The Latest

وحدت نیوز(اسلام آباد) مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی سیکرٹری جنرل علامہ راجہ ناصر عباس جعفری نے وزیرستان اور بلوچستان میں دہشت گردی کے حالیہ واقعات میں قیمتی انسانی جانوں کے ضیاع پر افسوس کااظہارکرتے ہوئے ان بزدلانہ کاروائیوں کی شدید مذمت کی ہے۔انہوں نے کہا پاک فوج اور ملکی سلامتی کے اداروں کو دہشت گردی کا نشانہ بنانے والے ملک و قوم کے بدترین دشمن ہیں۔ان کا مقصد ملک کی سلامتی و استحکام کو نشانہ بنا کر ارض پاک کو کمزور کرنا ہے۔قوم ایسی بزدلانہ کاروائیوں سے مرعوب نہیں ہو گی۔ہم اس ملک کے باوقار اور غیرت مند بیٹے ہیں۔وطن کی نظریاتی و جغرافیائی حفاظت کا دفاع کرنے کے لیے ریاستی اداروں کے شانہ بشانہ کھڑے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ گزشتہ چند ماہ سے طے شدہ منصوبے کے ساتھ ملک کو عدم استحکام کا شکار کیا جا رہا ہے۔ اس سے قبل وطن عزیز میں فرقہ واریت کی راہ ہموار کرنے کی کوشش کی گئی۔پہلے مختلف مسالک کے مابین صدیوں سے موجود فروعی اختلافات کو ہوا دے کر ایک دوسرے سے خلاف صف آرا کرنے کی کوشش کی گئی۔کالعدم جماعتوں کے سرغنوں نے اپنے مذموم عزائم کی تکمیل کے لیے مذہبی منافرت کا پرچار کیا جسے شیعہ سنی مدبر اور بابصیرت علما نے دانشمندی سے ناکام بنایا۔

ان کا مزید کہنا تھاکہ اب شدت پسند عناصر ایک بار پھر اپنی کمین گاہوں سے نکل کراس ملک کے امن کو سبوتاژ کرنے پرتُلے ہوئے ہیں۔ اس ملک کے دفاع اور دہشت گردی کے خاتمے کے لیے کی ستر ہزار سے زائد قربانیاں دی گئیں ہیں جنہیں رائیگاں نہیں جانے دیا جائے گا۔ مٹھی بھر شرپسند عناصر کسی بڑے مغالطے کا شکار ہیں۔انہوں نے کہا کہ ان شا اللہ وہ دن دور نہیں جب اس ملک کے کسی کونے میں کسی دہشت گرد ،ملک دشمن کو چھپنے کی جگہ نہیں ملے گی اور ان کا عبرتناک انجام پوری دنیا دیکھے گی۔

وحدت نیوز(لاہور)مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی ڈپٹی سیکریٹری جنرل علامہ سید احمد اقبال رضوی نے صوبائی سیکریٹریٹ وحدت ہاؤس لاہور میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہاکہ لاہور، فیصل آباد، نارووال سمیت ملک بھر میں اربعین یعنی چہلم امام حسین علیہ السلام کے موقع پر پیدل چل کر جلوسوں میں شرکت کرنیوالوں کیخلاف مقدمات کے اندراج کا سلسلہ جاری ہے۔ ۔ نارووال میں سب سے زیادہ اندوہناک واقعہ پیش آیا، جہاں ڈی پی او ذوالفقار احمد کی ایماء پر ایس ایچ او تھانہ سٹی نارووال ریاض تاثیر چیمہ نے محلہ محمد پورہ میں چادر اور چاردیواری کا تقدس پامال کیا۔ جلوس میں شریک ہونیوالوں کی گرفتاری کیلئے خواتین اور بچوں پر تشدد کیا، نہ صرف یہ بلکہ لیڈی پولیس کی بجائے خود مرد اہلکار خواتین کو گھیسٹتے ہوئے لے گئے۔ ایس ایچ او نے خود قانون کو پائمال کیا۔ اختیارات سے تجاوز کیا اور اپنے اختیارات کا ناجائز استعمال کیا۔ یوں لگتا تھا کہ یہ نارووال نہیں بلکہ مقبوضہ کشمیر کا کوئی علاقہ ہے۔ اس موقع پر علامہ عبد الخالق اسدی سیکرٹری جنرل مجلس وحدت مسلمین پنجاب ،علامہ مبارک علی موسوی مرکزی رہنما مجلس وحدت مسلمین پاکستان، صوبائی رہنمارائے ناصر علی، سجاد نقوی،سید حسن رضا کاظمی ودیگر بھی موجود تھے ۔

انہوں نے کہاکہ متعصب ڈی پی او اور ایس ایچ او نے قانون شکنی کی، اپنے اختیارات کا ناجائز استعمال کیا، ہمارا مطالبہ ہے کہ فی الفور ڈی پی او نارووال ذوالفقار احمد، ایس ایچ او ریاض تاثیر چیمہ اور دیگر اہلکاروں کو معطل کرکے ان کیخلاف قانونی کارروائی عمل میں لائی جائے۔ ڈی ایس پی نے واقعہ کی انکوائری کی ہے اور انکوائری رپورٹ میں ڈی ایس پی نے واقعہ کا ذمہ دار ایس ایچ او کو قرار دیا ہے، لیکن ابھی تک ایس ایچ او کیخلاف کوئی کارروائی عمل میں نہیں لائی گئی۔ اس سے پولیس کی جانبداری واضح ہوتی ہے۔ جلوس ہائے عزا میں شرکت کرنا ہمارا قانونی اور آئینی حق ہے، پولیس ہمیں اس حق سے محروم نہیں کر سکتی، ایس ایچ او بتا سکتا ہے کہ اس نے کس قانون کے تحت عزاداروں کو جلوس میں شریک ہونے پر مقدمہ درج کیا، گرفتاریاں کیں، خواتین پر تشدد کیا،؟؟ یقیناً اس کے پاس اس کا کوئی جواز نہیں، سوائے اس کے اپنے اندرونی تعصب کے۔ اس لئے ہم پنجاب حکومت پر واضح کرتے ہیں کہ اپوزیشن جماعتیں پہلے ہی احتجاج پر سڑکوں پر نکلی ہوئی ہیں، اگر عزاداروں کیخلاف پنجاب بھر میں درج کئے گئے مقدمات ختم نہ کئے گئے تو پھر ملت جعفریہ پاکستان بھی سڑکوں پر ہوگی، پھر حکومت کیلئے اپوزیشن جماعتوں اور اہل تشیع کے مظاہرے کنٹرول کرنا مشکل ہو جائے گا اور حکومت یاد رکھے، ہم لاقانونیت کی حکومت نہیں چلنے دیں گے۔ یہ

ان کا کہناتھا کہ مقدمات غیر قانونی اور پرامن شہریوں پر ظلم کے مترادف ہیں، کسی بھی شہر میں اربعین واک کرنیوالوں نے کوئی نقصان نہیں کیا، کہیں بھی ٹریفک بلاک نہیں ہوئی، کہیں بھی پتہ تک نہیں ٹوٹا، نہتے عزادار، خواتین اور بچوں کے ہمراہ پیدل چل کر مرکزی جلوسوں میں شریک ہوئے ہیں، یہ کون سا جرم ہے کہ ہم اپنے ہی ملک میں پیدل بھی نہیں چل سکتے؟؟ جب تکفیری عناصر ریلیاں نکال رہے تھے، کافر کافر کے نعرے لگا رہے تھے، اس وقت حکومت اور یہ پولیس کہاں تھی، ان کی متنازع ریلیوں کیخلاف مقدمات درج کیوں نہیں کئے گئے؟ صرف پرامن عزادار ہی دکھائی دیتے ہیں؟ یہ قانون اور بنیادی انسانی حقوق کی کھلی خلاف ورزی ہے اور اس کی کسی طور اجازت نہیں دیں گے، اس لئے ہمارا مطالبہ ہے کہ تمام جھوٹے مقدمات خارج کئے جائیں اور گرفتار عزاداروں کو رہا کیا جائے بصورت دیگر ملک گیر سطح پر احتجاج کی کال دیدی جائے گی۔

انہوں نے مزید کہاکہ مجلس وحدت مسلمین نے ہمیشہ فرقہ واریت کی مخالفت کی ہے، ہم پرامن لوگ ہیں، لیکن حکومت ناجائز تنگ کرکے خود حالات خراب کرنا چاہتی ہے۔ ملک میں عوام مہنگائی، بےروزگاری اور دیگر معاشی مسائل سے پریشان ہے، ایسا لگ رہا ہے کہ حکومت اپنی نااہلی سے توجہ ہٹانے کیلئے ایسا کر رہی ہے، بلاوجہ عزاداروں کو تنگ کیا جا رہا ہے جس کی مذمت کرتے ہیں۔ حکومت مہنگائی کو کنٹرول کرے، عوام کی توجہ دوسرے ایشوز پر تقسیم نہ کرے اور ہم ملک میں حالیہ فرقہ وارانہ لہر کی بھی مذمت کرتے ہیں ، ہم نے محرم الحرام سے قبل ہی اس حوالے سے آگاہ کر دیا تھا، الحمد اللہ علماء متفق ہیں اور کوئی بڑا سانحہ نہیں ہوا، اسی طرح ہم متحد رہیں گے اور اپنے وطن کیخلاف ہر سازش ناکام بنائیں گے۔

آخر میں انہوں نے کہاکہ ہم ایک بار پھر واضح کرتے ہیں کہ فرقہ واریت کی لہر کو کنٹرول کیا جائے، تکفیریوں کو لگام دی جائے اور گرفتار عزاداروں کو فوری رہا کیا جائے اور مقدمات ختم کئے جائیں، اگر حکومت نے ہمارے مطالبات نہ مانے تو ملک گیر احتجاجی دھرنوں کی کال دیں گے. حکومت کو چاہیے کہ اس اثناء میں ملت جعفریہ کے تمام جائز مطالبات پورے کریں جبکہ اپوزیشن جماعتیں ملک بھر میں پہلے ہی احتجاج کر رہی ہیں مجبوراً ملت جعفریہ بھی سڑکوں پر نکل آئی تو حکومت وقت کیلئے کڑا وقت ثابت ہو سکتا ہے لہٰذا عقلمندی کا مظاہرہ کرتے ہوئے ملت جعفریہ کے تمام جائز مطالبات فوری طور پر تسلیم کیے جائیں ۔

وحدت نیوز(اسلام آباد) مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی ڈپٹی سیکرٹری جنرل سید ناصر شیرازی نے ملک میں بڑھتی ہوئی مہنگائی پر شدید تشویش کا اظہار کیا ہے۔انہوں نے کہا کہ مہنگائی کی موجودہ صورتحال نے عام آدمی کے رہن سہن کو شدید متاثر کیا ہے۔آمدن اور اخراجات میں عدم مطابقت سے مشکلات دن بدن بڑھتی جا رہی ہیں۔اشیائے خوردونوش کی قیمتوں میں مسلسل اضافہ انتظامی معاملات پر حکومتی گرفت کے کمزور ہونے کی دلالت کرتا ہے۔

ان کاکہنا تھاکہ آٹا،چینی،گھی،ادویات اور دیگر بنیادی ضروریات زندگی کی قیمتوں میں اضافے کا سارا ملبہ سرمایہ دار طبقے پر ڈال کر حکومت خود کو بری الزمہ نہیں ٹھرا سکتی۔عوام کو سہولیات کی فراہمی ریاست کی ذمہ داری ہے۔ قیمتوں میں ہوشربا اضافے نے عام آدمی کی زندگی کو اذیت ناک بنا دیا ہے۔موجودہ حکومت نے اگر حالات پر قابو نہ پایا تو اس کی مقبولیت کا گراف غیر معمولی حد تک گر جائے گا۔

انہوں نے کہا ملک کا ہر طبقہ مہنگائی کے ہاتھوں شدید مشکل کا شکار ہے۔ موجودہ حکومت اپنی انتظامی معاملات کو بہتر بناتے ہوئے عوامی مسائل پر توجہ دے۔تمام صوبوں کی ضلعی انتظامیہ کو متحرک کیا جائے کہ وہ خوردونوش اور روزمرہ معلومات کی اشیاءکی قیمتیوں کی جانچ پرتال کے عمل میں ذمہ دارانہ کردار ادا کریں اور اگر کوئی مافیا اس میں ملوث ہے تو اسے سخت سے سخت سزا دی جائے۔

وحدت نیوز(کراچی) پاکستان پیپلز پارٹی کی سندھ حکومت کی جانب سے مشیر وزیر اعلیٰ سندھ سید وقار مہدی اور صوبائی وزیر تعلیم سعید غنی پر مشتمل ایک وفد نے شیعہ علماءکونسل کے صوبائی دفتر میں ایس یو سی صوبہ سندھ کے صدر علامہ ناظر تقوی اور دیگر شیعہ علماءواکابرین سے ملاقات کی ۔

اس موقع پر ایم ڈبلیوایم صوبہ سندھ کے رہنما علی حسین نقوی، میر تقی ظفر،شیعہ علماءکونسل کے مرکزی رہنما علامہ شبیر حسن میثمی، مجلس ذاکرین امامیہ کے صدر علامہ نثار قلندری اور علامہ رضی حیدرزیدی بھی موجود تھے۔

حکومتی وفد کی جانب سے سندھ بھرمیں عزاداران حسینی پر قائم بےبنیاد مقدمات کے خاتمے اور تمام مسائل کے فوری حل کی یقین دہانی پر شیعہ علماءواکابرین نے باہمی مشاورت کے بعد وطن عزیز کے استحکام اور دشمن کی جانب سے پاکستان میں افراتفری پھیلانے کے منصوبے کو خاک میں ملانے کے لئےموجودہ ملکی صورتحال اور وسیع ترقومی مفادمیں  16اور 18اکتوبر کا احتجاج موخر کرنے کا اعلان۔

وحدت نیوز(کنب) چہلم شہدائے کربلا کے موقع پر ہزاروں عزاداروں کے خلاف جھوٹے مقدمات کے خلاف خیرپور ضلع کے 11مقامات پر اجتماعی گرفتاریوں کے لئے ہزاروں مومنین سڑکوں پر نکل آئے ۔ اس موقع پر کنب میں مظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی ترجمان مقصود علی ڈومکی نے کہا ہے کہ ہم جیلوں سے نہیں ڈرتے سلام ان عزاداروں پر جو سید سجاد ؑکی سنت ادا کرنے کے لئے تیار ہیں۔ اگر دین خدا کو ضرورت ہے تو عصر حاضر کے حسینی اور کربلائی حاضر ہیں۔

انہوں نے کہا کہ پرامن عزاداروں پر ایف آٸی آرز کا اندراج ملت جعفریہ کی مذہبی آزادی پر حملہ ہے۔ بابا گرونانک اور ہولی کی تقریب میں تعاون کرنے والے حکمران نواسہ رسول ص کے غم میں رکاوٹيں ڈال رہے ہیں۔ سندہ اور پنجاب میں سینکڑوں مقدمات کا اندراج ملت جعفریہ کو دیوار سے لگانے کی سازش ہے۔ اس موقع پر احتجاجی جلسے سے ایم ڈبلیو ایم سندھ کے رہنما علامہ محمد نقی حیدری، ضلعی سیکریٹری جنرل ایم ڈبلیو ایم خیرپور علامہ صفدر علی ملاح ،رئیس نٹار علی چانڈیو، رابطہ کونسل کے صدر سید جعفر شاہ نے خطاب کیا۔

وحدت نیوز(کراچی) مجلس وحدت مسلمین سندھ کے ترجمان علامہ مبشر حسن نے اشیائے خوردونوش وبجلی کی بڑھتی ہوئی قیمتوں پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے اسے حکومتی نااہلی قرار دیا ہے۔انہوں نے کہا کہ روزمرہ کے استعمال کی اشیاء کی قیمتوں میں دن بدن اضافہ کیا جا رہا ہے جو عوام کی مشکلات میں اضافے کا باعث ہے۔حکومت کے انتظامی معاملات پر گرفت ڈھیلی پڑ رہی ہے جس نے مہنگائی مافیا کے حوصلوں میں اضافہ کر رکھا ہے۔ حکومت کو چاہیے کہ وہ کرونا سے نمٹنے کے ساتھ ساتھ انتظامی معاملات پر بھی کڑی نظر رکھے تاکہ کسی کو قانونی شکنی کا موقعہ نہ مل سکے۔

ان کاکہنا تھا کہ حکومت کی نا اہلی کی وجہ سے مہنگائی بڑھنے کا جو لامتناہی تسلسل جاری ہے اس کی وجہ سے روزمرہ استعمال کی ہر چیز خوفناک حد تک مہنگی ہوچکی ہے اور غریب آدمی دو وقت کی روٹی کے حصول کے لئے ناجائز ذرائع اختیار کرنے پر مجبور ہے، وزیر اعظم سمیت تمام وزراء کے معاشی بہتری کے تمام تر دعوے طفل تسلی کے سوا کچھ نہیں۔

انہوں نے کہا کہ ن دوسری جانب یپرا کی جانب سے بجلی کی قیمتوں میں مزید اضافہ کراچی کے شہریوں پر ظلم ہے بجلی کی قیمتوں میں اضافے سے عوام مذید مشکلات کا شکار ہوں گے۔کے الیکٹرک کی من مانیوں کے پیچھے وفاقی و صوبائی حکومتوں کا گٹھ جوڑ شامل ہے۔کے الیکٹرک کا ادارہ پرائیوٹ ہونے کے بعد اربوں ڈالر سالانہ کما رہاہے جو غریب عوام کی جیبوں سے چوری کیا جاتا ہے۔ بجلی کی قیمتوں میں مزیداضافہ کو مسترد کرتے ہیں۔

علامہ مبشر حسن نے مزیدکہاکہ معاشی حب کراچی بحرانوں کی زد پر ہے شہر کی عوام ہر ماہ ایک نئے بحران کا سامنا کر تے ہیں آٹا،پانی و بجلی بندش،پیٹرول بحران کی شکار عوام اب مذید مشکلات جھیلے گی ساتھ ہی اشیائے خوردونوش اوربجلی کی قیمتوں میں اضافہ غریب عوام کی کمرتوڑ دے گا۔ حکمران خوف خدا کریں شہر مختلف علاقوں میں اب بھی بے انتہا لو ڈشیڈنگ کے با وجود عوام پر بجلی کی قیمتوں میں اضافہ کرکے عوام پر بجلی بم گرا یا جا رہا ہے جو ہر گز قبول نہیں کیا جائے گا۔وفاقی و صوبائی حکومتیں آٹا،سبزی سمیت بجلی کی قیمتوں میں کمی کا اعلان کرے اب تک موجودہ حکمران اپنے عوام کو ریلیف دینے میں ناکام رہی ہے۔

وحدت نیوز(اسلام آباد)مجلس وحدت مسلمین کے مرکزی ڈپٹی سیکرٹری جنرل علامہ احمد اقبال رضوی نے کہا ہے کہ ہندوستان پاکستان میں فرقہ واریت کے لئے سرگرم ہے، پاکستان کو کمزور کرنے کے لئے ہندوستان، امریکہ اور اسرائیل کا گٹھ جوڑ ہے۔

 اپنے ایک بیان میں علامہ احمد اقبال رضوی نے کہا کہ دشمن فرقہ واریت کے ذریعے سی پیک کے منصوبے کو ثبوتاژ کرنا چاہتا ہے۔ دہشت گردی کا دور ختم ہوگیا ہے، پاکستانی عوام دہشت گردی اور تکفیریت سے نفرت کرتی ہے۔ حکومت ایسے عناصر پر نظر رکھے جو ملک کے امن کو تباہ کرنے پر تلے ہوئے ہیں، ایسے لوگ اسلام اور پاکستان سے مخلص نہیں ہوسکتے۔

وحدت نیوز(پشاور) مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی ڈپٹی سیکرٹری جنرل علامہ سید احمد اقبال رضوی اور امامیہ اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن پاکستان کے مرکزی صدر عارف حسین الجانی نے مدرسہ جامعہ شہید عارف الحسینی پشاور میں بزرگ عالم دین علامہ سید جواد ہادی سے ملاقات کی، اس موقع پر ملکی و ملی ایشو پر گفتگو ہوئی۔ ایم ڈبلیو ایم کے مرکزی رہنماء علامہ سید احمد اقبال رضوی نے ملک کی موجودہ صورتحال اور خاص طور پر ملک میں جاری فرقہ وارانہ کشیدگی کے حوالے سے علامہ سید جواد ہادی سے مشاورت کی۔

وحدت نیوز(نارووال) مرکزی سیکریٹری جنرل مجلس وحدت مسلمین شعبہ خواتین اورایم پی اے سیدہ زھرا نقوی کی خصوصی ھدایات پر ایم ڈبلیو ایم شعبہ خواتین کے وفد کا نارووال دورہ ، متاثرہ خواتین سے ملاقات نارووال میں پولیس کے جارحانہ تشدد کے واقعے میں متاثرہ خواتین سے ایم ڈبلیو ایم شعبہ خواتین کی مرکزی سیکرٹری اطلاعات عرفا عباس نے وفد کے ہمراہ گلستان زھرا امامبارگاہ نارووال میں ملاقات کی ۔

پولیس کے خواتین پر تشدد اور بے حرمتی کی مذمت کرتے ہوئے عرفا عباس کا کہنا تھا کہ درندہ صفت پولیس افسر نے خواتین اور بچیوں پر تشدد کرکے یزیدی فعل انجام دیا ہے اور پولیس کی وردی کو داغدار کیا ہے۔ انھوں نے کہا کہ اس واقعے نے ایک آزاد و خود مختار ریاست اور ایک مقبوضہ ریاست کے فرق کو ختم کر دیا ہے حکام بالا کو اس واقعے کا نوٹس لے کر مجرمان کو کیفرکردار تک پہنچانا ہوگا اور مظلوموں کو انصاف کی فراہمی یقینی بنانی ہوگی تاکہ ریاست مدینہ کے قیام کی عملی تصویر واضح ہوسکے۔

 انھوں نے متاثرہ خواتین کو رکن پنجاب اسمبلی سیدہ زھرا نقوی کا خصوصی پیغام پہنچاتے ہوئے کہا کہ ہم اس مشکل وقت میں آپکے ساتھ ہیں اور واقعے کے خلاف ہر فارم پر آواز بلند کی ہے اور انصاف کی فراہمی تک کرتے رہیں گے ۔اس موقع پر خواتین نے اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے وفد کا شکریہ ادا کیا ۔مجلس وحدت مسلمین شعبہ خواتین کی جانب سے متاثرہ بچیوں میں کتب اور اسکارف بھی تقسیم کیے گئے ۔

وحدت نیوز(کراچی) ہر سال کی طر ح امسال بھی آئی ایس او جامعہ کراچی اور دفتر مشیر امور طلبہ کی جانب عظیم الشان یوم حسین ؑ کا انعقاد کیا گیا جسکی صدارت شیخ الجامعہ ڈاکٹر خالد عراقی نے کی،جبکہ خصوصی خطاب قبلہ علامہ اعجاز بہشتی، علامہ فیصل عزیز ی اور علامہ امین شہیدی نے کیا۔

اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے علامہ اعجاز بہشتی نے کہاکہ آج منعقد ہونے والے یوم حسین ؑ علی کی بیٹی حضرت زینب کی دعا کا نتیجہ ہے کیونکہ انہوں نے شہادت امام حسین کے بعد امام حسین کے نعرہ ھیھات من الزلہ (زلت ہم سے دور) ہے کے نعرے کو عملی جامعہ پہنچایا،آج ہم بھی ذلت کو قبول نہیں کریں گے، ہم اسرائیل کو قبول نہیں کریں،ہم وقت کے یزید کو قبول نہیں کریں اور ہم ظلم کے خلاف ڈٹ جائیں گے، مقررین نے کہا کہ کربلا دین کی حفاظت کا نام ہے، یزید نے دین کی شکل بگاڑنا چاہتاتھا، یزید دین کی بنیاد کا انکاری تھا، یزید رسالت اور وحی کا مذاق اُڑا رہا تھا، اس موقع پر فاطمہ کے بیٹے نے مدینے سے قیام کیا اور اعلان کیا مجھ جیسا یزید جیسے کی بیعت نہیں کرسکتا۔

تحریک منہاج القران نے رہنما ء علامہ فیصل عزیز ی نے کہاامام حسین علیہ سلام  سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ دین صرف اسلام ہے اور امام حسین نے دین اسلام کو بچانے کے لئے کربلا میں قربانی دی، کیونکہ یزید کو امام حسین کی نماز سے کوئی پریشانی نہیں تھی، یزید کو امام حسین کی تہجد اور روضہ رسول پر حاضر ی کا کوئی خو ف نہیں تھا یزید اور یہ خوف تھا کہ حسین دین کی با ت کرتے ہیں، دین یعنی نظام زندگی، دین نماز روضہ کا نام نہیں دین نظام زندگی کی بات کرتا ہے اور یزید کو یہی خوف تھا۔

 انہوں نے کہاکہ سوال کیا جاتا ہے کہ اکثریت نے یزید کی بیعت کرلی تھی حسین نے کیوں نہیں کی۔انہوں نے کہاکہ یہ سوال یوں ہونا چاہیئے جب حسین نے یزید کی بیعت نہیں کی تو اکثریت نے یزید کی بیعت کیوں کرلی؟انہوں نے مزید کہاکہ یزید کا سگا بیٹا کہہ رہا ہے کہ میرے باپ نے حسین ابن علی کو قتل کیا لیکن آج یزید کے معنوی بیٹے یزید کہتے ہیں نہیں نہیں وہ قاتل نہیں تھا۔

علامہ امین شہید ی نے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ آج پاکستان میں یزید کی حمایت میں اُٹھنے والی آواز کے پیچھے وقت کے یزید وں کا ہاتھ ہے۔انہوں نے کہ پاکستان میں فرقہ واریت کا بیچ بو کر عرب ممالک کی اسرائیل کے ساتھ بڑھتی ہوئی دوستی اور تعلقات کو چھپانے کے لئے بویا جارہاہے، انہوں نے کہا عالمی استعمار کا ایجنڈا ہے کہ پاکستان میں بدامنی پھیلادی جائے اور پاکستان کو مجبور کردیا جائے کہ وہ اسرائیل کو قبول کرے انہوں نے کہا حسین ابن علی کے ماننے والے کبھی بھی وقت کے یزید کے ہاتھ پر بیعت نہیں کریں گے اور اپنے ملک کو بھی اس اقدام سے باز رکھیں گے۔

 انہوں نے پاکستان میں جاری بدامنی اور فرقہ واریت کو ساز ش قرار دیا اور مطالبہ کیا ملک کے مقتدر ادار ے اس سازش کو ناکام بنانے میں اپنی حکمت عملی ترتیب دیں۔وائس چانسلر جناب ڈاکٹر خالد عراقی نے یوم حسین سے صدارتی خطاب کرتے ہوئے کہاکہ جامعہ کراچی کا یوم حسین جامعہ کی شان ہے، انہوں نے کہاکہ امام حسین علیہ سلام کی سیرت پر عمل کرکے ہم ظلم کا خاتمہ کرسکتے ہیں، انہوں نے کہا تعلیمی اداروں میں کربلا شناسی پر ریسرچ ہونا چاہئے اور ہم اس میں اپنا کردار ادا کریں گے۔

Page 3 of 1061

مجلس وحدت مسلمین پاکستان

مجلس وحدت مسلمین پاکستان ایک سیاسی و مذہبی جماعت ہے جسکا اولین مقصد دین کا احیاء اور مملکت خدادادِ پاکستان کی سالمیت اور استحکام کے لیے عملی کوشش کرنا ہے، اسلامی حکومت کے قیام کے لیے عملی جدوجہد، مختلف ادیان، مذاہب و مسالک کے مابین روابط اور ہم آہنگی کا فروغ، تعلیمات ِقرآن اور محمد وآل محمدعلیہم السلام کی روشنی میں امام حسین علیہ السلام کے ذکر و افکارکا فروغ اوراس کاتحفظ اورامر با لمعروف اور نہی عن المنکرکا احیاء ہمارا نصب العین ہے 


MWM Pakistan Flag

We use cookies to improve our website. Cookies used for the essential operation of this site have already been set. For more information visit our Cookie policy. I accept cookies from this site. Agree