پشت ڈال دیا گیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ شہید قائد علامہ عارف حسینی عظیم رہنماء تھے ۔ ان کے بعد اب تک ایسا لیڈر ہ میں میسر نہیں ہوا ۔ علامہ مرزا یوسف حسین نے کہا کہ قیادت دنیا کے لئے نہیں بلکہ صرف اللہ کے لئے ہونی چاہیئے ۔ انہوں نے کہا کہ شیعہ قوم کا امتیاز یہ ہے کہ وہ اچھے کو اچھا اور برے کو برا کہتی ہے ۔

 علاوہ ازیں انہوں نے یوم القد س کے حوالے سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ مقبوضہا بیت المقدس میں اسرائیل کے سالوں کے ظلم و ستم کے باوجود تحریک آزادی القدس روز بروز ترقی کررہی ہے ۔ تاہم اسلامی دنیا بالخصوص عرب ممالک کے حکمرانوں کے غاصب اسرئیل سے خیانت پر مبنی تعلقات فلسطین کاز کے لئے نقصان کا باعث ہیں ۔ ایسے وقت میں مسلم عوام کی ذمہ داری ہے کہ قدس کی آزادی کے لئے سال بھر بالعموم اور جمعتہ الوداع کے روز اسرائیل سے بیزاری اور فلسطینی عوام سے اظہار یکجہتی کو فرض سمجھ کر انجام دیں ۔

 دریں اثنا ء قرآن کے اعمال اور دعائے جوشن کبیر کی تلاوت برادر شبیر حسینی نے کی ۔ اس موقع پر سحری کا اہتمام کیا گیا ۔ پروگرام میں   سابق رکن سندھ اسمبلی ریٹائرڈ میجر قمر عباس رضوی ،ایم ڈبلیو ایم ضلع سینٹرل کے ڈپٹی جنرل سیکریٹری مولانا ملک غلام عباس  اور ایم ڈبلیو ایم کے ذمہ داران اور کارکنان نے شرکت کی۔ پروگرام کے اختتام میں برادر احمر کے بھائی اور علامہ امین شہیدی کے بھائی اور تمام مرحومین کے لیے فاتحہ خوانی گئی۔

وحدت نیوز(لاہور) مجلس وحدت مسلمین شعبہ خواتین کی مرکزی سیکریٹری جنرل اور ممبر پنجاب اسمبلی محترمہ سیدہ زھرا نقوی نےعالمہ محترمہ سکینہ مھدوی صاحبہ سے ان کی رہائشگاہ پر ملاقات کی اور ان کے بھائی یحییٰ جعفری کے انتقال پر تعزیت اور افسوس کا اظہار کیا اس موقع پر ان کے ساتھ ایم ڈبلیو ایم شعبہ خواتین لاھور کی سیکرٹری جنرل محترمہ حنا تقوی بھی موجود تھیں۔ سیدہ زھرا نقوی اور سیدہ حنا تقوی نے مرحوم کے ایصال ثواب کے لیے فاتحہ خوانی کی اور ان کی مغفرت کی دعا کی۔

وحدت نیوز(لاڑکانہ) مجلس وحدت مسلمین پاکستان ضلع لاڑکانہ اور آئی ایس او لاڑکانہ ڈویژن کی طرف سے جمعة الوداع یوم القدس کے حوالے سے پریس کانفرنس منعقد کی گئی جس سے مولانا محمد علی شر نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ قبلہ اول پہ ناجائز اسرائیلی قبضہ اور نہتے فلسطینی مسلمانوں پر عرصہ دراز سے ظلم و بربریت کسی صورت قبول نہیں ہےہم کربلائی حسینی اور مکتب اہلبیت کے پیروکار ہیں یہ مکتب ہمیں ظالم سے ٹکرانے اور مظلوم کی حمایت کا درس دیتا ہےہماری یہ ظالم مخالف تحریک جو آزادی قدس کی تحریک ہے رنگ لائے گی عنقریب وقت کا فرعون اسرائیل اپنے سرپرست امریکہ اور اپنے تمام اتحادیوں سمیت تباہ و  برباد ہوگا ہمارا قبلہ اول اور فلسطین آزاد ہوگا۔

انہوں نے مزید کہا کہ یوم علی ع کے موقعے پہ عزاداری اور عزاداروں کے خلاف جو سندہ حکومت کی طرف سے کارروائیاں کی گئیں اسکی مذمت کرتے ہیںانکی یہ شرمناک حرکت ایک سوالیہ نشان ہے۔اس موقع پر ایم ڈبلیو ایم کے ضلعی سیکریٹری جنرل برادر عبدالرزاق جلبانی ،تحصیل رتوڈیرو کے سیکریٹری جنرل برادر سردار علی چانڈیو، آئی ایس او لاڑکانہ ڈویژن کے جنرل سیکریٹری برادر باغ علی جلبانی،مولانا حبدار علی چانڈیو، مزمل حسین،لحاق احمد، مسلم حسین و دیگر شریک تھے۔

وحدت نیوز(ٹنڈومحمد خان) مجلس وحدت مسلمین ضلع ٹنڈو محمد خان اور امامیہ اسٹوڈنٹس آرگنائیزیشن ٹنڈو محمد خان کی جانب سے حمایت مظلومین فلسطین و کشمیر کے عنوان پرپریس کلب ٹنڈو محمدخان میں ایک پریس کانفرنس کی گئی۔ جس میں شرکاء کا کہنا تھا کہ رمضان المبارک کا آخری جمعہ فلسطینی اور کشمیری مسلمانوں سمیت دنیا بھر کے مظلومین کی حمایت میں عالمی یوم القدس کے طور پر منایا جائے گا۔ مظلوم کی حمایت اور ظالم کی مخالفت ہمارے منشور کا حصہ ہی نہیں بلکہ شرعی فریضہ بھی ہے۔اگر مسلمان حکمران اللہ تعالیٰ کے اس حکم کی تعمیل کرتے تو آج دنیا کے کسی بھی حصے میں مسلمانوں غیر مسلم حکومتوں کے مظالم کا شکار نہ ہوتے۔

مقررین نے کہا کہ کشمیر اور فلسطین میں مسلمانوں پر ڈھائے جانے والے مظالم پر عالم اسلام کی خاموشی امت مسلمہ کی بے حسی پر دلالت کرتی ہے, ہر باشعور مسلمان یوم القدس کے موقع پر ظلم کے خلاف آواز بلند کرتے ہوئے بھارت، اسرائیل اور امریکہ سے نفرت و بیزاری کا اظہار کرے۔ صدر ٹرمپ اپنے عرب اتحادیوں کے ساتھ مل کر ڈیل آف سنچری کے نام پر مسلمانوں کا قبلہ اول یہودیوں کے حوالے کرنے کا مصمم ارادہ کر چکے ہیں۔ صیہونیوں کے غاصبانہ قبضے کے خلاف امت مسلمہ کو متحد ہونا ہوگا۔

 

وحدت نیوز(کوئٹہ) فلسطین فاؤنڈیشن بلوچستان کے زیر اہتمام مظلوم فلسطینی عوام سے اظہار یکجہتی کیلئے جماعت اسلامی کے صوبائی دفتر میں منعقدہ ”یوم القدس کانفرنس“ کا انعقاد کیا گیا جس سے امیر جماعت اسلامی بلوچستان مولانا عبدالحق ہاشمی،مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی ترجمان اور فلسطین فاؤنڈیشن کے رہنما علامہ مقصودعلی ڈومکی، جمعیت علماء پاکستان کے میر عبدالقدوس ساسولی، مجلس وحدت مسلمین کے علامہ ولایت حسین،ممتازعالم دین مذہبی سکالر ڈاکٹرعطاء الرحمان،سابق سنیٹرقوم پرست رہنما میر مہیم بلوچ،،سنی سپریم کونسل کے پیر سید حبیب اللہ شاہ چشتی، پاکستان تحریک انصاف کے صوبائی رہنما نوابزادہ شریف جوگیزئی ، مسیحی رہنما پاسٹر ندیم رابرٹ، تنظیم اسلامی کے اقتدار احمد، فلسطین فاؤنڈیشن کے آغاسہیل شیرازی، امامیہ اسٹوڈنٹس کے احسان علی،، جماعت اسلامی کے مولانا عبدالحمید منصوری سمیت دیگرعلماء کرام وسیاسی رہنماؤں نے خطاب کیا۔

 اس موقع پر ایک مشترکہ اعلامیہ بھی جاری کیا گیا جس میں کہاگیاکہ قبلہ اول کی سرزمین فلسطین پر اولین حق فلسطینیوں کا ہے۔ مئی 1948 ء میں 14 لاکھ فلسطینیوں کو اپنی سرزمین سے بے دخل کر دیا گیا اور اسرائیل کی ناجائز ریاست وجود میں لائی گئی جو غیر قانونی عمل تھا۔ قبلہ اول کی آزادی کے لیے ایک لاکھ فلسطینی نوجوان اپنی جانوں کا نذرانہ پیش کر چکے ہیں۔ آج بھی امریکہ اور اسرائیل اس کوشش میں ہیں کہ مغربی کنارے کے مزید 30 فیصد رقبہ پر قبضہ کرلیا جائے۔ ہم فلسطین کے خلاف عالمی سازشوں کی مذمت کرتے ہیں اقوام متحدہ اور اقوام عالم فلسطینیوں کی قانونی جدوجہد کی زبانی حمایت کرتے ہیں تاہم مزید عملی اقدامات کی ضرورت ہے۔

مقررین نے کہا کہ فلسطین،کشمیر سمیت مقبوضہ مسلم علاقوں کی آزادی کی راہ میں سب سے بڑی رکاوٹ عالم اسلام کی نااتفاقی اور اسلام دشمن قوتوں پر بھروسہ ہے،ملک میں موجود سیکولر ازم اورلبرل ازم کی دلدادہ ایلیٹ کلاس اور مقتدر طبقہ پاکستان میں اسلام کو پھلتا پھولتا نہیں دیکھنا چاہتا اس کے باوجود وہ مسلمانوں کے دل سے اسلام اور پیغمبر اسلام ﷺ کی محبت کو کم نہیں کرسکا۔اسلام دشمن قوتیں مسلمانوں کو جمہوری طریقے سے بھی آگے بڑھنے سے روک رہے ہیں۔ مغرب کا رویہ بین المذاہب ہم آہنگی اور عالمی امن کیلئے تباہ کن اور دنیا کو جنگ کی آگ میں جھونکنے کی سازش ہے، امت کے اجتماعی مفاد کیلئے اسلامی ممالک کے حکمرانوں کو امریکہ و مغرب کی غلامی چھوڑ کر اتحاد عالم اسلامی کیلئے کوشش کرنا ہوگی۔فلسطینی عوام کو دربدرکرنے اورقبلہ اول کاسوداکرنے کیلئے ڈیل آف سینچری کے نام سے شرمناک منصوبہ شروع کیا گیا ہے ہم اسے مستردکرتے ہیں۔

انہوں نے کہاکہ رمضان اور قرآن کا اصل مقصد انسان کوزندگی کے ہر معاملے میں اپنے پروردگار کی رضا کے راستہ پر چلانا ہے،رمضان تربیت اور اصلاح کا مہینہ ہے تاکہ انسان سال کے باقی گیارہ ماہ بھی رمضان میں حاصل کی گئی تربیت کے مطابق گزار کر اپنے مالک کی رحمتوں اور مغفرتوں کو حاصل کرسکے۔اگر کسی مسلمان کے دل میں روزہ رکھنے کے باوجود کسی بھوکے اور پیاسے کی بھوک پیاس دور کرنے، کسی پریشان حال کی پریشانی کو بانٹنے اور کسی تنگ دست کی تنگ دستی دور کرنے کا جذبہ پیدا نہیں ہوتا تو وہ سمجھ لے کہ اس نے روزے کے حقیقی مقصد کو پورا نہیں کیا۔

وحدت نیوز(نواب شاہ) مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی ڈپٹی سیکریٹری جنرل علامہ مختار احمد امامی نے کہا ہے کہ قدس کی آزادی ہی حاج قاسم سلیمانی کی شہادت کا انتقام ہے، شہید راہ قدس حاج قاسم سلیمانی کی شہادت نے قدس ایشو کو اور بھی گرما دیا ہے۔ نوابشاہ پریس کلب میں صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ اسرائیل کی جعلی نام نہاد ریاست رہبر معظم آیت اللہ خامنہ ای کی 25 سال کی پیشن گوئی سے پہلے ہی صفحہ ہستی سے مٹ جائے گی۔ علامہ مختار امامی نے مزید کہا کہ امام خمینی نے جمعتہ الوداع کو یوم القدس سے منسوب کرکے مسئلہ فلسطین کو ہمیشہ کے لئے زندہ کردیا، امام خمینی نے دنیا کے مسلمانوں کو بیدار کیا۔

ان کا کہنا تھا کہ امام خمینی نے بتایا کہ اسرائیل کا وجود دنیا کے لئے ناسور ہے، فلسطینی پرامن مسلمان ہیں، ان کے خلاف دہشت گردی کا کوئی ثبوت نہیں، وہ آج بھی صہیونی ریاست کی جانب سے دیشت گردی کا شکار ہیں۔ علامہ مختار امامی نے کہا کہ مزاحمت کی تحریک ایران، عراق، لبنان، فلسطین، افریقا، یمن، شام، بحرین، پاکستان، افغانستان اور کشمیر سمیت دنیا کے کونے کونے تک پہنچ چکی ہے، اسی مزاحمت کے نتیجے میں اسرائیل محاصرے میں آگیا ہے، امریکا شکست کھا رہا ہے، چالیس سال کے طویل عرصے کے بعد مسلمانوں کو آیت اللہ خامنہ ای کی صورت میں ایسی قیادت ملی، جس نے عالمی استکبار کے تمام منصوبوں کو خاک میں ملا دیا۔

وحدت نیوز(لاہور) مجلس وحدت مسلمین کے زیر اہتمام حمایت مظلومینِ فلسطین کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے مسلم لیگ قاف کے رہنما سینٹر کامل علی آغا نے کہا کہ یہود ونصاری کے ناپاک عزائم کو کبھی کامیاب نہیں ہونے دیا جائے گا۔ استکباری طاقتوں کی رعونت پوری دنیا کے امن کیلئے خطرہ بن چکی ہے، خمینی بت شکن کی کوششوں کی بدولت آج دنیا بھر میں فلسطین کے حق میں آواز بلند ہو رہی ہے، یہ آواز اسی انداز سے دنیا کے کونے کونے تک پھیلے گی۔

جماعت اسلامی کے نائب امیر لیاقت بلوچ نے القدس سمینار کے انعقاد پر مجلس وحدت مسلمین کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ ناجائز صیہونی ریاست کیخلاف آج دنیا بھر میں نفرت کا اظہار کیا جا رہا ہے، مشکل کی اس گھڑی میں ہم مظلومین فلسطین کیساتھ کھڑے ہیں۔انہوں نے کہا کہ صدی کی ڈیل کے نام پر اسرائیل کو  تحفظ دینے کی جو کوشش کی جا رہی ہے وہ قابل مذمت ہے، قاسم سیلمانی ایک دلیر سپاہی تھے، جنہوں نے اپنی زندگی القدس کی آزادی کیلئے وقف کر رکھی تھی، ایرانی قوم میں امام خمینی نے جو انقلابی روح پھونکی ہے وہ آج بھی ان کے جسموں میں زندہ ہے، مسلمانوں کے قبلہ اول کے نام پر امت مسلمہ کو متحد ہونا ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ کشمیر ہماری شہ رگ حیات ہے، غیر مقامی لوگوں اور ہندووں کو وہاں آباد کر کے مقامی لوگوں کو بے دخل کرنے کے منصوبے کی شدید مذمت کرتے ہیں۔

مجلس وحدت مسلمین کے مرکزی ڈپٹی سیکرٹری جنرل علامہ احمد اقبال رضوی نے کہا اسرائیل ہمیشہ عالم اسلام کی پیٹھ پر وار کرتا آیا ہے، لیکن ڈیل آف سنچری کے ذریعے اس نے مسلمانوں کے سینے میں خنجر گھونپنے کی کوشش کی ہے۔علامہ احمد اقبال رضوی کا کہنا تھا کہ یوم القدس اس حکمت و بصیرت کا نام ہے جس نے ساری دنیا کے مسلمانوں کے دلوں میں قدس کو ہمیشہ زندہ رکھنا ہے۔ پاکستانی قوم نے اپنے عمل سے یہ ثابت کیا کہ وہ ظالموں کی مخالف اور مظلوموں کی حمایتی ہے۔

معروف عالم دین اور اسکالر علامہ محمد امین شہیدی نے کہا کہ قدس وہ لکیر ہے جو حقیقت میں اسلام کا دائرہ کار ہے.اسرائیلی فلسطینیوں کی حمایت کے لبادے میں انکے بچوں کو خون میں غلطاں کرتا ہے چونکہ وہ جانتا ہے فلسطینیوں کا معاملہ ایسا ہے کہ کوئی بھی بشر ان کی حمایت کرنے سے قاصر نہیں رہے گا یہاں تک کے منافق ترین ممالک بھی فلسطینیوں کی حمایت پر مجبور ہیں۔آج امریکہ کی پوری کوشش ہے کہ ڈیل آ سینچری کے ذریعے فلسطینیوں کا سودا کر لیا جائے اور بے حس مسلمانوں کو فلسطین کے موضوع پر خاموش رکھا جائے۔

انہوں نے کہا کہ یہ امام خمینی کے قول کا نتیجہ ہے کہ اب تک ڈیل آف سینچری کامیاب نہیں ہو سکی کیونکہ خمینی کی آواز نے باوقار مسلمانوں کے دلوں کا جھنجھوڑا ہے۔ایک دور تھا چھ عرب ممالک اسرائیل سے ہار کر زمینیں انکے حوالے کر دے آتے تھے۔ لیکن اب تل ابیب سے 80 کلو میٹر پر فلسطینیوں کے حامیوں کی موجودگی نے اسرائیل کی نیندیں برباد کر رکھی ہے. اگر ہم وہاں نہیں جا سکتے تو کم اَ زکم یہاں آواز بلند کریں۔ فلسطینی ایشو کو َزندہ رکھنا ہی سب سےبڑی جنگ ہے۔آج میڈیا وار ہے، میڈیا وار ایکچول وار سے زیادہ مؤثر ہے۔

عوامی تحریک کے سیکرٹری جنرل خرم نواز گنڈہ پور نے کہا ہے کہ القدس زمینی مسئلہ نہیں یہ روح کا معاملہ ہے۔ پہلی اور دوسری جنگ عظیم کے بعد یہ اسلام اور کفر کا معرکہ ہے۔ فلسطین میں صیہونی تسلط قائم کرنے کیلئے وہاں یہودیوں کو آباد جبکہ مقامی مسلمانوں کو بے دخل کیا جا رہا ہے، جو سراسر ناانصافی اور بدترین ظلم ہے۔ انہوں نے کہا کہ فلسطینیوں کے جذبہ شہادت کو دنیا کی کوئی طاقت شکست نہیں دے سکتی۔

 آئی ایس او کے مرکزی صدر عارف حسین الجانی نے کہا کہ امریکہ کی پوری کوشش ہے کہ ڈیل آف سینچری کے ذریعے فلسطینیوں کا سودا کر لیا جائے اور بے حس مسلمانوں کو فلسطین کے موضوع پر خاموش رکھا جائے۔ انہوں نے کہا کہ فلسطین کے ایشو کو زندہ رکھنا ہی ایک بڑی کامیابی ہے۔

ایم ڈبلیو ایم کی مرکزی رہنما سیدہ زہرا نقوی نے کہا کہ مظلومین کے حق میں آواز بلند کرنا ہماری شرعی ذمہ داری ہے، دنیا کی کوئی طاقت ہمیں ہمارے اصولی موقف سے ایک انچ بھی پیچھے نہیں ہٹا سکتی۔ کانفرنس سے ایم ڈبلیو ایم کے مرکزی رہنما سید اسد نقوی اور حنا تقوی کے علاوہ دیگر مقررین نے بھی خطاب کیا۔

جمعۃ الوداع یوم القدس، مظلوموں کا دن

وحدت نیوز(آرٹیکل)ماہ رمضان المبارک کا آخری جمعہ جسے عام زبان میں جمعۃ الوداع کہا جاتا ہے ۔ جمعہ کا دن ہفتہ کے تمام ایام میں سردار کی حیثیت رکھتا ہے ۔ پھر رمضان المبارک جیسے متبرک اور روحانی مہینہ میں آنے والا آخری جمعہ مسلمانوں کے درمیان زیادہ فضیلت اور با برکت تصور کیا جاتا ہے ۔ یہ جمعہ ہمیشہ ایسے ایام میں آتا ہے کہ جب رمضان المبارک کے آخری عشرے کی طاق راتوں یعنی شب ہائے قدر کا سلسلہ جاری ہوتا ہے اور اس کے اختتام یا درمیان میں جمعۃ الوداع آتا ہے ۔ یہ دن مذہبی فضیلت اور عبادت کے لحاظ سے انتہائی اہمیت کا دن قرار دیا گیا ہے ۔ جہاں اس دن کو دنیا بھر کے مسلمان مذہبی اور عقیدتی رسوم انجام دیتے ہیں وہاں اس دن کی اہمیت عالمی سطح پر ’’یوم القدس‘‘ کے عنوان سے مزید بڑھ گئی ہے ۔

یعنی جمعۃ الوداع کو یوم القدس کے طور پر منایا جانا نہ صرف عالم اسلام کے لئے بلکہ پوردی دنیا کے لئے اس دن کی اہمیت کو اجاگر کرتا ہے ۔یوم القدس سے مراد یقینا مسلمانوں کے قبلہ اول بیت المقدس او ر انبیاء علیہم السلام کی سرزمین مقدس فلسطین ہی ہے ۔ جی ہاں وہی فلسطین کہ جہاں ہزاروں انبیاء علیہم السلام کی آمد رہی اور پھر معراج کے لئے سفر مبارک کے وقت پہلے آپ (ص) کو بھی مسجد حرام سے مسجد اقصیٰ جو کہ سر زمین فلسطین پر واقع ہے یہاں لایا گیا تھا ۔

سرزمین مقدس فلسطین اور اس کے باسی سنہ 1948ء سے عالمی سامراج کی شیطانی چالوں کا نشانہ بن کر یہاں قائم کی جانے والی ایک یہودیوں کی غاصب اور جعلی ریاست اسرائیل کے شکنجہ میں ہیں ۔ یہاں کے باسی گذشتہ ایک سو برس سے اس زمین پر صہیونیوں کی مکاریوں اور فریب کاریوں کا سامنا کرتے آئے ہیں ۔ صہیونیوں کے مقاصد میں جہاں فلسطین پر یہودیوں کے لئے علیحدہ ریاست قائم کرنا تھا وہاں ساتھ ساتھ قبلہ اول بیت المقدس پر بھی صہیونی اپنا مکمل تسلط چاہتے ہیں ۔ اگرچہ تاحال صہیونی اپنی اس چال میں کامیاب نہیں ہو پائے ہیں ۔

یہی وجہ ہے کہ صہیونیوں کی جعلی ریاست اسرائیل کے پشت پناہ امریکی حکومت اور صدر ٹرمپ مسلسل کوشش کر رہے ہیں کہ بیت المقدس پر صہیونیوں کا مکمل تسلط قائم کر دیا جائے اس گھناءونے فعل کو انجام دینے کے لئے امریکی حکومت نے صدی کی ڈیل نامی منصوبہ کو عملی جامہ پہنانے کی کوشش کی ہے تاہم یہ منصوبہ بھی تاحال فلسطینیوں کی مزاحمت اور استقامت کے باعث ناکام ہو چکا ہے ۔فلسطین موجودہ حالات میں طول تاریخ کے اعتبار سے سنگین ترین دور سے گزر رہا ہے ۔ فلسطین کا سودا کرنے کی کوشش کی جا رہی ہے ۔ قبلہ اول بیت المقدس پر امریکی سربراہی میں عرب حکمرانوں کے تعاون سے سودے بازی کی کوشش بھی جاری ہے ۔ ایسے حالات میں فلسطینی عوام نے تمام سازشوں کا مقابلہ کرنے کی ٹھان رکھی ہے ۔

ماہ رمضان المبارک کا آخری جمعہ یعنی یوم القدس جو نہ صرف فلسطین کے مظلوموں کی حمایت کا دن ہے بلکہ قبلہ اول بیت المقدس کی بازیابی کی تحریک میں ایک کلیدی حیثیت کا حامل بھی ہے ۔ اس کے ساتھ ساتھ یوم القدس ایک ایسا دن ہے جس کو علماء اور فقہا ء نے اسلام اور مسلمین کا دن قرار دیا ہے ۔ ایران میں اسلامی انقلاب کے بانی امام خمینی ;231; نے رمضان المبارک کے آخری جمعہ کو یوم القدس قرار دیتے ہوئے اس دن کو دنیا بھر کے مظلوموں کا دن قرار دیا ہے ۔ مظلوم فلسطین میں ہو یا کشمیر میں ۔ یہ یوم القدس سب مظلوموں کا دن ہے ۔ یہ دن فلسطین کا دن ہے، یہ دن کشمیر کا دن ہے،یہ دن افغانستان کے ان مظلوموں کا دن ہے جن کو داعش جیسے سفاک دہشت گردوں نے حالیہ دنوں اسپتالوں میں قتل کیا ہے ۔ یہ دن عرا ق کا دن ہے کہ جہاں عالمی دہشت گرد امریکہ کے ہاتھوں ہزاروں عراقیوں کا قتل ہو اہے ۔ یہ دن یمن کا دن ہے، کہ جہاں گذشتہ پانچ برس سے انسانی زندگیاں موت کی لکیر تک جا پہنچی ہیں اور اس کا سبب امریکی سرپرستی میں عرب حکمرانوں کی یمن پر مسلط کردی جنگ ہے ۔

حقیقت میں یوم القدس مسلمانوں اور انسانیت کے اتحاد و یکجہتی کا دن ہے ۔ یہ دن دنیا بھر کی ایسی اقوام کا دن ہے کہ جن پر عالمی سامراجی قوتوں نے ظلم و ستم روا رکھے ہیں ۔ یہ دن مظلوموں کا دن ہے ۔ یہ دن ظالم کے خلاف نفرت اور بیزاری کا دن ہے ۔ جمعۃ الوداع یوم القدس ایک ایسا عالمگیر دن ہے کہ جو فلسطین سے لے کر کشمیر تک کے مظلوموں کی داد رسی اور ان کے لئے ایک نئی امید کی کرن کی مانند ہے ۔ یوم القدس جہاں ملت فلسطین کو تقویت بخشتا ہے وہاں ساتھ سات مقبوضہ کشمیرکے ان مظلوم اور نہتے انسانوں کو بھی ایک نوید سحر سناتا ہے کہ جو گذشتہ ستر برس سے ہندوستان کی ریاستی جبر اور دہشت گردی کا شکار ہے ۔

 ایک طرف غزہ کی پٹی ہے کہ جو غاصب صہیونی ریاست اسرائیل کے ظلم اور شکنجہ کے باعث گذشتہ بارہ سال سے لاک ڈاءون کا شکار ہے تو دوسری طرف مقبوضہ کشمیر کی وادی ہے کہ جہاں ہندوستانی سامراج اور شیطان صفت مودی کے ظلم و بربریت کے باعث گذشتہ نو ماہ سے لاک ڈاءون ہے ۔آئیے اس برس یوم القدس کے دن پاکستان بھر میں متحد ہو کر فلسطین و کشمیر کے عوام سے بھرپور یکجہتی کریں ۔

فلسطین و کشمیر سے یکجہتی کرنابانی پاکستان قائد اعظم محمد علی جناح اور علامہ اقبال کے موقف سے تجدید کرنا ہے ۔ اسی طرح اسلامی نقطہ نگاہ سے علماء و فقہاء نے اس دن کو شرعی اور اخلاقی فریضہ بھی قرار دیا ہے ۔ یوم القدس ایک ایسا عالمگیر دن ہے کہ جس دن دنیا بھر کے با شعور او ر حریت پسند افراد بغیر کسی مذہب کی تفریق کے گھروں سے نکل کر دنیا بھر کے مظلوموں بالخصوص ملت مظلوم فلسطین کی حمایت میں نکلتے ہیں ۔ یہ دن نہ صرف مظلوموں کی حمایت کا دن ہے بلکہ ظالموں سے نفرت اور بیزاری کا دن ہے ۔

یوم القدس دنیا بھر کے حریت پسندوں کو درس دیتا ہے کہ ظالم کسی بھی شکل میں ہو کسی بھی قوم قبیلہ سے تعلق رکھتا ہو اس کے خلاف صدائے احتجاج بلند کی جائے اور مظلوم کسی بھی قوم قبیلہ رنگ ونسل سے ہو اس کی حمایت میں کھڑے ہونا چاہئیے ۔موجودہ حالات میں یوم القدس ایسے موقع پر آ رہا ہے کہ جب ایک طرف دنیا کو کورونا وائرس کا سامنا ہے لیکن ایسے حالات میں بھی دنیا کے غیور انسانوں کی طرح پاکستان کے غیور عوام نے فلسطین و کشمیر کے مظلوم اور نہتے عوام کو فراموش نہیں کیا ہے اور یوم القدس کے موقع پر مظلوموں کی حمایت کا سلسلہ جاری ہے ۔ ہم میں سے ہر فرد کی ذمہ داری ہے کہ ایک ذمہ دار شہری ہونے کی حیثیت سے جمعۃ الوداع یوم القدس کو فلسطین و کشمیر کے عوام سے یکجہتی کریں اور دنیا کی ظالم قوتوں کو یہ پیغام دیں کہ پاکستان کے عوام عالمی دہشت گرد امریکہ اور اس کی ناجائز اولاد اسرائیل سمیت ہندوستان جیسے پٹھوءوں کے خلاف ہیں اور فلسطین و کشمیر کے مظلوموں کے ساتھ ہیں ۔


تحریر: صابر ابو مریم
سیکرٹری جنرل فلسطین فاؤنڈیشن پاکستان
پی ایچ ڈی ریسرچ اسکالر، شعبہ سیاسیات جامعہ کراچی

وحدت نیوز(جیکب آباد) مجلس وحدت مسلمین پاکستان ضلع جیکب آباد اور آئی ایس اولاڑکانہ ڈویژن کی طرف سے جمعة الوداع یوم القدس کے حوالے سے پریس کانفرنس کی گئی جس سے مولانا حسن رضا غدیری اور ضلعی سیکریٹری جنرل نذیر حسین جعفری اور وسیم لطیف مہر نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ قبلہ اول پر ناجائز اسرائیلی قبضہ اور نہتے فلسطینی مسلمانوں پر عرصہ دراز سے ظلم و بربریت کسی صورت قبول نہیں ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہم کربلائی حسینی اور مکتب اہلبیتؑ کے پیروکار ہیں یہ مکتب ہمیں ظالم سے ٹکرانے اور مظلوم کی حمایت کا درس دیتا ہے۔ہماری یہ اسرائیل مخالف آزادی قدس کی تحریک ضروررنگ لائے گی۔ عنقریب وقت کا فرعون اسرائیل اپنے سرپرست امریکہ اور اپنے تمام اتحادیوں سمیت تباہ و برباد ہوگا ۔ہمارا قبلہ اول اور فلسطین آزاد ہوگا۔

انہوں نے مزید کہا کہ یوم علی ع کے موقعے پہ عزاداری اور عزاداروں کے خلاف جو سندہ حکومت کی طرف سے کارروائیاں کی گئیں اسکی مذمت کرتے ہیںانکی یہ شرمناک حرکت ایک سوالیہ نشان ہے۔اس موقع پر ایم ڈبلیو ایم کے تمام عہدیداران  و دیگر شریک تھے۔

Page 11 of 1049

مجلس وحدت مسلمین پاکستان

مجلس وحدت مسلمین پاکستان ایک سیاسی و مذہبی جماعت ہے جسکا اولین مقصد دین کا احیاء اور مملکت خدادادِ پاکستان کی سالمیت اور استحکام کے لیے عملی کوشش کرنا ہے، اسلامی حکومت کے قیام کے لیے عملی جدوجہد، مختلف ادیان، مذاہب و مسالک کے مابین روابط اور ہم آہنگی کا فروغ، تعلیمات ِقرآن اور محمد وآل محمدعلیہم السلام کی روشنی میں امام حسین علیہ السلام کے ذکر و افکارکا فروغ اوراس کاتحفظ اورامر با لمعروف اور نہی عن المنکرکا احیاء ہمارا نصب العین ہے 


MWM Pakistan Flag

We use cookies to improve our website. Cookies used for the essential operation of this site have already been set. For more information visit our Cookie policy. I accept cookies from this site. Agree